ضروری اشیا ءترمیمی بل پر پارلیمنٹ کی مہر

تاریخ    22 ستمبر 2020 (16 : 02 PM)   


یو این آئی
نئی دہلی// راجیہ سبھا نے منگل کو ضروری اشیا (ترمیمی) بل ،2020 کو اپوزیشن کی غیر موجودگی میں صوتی ووٹنگ سے پاس کردیا جس میں اناج، دلہن،تلہن ،کھاد تیل،پیاز اور آلو کو ضروری اشیا کی فہرست سے ہٹانے کا التزام ہے۔
لوک سبھا نے اس بل کو پچھلے ہفتے پاس کیا تھا۔ اس طرح اس بل پر آج پارلیمنٹ کی مہر لگ گئی۔
اس بل کے قانون بننے پر نجی سرمایہ کاروں کو ان کے کاروبار کو چلانے میں زیادہ ریگولیٹری مداخلت کا خدشہ دور ہوجائےگا۔ پیداوار ،پیداوار کی حد، آمدو رفت ،تقسیم اور فراہمی کی آزادی سے فروخت کی معیشت کو بڑھانے میں مدد ملے گی اور زرعی شعبہ میں نجی شعبہ /غیر ملکی براہ راست سرمایہ کاری متوجہ ہوگی۔
ایوان بالا میں صارفین معاملے،خوراک اور عوامی تقسیم کے وزیر مملکت راو صاحب دانوے نے اس بل کو پیش کیا۔اس کے بعد ایوان میں اس پر اپوزیشن کی غیر موجودگی میں بحث ہوئی۔
بحث کا جواب دیتے ہوئے دانوے نے کہا کہ اس بل کے ذریعہ سے زریعہ شعبہ میں مکمل سپلائی چین کو مضبوط بنایا جاسکے گا،کسان مضبوط ہوگا اور سرمایہ کاری کو فروغ ملے گا۔ مرکزی وزیر نے کہا کہ اس بل پر غور کرنے کےلئے وزرائے اعلی کی ایک اعلی حقوق کمیٹی تشکی لکی گئی تھی۔ اس بل میں ایسے التزامات کئے گئے ہیں جس سے بازار میں مقابلہ بڑھے گا، خرید بڑھے گی اور کسانوں کو ان کی پیداوار کی مناسب قیمت مل سکے گی۔
وزیر کے جواب کے بعد ایوان نے صوتی ووٹنگ سے بل کو منظوری دے دی۔ یہ بل متعلقہ آرڈینیس کی جگہ پر لایا گیا ہے۔ اس آرڈنینس کو پانچ جون 2020 کو جاری کیاگیا تھا۔