تازہ ترین

سرکاری دفاتر اڑھائی ماہ بعد کھل گئے

تعلیمی ادارے 15جون تک بند رکھنے کا حکم برقرار

تاریخ    7 جون 2020 (00 : 03 AM)   


نیوز ڈیسک
سرینگر// جموں وکشمیر حکومت کے حکمنامے کے تحت ہفتہ کے روز زائد از اڑھائی ماہ بعد یونین ٹریٹری میں تمام سرکاری دفاتر باقاعدگی سے کھل گئے تاہم جہاں پبلک ٹرانسپورٹ کی عدم دستیابی کی وجہ سے دوردراز علاقوں سے تعلق رکھنے والے ملازمین دفاتر میں حاضر ہونے سے قاصر رہے وہیں تمام تعلیمی اداروں میں سناٹا چھایا رہا۔ حکومت کے جنرل ایڈمنسٹریشن ڈیپارٹمنٹ کی طرف سے جاری ایک حکمنامے میں کہا گیا تھا کہ 6 جون 2020 سے تمام افسران اور تمام سطح کا عملہ اپنے اپنے دفاتر میں باقاعدگی سے حاضر ہوں گے۔ تاہم عمر رسیدہ ملازموں، حاملہ خواتین اور مختلف بیماریوں میں مبتلا ملازمین کو زیادہ احتیاط سے کام لینے کی تاکید کی گئی ۔دریں اثنا ایمپلائز جوائنٹ ایکشن کمیٹی اور جموں وکشمیر کیجول ڈیلی ویجرس فورم نے حکومت سے اس فیصلے پر نظرثانی کرنے کی اپیل کرتے ہوئے دوردراز علاقوں سے وابستہ ملازموں کو اپنے اپنے اضلاع میں ہی تعینات کرنے کی گذارش کی ہے۔ادھر محکمہ تعلیم کے سیکریٹری اصغر سامون نے سنیچر کو ایک ٹویٹ میں کہا ’’  میں نے انتظامی عمومی محکمہ کے سیکریٹری کیساتھ محکمہ کی جانب سے تعلیمی اداروں کو 15جون تک بند رکھنے کے اس حکمنامے کے بارے میں بات کی، جو ابھی برقرار ہے،  صورتحال مد نظر رکھ کرہوسکتا ہے کہ سکولوں کو مزید بند رکھنے کا فیصلہ ہو،شاہراہ پر قائم جموں کے بیشتر سکول قرنطین مراکز میں تبدیل کئے گئے ہیں، جن میں داخل مریجوں کا پہلے انخلا ہو اورجنہیں کھولنے سے قبل مکمل طور پر سینی ٹائز کرنا لازمی ہے‘‘۔
 

تازہ ترین