تازہ ترین

کورونا وائرس| جموں وکشمیر میں3روز میں30ہلاکتیں

مہلوکین کی تعداد407،متاثرین کی مجموعی تعداد 22000سے زیادہ

تاریخ    4 اگست 2020 (00 : 03 AM)   


پرویز احمد
 سرینگر//3اگست بروز پیر ، جموں و کشمیر میں کوروناوائرس سے سی آر پی ایف انسپکٹر سمیت مزید 11 افرادموت کی آغوش میں چلے گئے ۔ اس طرح پچھلے 3روز میں وائرس سے ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 30ہوگئی ہے اور یوںمتوافین کی تعداد 400کا ہندسہ پار کرکے 407تک پہنچ گئی، ان میں سے 30جموں جبکہ 277کشمیر میں فوت ہوگئے۔سوموار کو مزید 590افراد کی رپورٹیں مثبت آئیں ۔ اسطرح متاثرین کی تعداد  22000ہزار کا ہندسہ پار کرکے 22006تک پہنچ گئی۔متاثرین میں سے 4952افراد جموں جبکہ 17054افراد کشمیر میں وائرس سے متاثر ہوئے۔ متاثرہ 590افراد میںسے سب سے زیادہ 180سرینگر، 23بارہمولہ،14پلوامہ، 11کولگام، 6شوپیان، 35اننت ناگ، 39بڈگام، 33کپوارہ، 36بانڈی پورہ، 56گاندربل،72جموں،11راجوری،24رام بن، 12کٹھوعہ، 14ادھمپورہ، 8سانبہ، ایک ڈوڈہ، 7ریاسی اور 8کشتواڑ سے تعلق رکھتے تھے۔  

سومور کو 11اموات

 پہلی اور دوسری عید کو کورونا سے 19ہلاکتیں ہوئیں جبکہ جموں و کشمیر میں پچھلے 24گھنٹوں کے دوران مزید 11افراد کورونا وائرس کی وجہ سے فوت ہوگئے۔ متوفین میں سے5سرینگر، 1اننت ناگ،ایک بارہمولہ، ایک گاندربل،ایک پلوامہ اور 2افراد جموں سے تعلق رکھتے ہیں۔سکمز صورہ میں تعینات  ایک سینئر ڈاکٹر نے بتایا ’’ نواباز سرینگر سے تعلق رکھنے والی ایک 62سالہ خاتون سکمز صورہ میں نمونیا کی وجہ سے فوت ہوگئی‘‘۔مذکورہ ڈاکٹر کا کہنا تھا کہ صفا کدل سرینگر سے تعلق رکھنے والا85سالہ شہری کورونا وائرس سے پیدا ہونے والی نمونیا کی وجہ سے سکمز میں فوت ہوگیا ‘‘۔صدر اسپتال سرینگر میں ایک سینئر ڈاکٹر نے بتایا ’’راولپورہ کا ایک 65سالہ شہری صدر اسپتال سرینگر میں دم توڑ بیٹھا‘‘۔مذکورہ ڈاکٹر نے بتایا ’’ مریض کو اتوار کو اسپتال میں داخل کیا گیا لیکن وہ پیر کی صبح نمونیا کی وجہ سے فوت ہوگیا ‘‘۔سینئر ڈاکٹر نے بتایا کہ راولپورہ سے تعلق رکھنے والا ایک56سالہ سیاسی کارکن بھی کورونا وائرس کی وجہ سے صدر اسپتال سرینگر میںفوت ہوگیا ہے‘‘۔ سنیئر ڈاکٹر نے بتایا ’’ مرنے والوں میں سی آر پی ایف کی پہلی بٹالین سے تعلق رکھنے والا ایک انسپکٹر بھی شامل ہے‘‘۔ سینئر ڈاکٹر نے بتایا کہ پہلی بٹالین میں تعینات انسپکٹر حرکت قلب بند ہونے کی وجہ سے فوت ہوگیا لیکن مرنے کے بعد اسکی رپورٹ مثبت آئی‘‘۔محکمہ صحت کے ایک سینئر ڈاکٹر نے بتایا ’’ مرنے والوں میں اننت ناگ کی  ایس کے کالونی سے تعلق رکھنے ولا ایک 70سالہ شخص بھی شامل ہے۔ بارہمولہ سے تعینات محکمہ صحت کے ایک سینئر ڈاکٹر نے بتایا ’’ نیوکالونی سوپور سے تعلق رکھنے والا ایک مریض ایک 65سالہ مریض سب ضلع اسپتال سوپور میں فوت ہوگیا ‘‘۔مذکورہ ڈاکٹر نے بتایا کہ65سالہ شخص کی رپورٹ 31جولائی کو مثبت آئی اور بعد میں سب ضلع اسپتال سوپور میں زیر علاج رہا ‘‘۔مذکورہ ڈاکٹر نے بتایا کہ مریض نمونیا کی وجہ پیر کو فوت ہوگیا ‘‘۔ وسطی کشمیر کے بڈگام ضلع کے ہمہامہ علاقے سے تعلق رکھنے والا ایک 65سالہ مریض کورونا وائرس کی وجہ سے فوت ہوگیا ‘‘۔ انہوں نے کہا کہ مریض کی تدفین قوائد و ضوابط کے تحت سرینگر کے ملہ کھاہ میں انجام دی گئی۔ وسطی کشمیر کے ہی گاندربل کے سررژ سے تعلق رکھنے والے ایک  60سالہ مریض سکمز صورہ میں فوت ہوگیا ۔ گاندر بل ضلع میں تعینات محکمہ صحت کے ایک سینئر افسر نے بتایا ’’مریض کو 28جولائی کو نمونیا کی وجہ سے سکمز صورہ میں داخل کیا گیا لیکن وہ فوت ہوگیا ‘‘۔ سینئر ڈاکٹر نے بتایا ’’ ترال پلوامہ سے تعلق رکھنے والا ایک 75سالہ شخص بھی کورونا وائرس کی وجہ سے سی ڈی اسپتا ڈلگیٹ میں فوت ہوگیا ۔ ادھر جموں صوبے میں بھی سوموار کو کورونا وائرس کی وجہ سے 2افراد فوت ہوگئے۔جی ایم سی اسپتال جموں میں تعینات ایک سینئر ڈاکٹر نے بتایا ’’سنبل مہر میرن صاحب جموں سے تعلق رکھنے والا ایک 60سالہ شخص کورونا وائرس کی وجہ اتوار اور سوموار کی درمیانی  سب کو فوت ہوگیا ہے جبکہ 88سالہ ایک معمر خاتون جی ایم سی جموں کے آئیسولیشن وارڈ میں سوموار کو فوت ہوگئی ہے۔ 

