خانہ بدوشوں کا وادی وارد ہونے کا سلسلہ جاری

سکریننگ کے بعد ہی آگے بڑھنے کی اجازت دی جاتی ہے

تاریخ    7 جون 2020 (00 : 03 AM)   


غلام نبی رینہ
کنگن//کالا کوٹ، راجوری اور دیگر علاقوں سے خانہ بدوش طبقوں کا وارد کشمیر ہونے کا سلسلہ جاری ہے۔اس سلسلے میںمحکمہ صحت اور شیپ ہسبنڈری نے ناگہ بل، ہاکنارگنڈاورناراناگ اونگت میں سکریننگ کیلئے موبائل ٹیمیں تعینات کی ہیں جو ان افراد کی سکرینگ کرکے انہیں آگے جانے کی اجازت دیتے ہیں۔ یہ خانہ بدوش گذشتہ کئی دہائیوں سے مئی کے مہینے سے ہی بھیڑ بکریاں لیکر وادی کشمیر کا رخ کرتے ہیں اور چار ماہ تک وادی کشمیر کے جنگلات میں قیام کرنے کے بعد واپس اپنے اپنے علاقوں کی طرف لوٹ جاتے ہیں ۔کنگن کے کئی علاقوں میں ٹھہرے خانہ بدوشوں کے ایک گروہ نے کشمیر عظمیٰ کوبتایا کہ راجوری ، کالا کوٹ اور دیگر جگہوں پر گھاس کی کمی اور شدید گرمی کے ساتھ ہی وہ یہاں کا رخ کرتے ہیں۔انہوں نے بتایا کہ وہ لوگ گذشتہ کئی دہائیوں سے مئی کے مہینے میں ہی بھیڑ بکریاں لیکر وادی کشمیر کا رخ کرتے ہیں۔انہوں نے بتایا کہ لاک ڈائون کے پیش نظر محکمہ صحت اورشیپ ہسبنڈری نے کئی جگہوں پر اس کے لئے اپنی ٹیمیں تعینات کی ہیں بلکہ ناگہ بل، ناراناگ اور ہاکنارگنڈ میں ان کی باضابطہ سکریننگ کی جاتی ہے اور اس کے بعد ہی آگے جانے کی اجازت دی جاتی ہے۔
 

تازہ ترین