تازہ ترین

کشمیر میں جدید تعلیم کے معمار اول

میر واعظ مولانا عتیق اللہ شاہ کا یوم وصال، انجمن نصرۃ الاسلام کا خراج عقیدت

تاریخ    17 جولائی 2020 (00 : 03 AM)   


 سرینگر//کشمیر میں جدید تعلیم کے معمار اول ،  بلند پایہ عالم دین ، روحانی پیشوا اور ہر دلعزیز عوامی شخصیت انجمن نصرۃ الاسلام کے سابق صدر میر واعظ کشمیر مولانا عتیق اللہ شاہ صاحب ؒ کا 57 واں یوم وصال نہایت عقیدت و احترام کے ساتھ منایاجارہا ہے ۔ اس ضمن میں انجمن نے  میرواعظ مرحوم کی تاریخ ساز اورگراں قدر تعلیمی خدمات اور انجمن کے حوالے سے بیش بہا اصلاحات کو شاندار الفا ظ میں خراج عقیدت ادا کرتے ہوئے آپ کے دور صدارت کو انجمن کے لئے ہر لحاظ سے ناقابل فراموش اور زریں دورGolden period قرار دیااور آپ کے روشن کار ناموں کی سراہنا کی ۔بیان میں یہ بات واضح کی گئی کہ 1955ء سے لیکر 1962 تک انجمن نصرۃ الاسلام کے تحت چلنے والے ادارے شدید مالی بحران کا شکار رہے تاہم میرواعظ مرحوم کی مخلصانہ کوششوں کے نتیجے میں یہ ملی ادارہ ملت کشمیر کی بھر پور معاونت سے اپنی تعلیمی سرگرمیوں کی حصولیابی میں برابر  سرگرم عمل رہ کر آگے بڑھتا رہا ۔ بیان میں کہا گیا کہ اسی دوران مرحوم میرواعظ کے ہی ہاتھوں اور ان کی کوششوں کے نتیجے میں ہی اسلامیہ کالج سائنس اینڈ کامرس کی داغ بیل ڈالی گئی جو حول میں منتقل ہونے سے قبل دو سال تک انجمن کے احاطے میں ہی  اپنی تعلیمی سرگرمیاں چلاتارہا اور مرحوم میرواعظ کالج کے بھی تاحیات صدر رہے۔بیان میں کہا گیا کہ مرحوم میر واعظ نے انتہائی نامساعد حالات میں کشمیری عوام کی دینی و سیاسی رہنمائی کے ساتھ ساتھ معاشرہ کی بہتری اور اصلاح کے لئے زبردست کوششیں کیں اور اپنی درویشانہ صفات اور خداداد صلاحیتوں سے ہر فرد و بشر کو فائدہ پہنچانے میں پیش پیش رہے ۔ بیان میں کہاگیا کووڈ ۱۹ کی مہلک بڑھتی ہوئی وبا ، لاک ڈائون اور موجودہ صدر انجمن میرواعظ مولوی محمد عمر فاروق کی مسلسل نظر بندی کے سبب امسال انجمن نے اس حوالے سے کسی علمی تقریب کا اہتمام ممکن نہیں ہوسکا ہے۔