حکومتی بیان

حکومت کی طرف سے جاری کئے گئے بلیٹن میں بتایا گیا ہے کہ نوول کورونا وائرس کے22006معاملات سامنے آئے ہیں جن میں سے7567 سرگرم معاملات ہیں ۔ اب تک14032اَفراد شفایاب ہوئے ہیں ۔جموں وکشمیر میں کوروناوائرس سے مرنے والوں کی مجموعی تعداد407تک پہنچ گئی ،جن میں سے 377کا تعلق کشمیر صوبہ سے اور30کاتعلق جموں صوبہ سے ہیں۔اِس دوران سوموار کومزید905 شفاتیاب ہوئے ہیںجن میںجموں صوبے کے160اور کشمیر صوبے کے 745اَفراد شامل ہیں ، جن کو جموں و کشمیر کے مختلف ہسپتالوں سے رخصت کیا گیا۔بلیٹن میں مزید کہا گیا ہے کہ اب تک 662941ٹیسٹوں کے نتائج دستیاب ہوئے ہیں جن میں سے  03؍اگست2020ء کی شام تک 640935نمونوں کی رِپورٹ منفی پائی گئی ہے ۔علاوہ ازیں اب تک374160افراد کو نگرانی میں رکھا گیا ہے جن کا سفر ی پس منظر ہے اور جو مشتبہ معاملات کے رابطے میں آئے ہیں۔ ان میں 45286اَفراد کو ہوم قرنطین میں رکھا گیا ہے جس میں سرکار کی طرف سے چلائے جارہے قرنطین مراکز بھی شامل ہیں ۔ اس کے علاوہ06اَفراد کو ہسپتال قرنطین میں رکھا گیا ہے۔7567کو ہسپتال آئیسولیشن میں رکھا گیا ہے جبکہ41640 اَفراد کو گھروں میں نگرانی میں رکھا گیا ہے۔اسی طرح بلیٹن کے مطابق279260اَفرادنے 28روزہ نگرانی مدت پوری کی ہے۔
 

لاک ڈائون کی خلاف ورزی

اوڑی اور اونتی پورہ میں62گاڑیا ں ضبط

ظفر اقبال
 
اوڑی+اونتی پورہ//لاک ڈائون کی خلاف ورزی کرنے کی پاداش میں اوڑی انتظامیہ اور اونتی پورہ پولیس نے 62گاڑیوں کو ضبط اورتین دکانوں کو سربمہر کردیا جبکہ 17خلاف ورزی کنندگان سے جرمانہ وصول کیاگیا۔ اوڑی انتظامیہ نے لاک ڈائون کی خلاف ورزی کرنے پر27گاڑیوں کو ضبط کیا۔سب ڈویژنل مجسٹریٹ اوڑی ریاض احمدملک نے بتایا کہ انہوں نے یہ گاڑیاں بانڈی،مہورہ،چندنواڑی اور نورکھا سے  ناکے پر ضبط کی اور چندن واڑی اور نورکھاہ بازاروں میں تین دکانوں کو سیل کیا۔ادھر اونتی پورہ میں پولیس نے لاک ڈائون کی خلاف ورزی کرنے والے17 لوگوں سے جرمانہ وصول کیا جبکہ سرکاری احکامات کی خلاف ورزی کرنے پر 35 گاڑیوں کو ضبط کیاگیا ۔ماسک نہ پہننے کی پاداش میں 17 لوگوں سے 8500روپے جرمانہ وصول کیاگیا ۔
 

۔905صحت یاب

نیوز ڈیسک
 
سرینگر// جموں و کشمیر میں 3 اگست کو پہلے مرتبہ ایک دن میں 905افراد صحتیاب ہوئے۔ اسطرح صحتیاب ہونے والوں کی شرح متاثرین سے33فیصد زیادہے۔ پیر کو جموں و کشمیر میں 590افراد وائرس سے متاثر ہوئے جبکہ905متاثرین سحتیاب ہونے کے بعد گھر کو لوٹ گئے ہیں۔ پیر کو صحتیاب ہونے والوں میں سے 519سرینگر، 89بارہمولہ، 8 پلوامہ، 52کولگام، 32اننت ناگ، 11بڈگام، 9بانڈی پورہ، 25گاندربل،21جموں، 23 راجوری، 54رام بن، 9کٹھوعہ، 10ادھمپور، 15سانبہ، 27ڈوڈہ اور ایک پونچھ سے تعلق رکھتا ہے۔ 
 

تازہ ترین