۔ 2جون کی مشاورتی کونسل حلف برداری کا کہا ہوا؟

عمر عبداللہ کا طنزیہ سوال،کہا بے بنیاد خبروں کی وضاحت کریں

تاریخ    3 جون 2020 (00 : 03 AM)   


بلال فرقانی
سرینگر//نیشنل کانفرنس نائب صدر عمر عبداللہ نے سوالیہ انداز میں پوچھا ہے ’’عبوری سرکارکی حلف برداری کاکیا ہوا؟ ‘‘۔سابق وزیراعلیٰ عمرعبداللہ نے منگل کو مشاورتی کونسل کے قیام اور2جون کو اس کی حلف برداری سے متعلق حالیہ قیاس آرائیوں پر طنز کرتے ہو ئے سوال کیا ہے کہ یہ جعلی خبرپھیلانے والے اب کہاں ہیں؟۔ عمرعبداللہ نے سماجی رابطہ گاہ ٹوئٹر پراپنے ایک ٹویٹ میں کہاہے کہ کچھ لوگوں نے حالیہ دنوں یہ افواہ اُڑائی تھی کہ 2جون کوجموں وکشمیرمیں عبوری سرکارکوجموں میں حلف دلایاجائیگا ۔انہوں نے کہاکہ بے بنیادخبر والے اب کہاں ہیں؟ اورحلف برداری کاکیاہوا؟۔ عمرعبداللہ کاکہناتھاکہ ذرائع کاحوالہ دیتے ہوئے عبوری سرکارکی حلف برداری سے متعلق جعلی خبر پھیلانے والے میڈیا سے وابستہ افراداب کیاکہیں گے؟ ۔انہوں نے سوال کیاکہ شاید بے بنیادخبرپھیلانے والے خودبھول گئے ہیں کہ انہوں نے کیاکہااورلکھاتھا۔عمرعبداللہ نے اپنے اس طنزیہ ٹویٹ میں عبوری سرکار کی حلف برداری سے متعلق خبر پھیلانے والوں کوافواہ بازوں سے تعبیر کرتے ہوئے یہ تاثر دینے کی کوشش کی ہے کہ جن افرادنے یہ خبرپھیلائی ،وہ اپنے آقائو ں کے اشارے پرکام کررہے تھے ۔انہوں نے مزیدلکھاہے کہ میں جعلی خبروں پرایک چھوٹی کتاب لکھ سکتاہوں۔ عمر نے’’جعلی خبروں‘‘ کے کئی واقعات کو دہرایا جو اگست2019کے بعد انکی ہری نواس میں نظربندی کے دوران سامنے آئے،جس میں سے ایک پی ڈی پی صدر اور سابق وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی کے ساتھ نظربندی کے دوران انکے جھگڑے سے متعلق تھی۔ گزشتہ دنوں سے یہ قیاس آرائیاں سامنے آرہی تھیں کہ سید الطاف بخاری کی قیادت میں مشاورتی کونسل حلف اٹھائے گی۔
 

 

تازہ ترین