تازہ ترین

چین کے خلاف بھارتی تجارتی ضابطے مزید سخت

تاریخ    27 جولائی 2020 (30 : 01 AM)   


یو این آئی
نئی دلی //بھارت چین سرحدی کشیدگی کے بعد بھارت نے چینی سرمایہ کاری کے خلاف سخت اقدامات کا سلسلہ شروع کر دیا ہے۔ اس وقت دونوں ملکوں کے درمیان تعلقات اپنی نچلی ترین سطح کو چھو رہے ہیں۔اس ہفتے بھارت نے جو نئے ضوابط جاری کیے ہیں ان کے تحت وہ کمپنیاں جن کے ملکوں کی سرحدیں بھارت سے ملتی ہیں انہیں حکومت کے منصوبوں میں سرمایہ کاری سے پہلے وزارت خارجہ اور داخلہ سے سیاسی اور سیکورٹی کلیرینس حاصل کرنا ہوگی۔حکومت کا کہنا ہے کہ اس اقدام کا مقصد بھارت کے دفاع اور قومی سلامتی کو مضبوط بنانا ہے۔تجارتی ماہرین کا کہنا ہے کہ اس نئے ضابطے میں چین کا نام نہیں لیا گیا۔ تاہم اس کا مقصد بھارت کے انفرا سٹرکچر میں چینی کمپنیوں کی سرمایہ کاری کو روکنا ہے۔نئی دہلی کی جواہر لعل نہرو یونیورسٹی میں اقتصادیات کے پروفیسر بسواجیت دھر کا کہنا ہے کہ اس سے بڑے بڑے منصوبے متاثر ہوں گے۔ بھارت کئی بڑے منصوبوں کے سلسلے میں چین پر انحصار کرتاآیا ہے۔پچھلے ماہ بھارت نے 59 کمپیوٹر کی ایپس کو بند کردیا تھا، جن میں اکثر چینی تھیں۔ اس میں انتہائی مقبول ایپ 'ٹک ٹاک' بھی شامل ہے۔