تازہ ترین

ڈرنیج سسٹم کی عدم دستیابی

صدیق کالونی سوپورمیں عوام کو دقتوں کا سامنا

تاریخ    14 جولائی 2020 (00 : 03 AM)   


نمائندہ عظمیٰ
سرینگر //صدیق کالونی سوپور میں کپرا تھیٹر کے پاس ساڑھے تین سو میٹر کے تین کوچوں میں ڈرنیج سسٹم کی عدم دستیابی کے نتیجے میں لوگوں کو سخت ترین مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ مقامی لوگوں نے کشمیرعظمیٰ کو بتایا کہ حکام نے اگرچہ یہ دعویٰ کیا گیا تھا کہ علاقے میں ڈرنیج سسٹم تعمیر ہوگا اور کالونی پر بھی تعمیر کا کام شروع کیا گیا ہے لیکن کپرا تھیٹر کے پاس تین کوچوں میں ڈرنیج سسٹم تعمیر کرنے کی طرف کوئی بھی دھیان نہیں دیا جا رہا ہے ۔مقامی لوگوں کے ایک وفد نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ صدیق کالونی میںبارشوں میں سڑک تالاب کی شکل اختیار کر جاتی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ انہوں نے متعدد بار اس تعلق سے اعلیٰ حکام کو آگاہ کیا لیکن وہاں سے یہی جواب مل رہا ہے کہ اگر کوئی پیسہ بچا تو ڈرنیج سسٹم پھر تعمیر ہوگا ۔مقامی لوگوں نے مزید بتایا کہ جب سڑک پر گندہ پانی جمع ہوتا ہے تو اس وقت انہیں نہ صرف عبور ومرور میں سخت دقتیں پیش آتی ہیں بلکہ مکانوں کی نچلی منزلوں میں پانی بھی داخل ہو جاتا ہے ۔انہوں نے اعلیٰ حکام سے مطالبہ کیا کہ علاقے میں ڈرنیج سسٹم تعمیر کیا جائے تاکہ لوگوں کو مشکلات کا سامنا نہ کرنا پڑے ۔آر اینڈ بی محکمہ کے سوپور ڈویژن نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ ڈرنیج سسٹم کی تعمیر کا 60فیصد کام صدیق کالونی میں ہی ہو رہا ہے تاہم انہوں نے اعتراف کیاکہ کپرا تھیٹر کے پاس تین لنک جو ساڑھے تین سومیٹر کے ہیں جو تعمیر ہونے سے رہ گئے ہیں اور اس کیلئے منصوبہ ڈائریکٹر کو بھیجاگیا ہے جیسے ہی پیسا آئے گا اس کا کام بھی مکمل کیا جائے گا ۔  
 

تازہ ترین