’ جنگجو کے والدین مجھ سے ملیں‘، آئی جی پی کا مشورہ

تاریخ    4 جون 2020 (00 : 03 AM)   


بلال فرقانی
سرینگر // انسپکٹر جنرل پولیس وجے کمار نے کہا ہے کہ شوپیان کے جنگجو کی جو آڈیو کلپ وائرل ہوئی ہے، اسکے والدین کو پولیس کے سامنے تحریری شکایت درج کرنی چاہیے ، جو بھی ملوث پایا گیا، کورروائی کی جائیگی۔یہ امر قابل ذکر ہے کہ ایک آڈیو کلپ ، جو سماجی رابطہ گاہوں پر وائرل ہوئی ہے، میں شوپیان کا ایک نوجوان ، جس نے بندوق اٹھائی ہے، یہ دعویٰ کررہا ہے کہ اسے بندوق اٹھانے کیلئے پولیس کے ایک ڈی ایس پی نے مبینہ طور پر مجبور کیا،، ٹارچر کیا اور زیادتیاں کیں۔اس واقعہ کاسنجیدہ نوٹس لیتے ہوئے آئی جی پی نے پریس کانفرنس میں کہا’’ میرا مشورہ اسکے والدین کو یہ ہے کہ وہ مجھ سے ملیں اور کسی بھی پولیس آفیسر کیخلاف شکایت درج کریں،اگر کسی بھی آفیسر کیخلاف شکایت درست پائی گئی، ہم اسکے خلاف کارروائی کریں گے‘‘۔  ندیم احمد ملک ساکن ہف کڑی شوپیان نے 22مئی کو ہتھیار اٹھائے،مذکورہ جنگجو نے آڈیو کلپ وائرل کی ، جس میں وہ کہہ رہا ہے’’ ڈی ایس پی نے میری زندگی اجیرن بنا دی، وہ روزانہ میرا ٹارچر کرتا تھا اور میرے اہل خانہ کو ہراساں کرتا رہا،صرف میں ہی اکیلا ایسا نہیں،بلکہ  شوپیان میںمذکورہ ڈی ایس پی کے ہاتھوں سینکڑوں نوجوانوں شکار ہوئے ہیں اور لگاتار ہورہے ہیں،سیول انتظامیہ سب کچھ جانتی ہے لیکن اسکے خلاف خاموش تماشائی بنی ہے‘‘۔
 

تازہ ترین