کے اے ایس افسران کی سینارٹی کا معاملہ

۔97افسران کو کمیٹی کے روبرو پیش ہونے کی ہدایت

تاریخ    10 ستمبر 2020 (00 : 02 AM)   


سید امجد شاہ
جموں//جموں وکشمیر حکومت نے 2004 سے 2008 کے بیچوں کے 97 کے اے ایس افسران ، جن میں سے 38 سبکدوش ہوچکے ہیں ، کو ہدایت کی ہے کہ وہ جموں اور سرینگر سے ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعہ اپنی سماعت کے لئے کمیٹی کے سامنے حاضر ہوں۔38 ریٹائرڈ افسران سمیت 97  نے اپنے اعتراضات داخل کردیئے ہیں۔اس سلسلے میں محکمہ عمومی انتظامی کی طرف سے ایک نوٹیفکیشن جاری کیاگیاہے جس کے مطابق ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعہ ذاتی طور پران کے اے ایس افسران کی سماعت ہوگی جنہوں نے سینارٹی لسٹ کے حوالے سے اعتراضات جمع کروائے ہیں۔یہ کمیٹی جموں وکشمیر ایڈمنسٹریٹو سروس کے ممبروں کی سنیارٹی لسٹ کے حوالے سے موصول ہونے والے اعتراضات کے ازالے کے لئے تشکیل دی گئی تھی ، جو یکم جنوری 2004 سے یکم دسمبر 2008 کے دوران جموں و کشمیر انتظامی خدمات کے ٹائم اسکیل پرمقرر ہوئے۔کمیٹی نے فیصلہ کیا ہے کہ 97 افسران کو ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعہ ذاتی طور پر سنا جائے گا۔جموں میں مقیم افسران کے لئے ویڈیو کانفرنسنگ 11 ستمبر 2020 (جمعہ) کو سہ پہر 3 بجے ہوگی اور کشمیر کیافسران 14 ستمبر 2020 (پیر) کو سہ پہر 3 بجے اپنے اعتراض سناسکیں گے۔جی اے ڈی کی جانب سے جاری نوٹس کے مطابق ’’افسران متعلقہ تاریخوں پر کانفرنس ہال پہلی منزل سول سیکریٹریٹ جموں اور کانفرنس ہال چوتھی منزل سول سیکریٹریٹ سرینگر سے ویڈیو کانفرنس میں شامل ہوسکتے ہیں‘‘۔
 

تازہ ترین