محمد سمیع نے مہاجر مزدوروں میں تقسیم کیا کھانا و ماسک

تاریخ    3 جون 2020 (00 : 03 AM)   


یو این آئی
نئی دہلی /ہندوستانی کرکٹ ٹیم کے تیز گیند باز محمد سمیع نے منگل کے روز بسوں کے ذریعے اتر پردیش میں واقع اپنے گھروں کے لئے روانہ ہونے والے تارکین وطن کو کھانے کے پیکٹ اور ماسک تقسیم کئے ۔ہندستانی کرکٹ کنٹرول بورڈ ( بی سی سی آئی) نے سمیع کی اس کوشش کی تعریف کی ہے ۔ایک ویڈیو میں 29 سالہ کرکٹر فاسٹ بالر سمیع کوبسوں کے آغاز کے منتظر افراد کو پانی تقسیم کرتے ہوئے دیکھا گیا۔ انہوں نے 200 کے قریب لوگوں میں کھانا اور کیلے تقسیم کیے اور اترپردیش میں امروہہ کے قریب شاہراہ پر خیمے لگانے میں بھی مدد کی۔ان کی طرف سے ایسے کئی کیمپ چلائے جا رہے ہیں۔ایک ویڈیو شئیر کرتے ہوئے بی سی سی آئی نے لکھا "انڈیا فائیٹس کورونا کیلئے @ ایم ایم شامی 11 اتر پردیش میں قومی شاہراہ نمبر 24 پر کھانے پیکٹ اور ماسک تقسیم کرکے گھر پہنچنے کی کوشش کرنے والے لوگوں کی مدد کے لئے آگے آئے ہیں۔ انہوں نے سہسپور میں اپنے مکان کے قریب خوراک کی تقسیم کے مراکز بھی قائم کیے ہیں۔ ہم اس سعی میں ایک ساتھ ہیں۔ملک میں گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا کے 8،171 نئے معاملات اور 204 اموات کی اطلاع ملی ہے ۔ٹیم انڈیا کے میڈیم پیسر محمد سمیع نے بیوی حسین جہاں کی سوشل میڈیا پر مسلسل کئے جا رہے تبصرے اور سنگین الزامات پر طویل عرصے بعد منہ کھولا ہے ۔انہوں نے کہا کہ حسین جہاں کو اپنے الزامات کو ثابت کرنا چاہئے نہ کہ اسے سوشل میڈیا پر تشہیر کرنا چاہئے ۔نیشنل ہائی وے پر پیرکی دوپہر منعقد غذا اور پھل تقسیم کے پروگرام میں کرکٹر محمد سمیع نے بیوی حسین جہاں کی طرف سے خود پر مسلسل لگائے جا رہے الزامات پر بھی میڈیا سے بات کی۔انہوں نے کہا کہ حسین کے تمام الزام بے بنیاد اور جھوٹے ہیں۔ساتھ ہی کہا کہ حسین اپنے الزامات کو ثابت کرکے دکھائیں۔ سمیع نے دہرایا کہ ان کا اب حسین سے کوئی تعلق نہیں ھے ۔ادھر سمیع کے بیان پر حسین کا کہنا ہے کہ وہ انصاف کی لڑائی عدلیہ میں لڑ رہی ہیں۔سمیع اسے متاثر کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔ انہوں نے چیلنج بھی دیا کہ اگر سمیع درست ہیں تو بار بار تاریخ لینے کے بجائے سچ کا سامنا کریں ۔حسین جہاں نے تین دن پہلے سوشل میڈیا پر محمد سمیع کے ساتھ لیا گیا اپنا ایک نیم برہنہ فوٹو وائرل کیا تھا۔
 

تازہ ترین