روسی نیوی نیوکلیائی اسلحے سے لیس ہوگی :پیوٹن

تاریخ    28 جولائی 2020 (00 : 03 AM)   


نیوز ڈیسک
روس کے صدر ویلادیمیر پیوٹن نے کہا ہے کہ روسی نیوی ہائیپر سونک نیوکلیئر اسٹرائیک اور زیر سمندر نیوکلیئر ڈرون سے لیس ہوگی جو آزمائش کے آخری مراحل میں ہے۔خبرایجنسی رائٹرز کے مطابق سینٹ پیٹرزبرگ میں روسی بحری بیڑوں، نیوکلیئر آبدوزوں اور نیول ایوی ایشن کی سالانہ نمائش کیموقع پر تقریب سے خطاب کرتے ہوئے پیوٹن نے کہا کہ نیوی کی صلاحیتوں میں اضافہ ہورہاہے اور رواں برس مزید 40 جہاز شامل ہوں گے۔انہوں نے یہ واضح نہیں کیا کہ روسی نیوی کو نیا ہائپر سونک اسلحہ کب ملے گا لیکن جلد فراہم کرنے کا عندیہ دیا۔روسی صدر نے کہا کہ ہائپر سونک اسٹرائیک سسٹم اور زیرسمندر ڈرونز سمیت جدید ڈیجیٹیل ٹیکنالوجی کا دنیا میں کوئی ثانی نہیں ہے، اس سے فلیٹ کو منفرد اہمیت ملے گی اور صلاحیتوں میں بھی اضافہ ہوگا۔ایک اور بیان میں روس کی وزارت دفاع کا کہنا تھا کہ پوزیڈون ڈرون لے جانے کی صلاحیت رکھنے والی پہلی آبدوز بیلگوروڈ آزمائش کے مرحلے میں ہے اور تکمیل کے قریب ہے۔بیان میں کہا گیا کہ 'نیوی کے لیے جدید اسلحے کا نظام تشکیل دینے کا کام کامیابی سے مکمل ہورہا ہے۔
 

تازہ ترین