تازہ ترین

مشیر بھٹناگر کا عوامی دربار

متعدد وفد کی ملاقات،اپنے مسائل سے آگاہ کیا

تاریخ    22 ستمبر 2020 (00 : 02 AM)   


جموں//لیفٹیننٹ گورنر کے مشیر راجیو رائے بھٹناگرنے جموں میں عوامی تبادلہ خیال پروگرام کا اِنعقاد کیا جس دوران سینکڑوں لوگوں بشمول وفوداور اَفراد کے ساتھ ملاقات کی جنہوں نے مشیر کو اَپنے مسائل سے آگاہ کیا۔اِن وفو د میں جموںوکشمیر گورنمنٹ فارماسٹس ایسو سی ایشن ،اری گیشن اینڈ فلڈ کنڑول کنٹریکٹرس ایسو سی ایشن ، انڈسٹریز ایسو سی ایشن، جے کے روڈ ٹرانسپورٹ کارپوریشن ورکرس یونین ، نیم طبی کالجوںکی انجمن، جے کے کسان کلیان سمیتی ،بے روزگار نوجوانوں کی انجمن ،کٹھوعہ ، راجوری ، پونچھ،ریاسی ، ڈوڈہ ، رام نگر،سانبہ ، کشتواڑ ، ادھمپور اضلاع سے آئے افراد نے مشیر سے ملاقات کی اور انہیں سڑ ک رابطہ ، بجلی اور پانی کی ترسیل ، اراضی سے متعلقہ مسائل ، امداد و معاوضہ ، امن عامہ ، صحت سہولیات ، ناجائز تجاوزات ، ذیلی سڑکوں و نالیوں کی مرمت وغیرہ سے متعلق مانگین اور مسائل پیش کئے۔جموں وکشمیر فارماسٹس ایسو سی ایشن نے صحت اور طبی تعلیم محکمہ میں کام کر رہے غیر درج شدہ فارمیسٹس ، میڈیکل اسسٹنٹ کی رجسٹریشن سے متعلق مانگیں پیش کیں۔سابق ایم ایل سی  وکرم راندھاواکی قیادت میں ایک وفد نے دراپ دیہات اور اس سے منسلک علاقوں میں نقصان شدہ پل کی تعمیر سے متعلقہ معاملہ اٹھایا جو کہ جموں اور سرحدی علاقوں کے مابین ایک اہم رابطہ کی حیثیت رکھتا ہے۔آبپاشی و فلڈ کنٹرول کنٹریکٹرس ایسو سی ایشن نے نہروں وغیرہ کی کھدائی ، ایس ڈی آر ایف اور اے آئی بی پی کے تحت ان کے اِلتوأ میں پڑے واجبات کی فوری ادائیگی کی درخواست کی۔والدین پر مشتمل وفد نے پشو و بھیڑ پالن محکمہ میں ویٹرنری سرجن کی اَسامیوں کے لئے آن لائن فارم پیش کرنے کی تاریخ میں توسیع کرنے کی درخواست کی۔ کشمیر ی مائیگرنٹ اُمیدواروں کے ایک وفد نے وزیر اعظم کے پیکیج کے تحت ان کے انتخاب کے بعد ان کے حق میں جوائننگ آڈر اِجرأ کرنے کی تاخیر کی شکایت کی۔ آر ایس پورہ اور برنائی کٹھوعہ دیہات سے لوگوں اور کسانوں کے ایک وفد نے ان کے علاقوں میں سرکاری اراضی پر ناجائز قبضہ ہٹانے کی مانگ کی ۔  مرکزی معاونت والی سکیم پردھان منتری آسواس یوجنا کے تحت کام پر لگائے کے مکانات وہ شہری کے ملازمین اور جموںو کشمیر روڈ ٹرانسپور ٹ ورکرس یونین نے تنخواہوں کی ادائیگی میں تاخیر کا معاملہ اُٹھایا اور مشیر سے ان کی تنخواہوں کی واگذاری کے لئے ان کی ذاتی مداخلت طلب کی۔تالاب تلو سے آئے لوگوں کے ایک وفد نے وجے نگر ، جواہر نگر ، شو نگر میں ذیلی سڑکوں کی مانگ کی جبکہ کالو چک سے آئے لوگوں کے ایک وفد نے ولیج لنگر وارڈ نمبر 55میں ڈسپنسری قائم کرنے کی مانگ کی۔جموں وکشمیر ہوم گارڈ س کے ایک وفد نے ان کی موجودگی اُجرتوں میں اضافہ کرنے کی مانگ کی ۔کئی افراد نے بھی بجلی ، پانی ، ذیلی ، سڑکوں کی تعمیر ، مختلف سکیموں کے تحت رقومات کی واگذار کے معاملات پیش کیں۔مشیر نے وفود اورافراد کی مانگوں کو بغور سنا اور انہیں یقین دلایا کہ ا ن کی مانگوں پر غور کر کے ان کا نتیجہ خیز حل یقینی بنایا جائے گا۔