تازہ ترین

ایک سال میں تیسرا اجلاس بھارت کیلئے چشم کشا: قریشی

تاریخ    7 اگست 2020 (00 : 02 AM)   


سرینگر//پاکستانی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں مسئلہ کشمیر پر ایک سال میں تیسرا اجلاس منعقد ہونا بھارت کے اس دعوے کی مکمل تردید ہے کہ جموں وکشمیر اس کا داخلی معاملہ ہے۔ سلامتی کونسل میں  15 رکنی ان کیمرہ اجلاس پاکستانی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کی درخواست پر ہوا۔ شاہ محمود قریشی نے ایک ٹویٹ میں کہاکہ’ منعقدہ اجلاس نے غیر جانبدارانہ رائے شماری کے ذریعہ کشمیریوں کے حق خود ارادیت کے حق پر اقوام متحدہ کی قراردادوں کی توثیق کی تصدیق کردی ہے‘۔چین جو سلامتی کونسل کا مستقل رکن ہے، نے اس اجلاس کو منعقد کرنے میں کلیدی کردار ادا کیا اور تمام 15 ممبران نے اس مباحثے میں حصہ لیا۔اگست میں کونسل کی صدارت رکھنے والے انڈونیشیا کے سفیر ڈیان تریانسیہ دجانی نے اجلاس کی صدارت کی۔پاکستانی وزیر خارجہ نے کہا کہ پاکستان یو این ایس سی کے اجلاس کا خیر مقدم کرتا ہے۔انہوں نے کہا کہ یہ بین الاقوامی برادری اور یو این ایس سی کے ممبران کی کشمیریوں کے ساتھ یکجہتی کی علامت ہے جو محاصرے کا سامنا کر رہے ہیں۔انہوںنے غیر معمولی طور پر تیز لہجہ اختیار کرتے ہوئے سعودی عرب کی زیرقیادت اسلامی تعاون تنظیم (او آئی سی) سے کہا ہے کہ وہ کشمیر کے بارے میں اپنی وزرائے خارجہ کی کونسل کے اجلاس کے انعقاد کے سلسلے میں پس و پیش سے کام لینا بند کرے۔
 

تازہ ترین