تازہ ترین

کشمیر میں سیکورٹی کی صورتحال بہتر :دلباغ سنگھ

سوشل میڈیا پر دھمکیاں دینے والوں کو بخشا نہیں جائیگا

تاریخ    25 جولائی 2020 (00 : 03 AM)   


یو این آئی
جموں// جموں و کشمیر کے پولیس سربراہ دلباغ سنگھ نے کہا کہ وادی کشمیر میں سیکورٹی کی صورتحال بہتر ہوئی ہے اور تشدد کے واقعات میں نمایاں کمی آئی ہے۔ پولیس سربراہ نے جمعہ کو ضلع ادھمپور میں ہائوسنگ کالونی پارک میں 'اوپن ایئر جم' کا افتتاح کرنے کے بعد نامہ نگاروں کو بتایا: 'جموں اور کشمیر دونوں خطوں کی مجموعی سیکورٹی صورتحال بہت اچھی ہے۔ پہلے کے مقابلے میں اب تشدد کے واقعات میں بھی نمایاں کمی آئی ہے۔ لاء اینڈ آڈر کی صورتحال پہلے سے بہت بہتر ہوئی ہے'۔ ان کا مزید کہنا تھا: 'عوام میں امن کی بحالی کی امید مضبوط ہوئی ہے۔ پولیس اور عوام کے درمیان رشتے میں مزید بہتری آئی ہے۔ ہم ایک دوسرے سے مل کر لاء اینڈ آڈر کو برقرار رکھنے، امن کو بحال کرنے اور کورونا وائرس کو پھیلنے سے روکنے کے لئے کام کررہے ہیں'۔ادھر جمعہ کوضلع ریاسی میں ایک تقریب کے حاشئے پر نامہ نگاروں کو دلباغ سنگھ نے بتایا کہ سوشل میڈیا پر بھارت کے مفاد میں بات کرنے والے کشمیری نوجوانوں کو پاکستان، جرمنی، دبئی اور ترکی جیسے ممالک سے دھمکیاں مل رہی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جنگجوئوں کے ساتھ ساتھ دھمکیاں دینے والے ان افراد کو بھی قانون کے شکنجے میں لایا جائے گا۔ پولیس سربراہ نے کہا کہ 'دھمکیوں کا سلسلہ کوئی نیا نہیں ہے۔ بہت کام ہوا ہے اور بہت سے کام باقی ہیں۔ باقی بچے ہوئے کاموں میں دھمکیاں شمکیاں یہ گیدڑ بھبکیاں ان سب کا خیال رکھا جائے گا۔ان کا مزید کہنا تھا: 'ہم نے پہلے بہت سے لوگوں کو دوسرے ممالک سے پکڑ پکڑ کر یہاں لایا ہے۔ حمزہ میر نامی ایک عنصر کو ہم نے دبئی سے پکڑ کر لایا اور اس کے خلاف مقدمہ چل رہا ہے۔انہوںنے کہاکہ آنے والے وقت میں بھی دھمکیاں دینے والوں کا خیال رکھا جائے گااور جنگجوئوں کے ساتھ ساتھ ان کو بھی قانون کے دائرے میں لایا جائے گا'۔