تازہ ترین

جموں و کشمیر میں کسی کے ساتھ بھید بھاونہیں برتا جائے گا: لیفٹیننٹ گورنر سنہا

تاریخ    7 اگست 2020 (58 : 05 PM)   


یو این آئی
سری نگر// جموں و کشمیر یونین ٹیریٹری کے لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے کہا ہے ” بھارتی آئین ہمارے لئے گیتا کا کام کرے گا اور ہم کسی سے کوئی بھید بھاو¿ روا نہیں رکھیں گے“۔ انہوں نے کہا” ہمارا کوئی مخصوص ایجنڈا نہیں ہے بلکہ آئینی اختیارات کو جموں و کشمیر کی بھلائی اور ترقی کے لئے استعمال کیا جائے گا“۔
موصوف لیفٹیننٹ گورنر نے ان باتوں کا اظہار جمعہ کے روز یہاں راج بھون میں اپنی حلف برداری کی تقریب کے حاشئے پر میڈیا کے ساتھ بات کرتے ہوئے کیا۔
انہوں نے کہا”میں یقین دلانا چاہتا ہوں کہ ہمارا کوئی مخصوص ایجنڈا نہیں ہے، کسی کے ساتھ کوئی بھید بھاو¿ نہیں کیا جائے گا بلکہ بھارتی آئین ہمارے لئے گیتا کا کام کرے گی“۔
کشمیر کو بھارت کی جنت قرار دیتے ہوئے موصوف لیفٹیننٹ گونر نے کہا”کشمیر بھارت کے لئے جنت کی حیثیت رکھتا ہے، مجھے یہاں اپنا رول ادا کرنے کا موقع نصیب ہوا ہے۔ مجھے بتایا گیا کہ برسوں کے بعد یہاں کئی پروجیکٹس شروع کئے گئے ہیں اور میں ترجیحی بنیادوں پر ان پرجیکٹوں کو آگے لے جاو¿ں گا“۔
انہوں نے کہا کہ جموں وکشمیر کے عام لوگوں کے ساتھ راست بات چیت کرنے کی ضرورت ہے۔
پانچ اگست کوایک اہم دن قرار دیتے ہوئے منوج سنہا نے کہا”پانچ اگست جموں و کشمیر کی تاریخ کا اہم دن ہے ، سالہا سال کی علیحدگی کے بعد جموں وکشمیر مین اسٹریم میں شامل ہوا ہے“۔
ان کا کہنا مزیدتھا ” میں لوگوں کے ساتھ مسلسل رابطے میں رہوں گا اور ان کی جائز مانگوں کو سنا جائے گا اور انہیں ترجیحی بنیادوں پر حل کرنے کی کوشش کی جائے گی“۔
موصوف نے کہا کہ جموں وکشمیر میں قیام امن، ملی ٹنسی کا خاتمہ اور تعمیر و ترقی کے کاموں کو آگے لے جانا اُن کا مقصد ہوگا۔
قابل ذکر ہے کہ منوج سنہا نے آج جموں و کشمیر کے دوسرے لیفٹیننٹ گورنر کی حیثیت سے حلف لیا۔
تین بار رکن پارلیمان رہ چکے منوج سنہا کا شمار بھارتیہ جنتا پارٹی کے سینئر لیڈروں میں کیا جاتا ہے۔ انہیں سابق لیفٹیننٹ گورنر گریش چندرا مرمو کے استعفیٰ کے بعد اس عہدے پر فائز کیا گیا ہے۔
 مرمو کو کمپٹرولر اینڈ آڈیٹر جنرل کے اعلیٰ عہدے سے سرفراز کیا گیا ہے۔