تازہ ترین

فورلین شاہراہ تعمیر:کروڑوں روپے کی رقم واگذار نہ کرنے کا شاخسانہ

کمپنی کی مشینری ٹھیکیداروں نے تحویل میں لی

تاریخ    11 جون 2020 (00 : 03 AM)   


محمد تسکین
بانہال// بانہال اور رامسو سیکٹر میں فورلین شاہراہ کی تعمیراتی کمپنی ہندوستان کنسٹریکشن لمیٹیڈ کی سانجھی دار کمپنی آشا پورہ کی طرف سے رقومات ادا کئے بغیر ہی یہاں سے مشینری نکال کر لیجانے کی کوشش ٹھیکیداروں اور پیٹرول پمپ مالکان نے ناکام بنا دی اور اسے اپنی تحویل میں لے لیا۔ بدھ کوپروجیکٹ منیجر سے کی گئی میٹنگ میں کمپنی نے مزید پانچ روز کی مہلت مانگی ہے۔تعمیراتی کمپنی آشا پورہ کیلئے رامسو اور بانہال کے درمیان فورلین شاہراہ کی شاہراہ کی تعمیر کرنے والے ٹھیکیداروں کے ایک وفد نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ آشا پورہ کمپنی اور ہندوستان کنسٹریکشن لمیٹیڈکے ذمہ  35 سے چالیس کروڑ روپے کی رقم واجب الادا ہے اور منگل کی شام آشا پورہ کمپنی نے بقایا داروں کی رقم ادا کیے بغیر ہی بانہال سے اپنی مشینری نکال لی لیکن کئی ٹھیکیداروں اور پیٹرول پمپ مالکان نے کمپنی کی قریب دس مشینوں اور گاڑیوں کو رامسو سے اپنی تحویل میںلیکر بانہال پہنچایا اور بعد میں پولیس نے10 مشینوں کو کسی کے سپرد کیا۔ ٹھیکیداروں کا کہنا ہے کہ ہندوستان کنسٹریکشن کمپنی نے پہلے آشا پورہ کمپنی کو رامسو اور بانہال کے سیکٹر میں فورلین شاہراہ کی تعمیر کا کام سونپ دیا اور اب چودھری پاور پروجیکٹس پرائیویٹ لمیٹڈ نامی کمپنی کو تعمیراتی کام الاٹ کیا گیا ہے لیکن پچھلے دو سالوں سے زائد عرصے سے چالیس کروڑ روپے کی بلوں کے بقایاجات ادا کرنے میں آشا پورہ کمپنی ٹال مٹول سے کام لے رہی ہے ۔