تازہ ترین

یوٹی کی کلہم ترقی کیلئے کوششیں جاری:مرمو

پاکستانی زیرانتظام کشمیرکے مہاجرین سمیت کئی وفودملاقی

23 مئی 2020 (00 : 03 AM)   
(      )

 آئینی اداروں،کمیشنوں،مختلف بورڈوںاورعدلیہ میں نمائندگی دینے کا مطالبہ

جموں// پاکستانی  زیرانتظام کشمیرکے بے گھر افراد ، گورکھا سبھا درجہ فہرست قبیلوں ، ذاتوں اور دیگر پسماندہ طبقوں کی انجمنوں کے وفود  نے یہاں راج بھون میں لیفٹنٹ گورنر گریش چندر مرمو سے ملاقات کی اور حکومت ہند اور یو ٹی انتظامیہ کا حقِ شہریت قانون کیلئے شکریہ ادا کیا ۔ لفٹینٹ گورنر کے ساتھ تبادلہ خیال کے دوران وفود کے ارکان نے کہا کہ نئے حقِ شہریت قانون نے اُن لوگوں کی نمائندگی کی ہے جنہیں اس سے قبل آئینی تحفظ کے دائرے کے باہر ہی رکھا گیا تھا ۔ آل انڈیا کنفیڈریشن آف ایس سی ، ایس ٹی ، او بی سی انجمنوں کے ایک وفد جس کی سربراہی آر کے کلسوترہ کر رہے تھے نے ان طبقوں کی فلاح و بہبود سے متعلق مانگیں پیش کیں ۔ جن میں سرکاری نوکریوں میں ترقی کیلئے ریزرویشن پالیسی کو لاگو کرنے ، نیشنل کمیشن ہیڈ کوارٹر کی جموں و کشمیر منتقلی ، حد بندی کمیشن ایس سی ، ایس ٹی ارکان کی نامزدگی ، آئینی اداروں، کمیشنوں ، مختلف بورڈوں اور عدلیہ میں ایس ٹی ایس سی اور او بی سی کو معقول نمائندگی دینے ، ڈاکٹر بی آر امبیڈکر بھون کی تعمیر ، او بی سی زمرے کے لوگوں کیلئے جاری کی جا رہی او ایس سی سند کی جگہ او بی سی سند جاری کرنا شامل ہیں ۔پاکستانی زیرانتظام جموں کشمیر کے بے گھر افراد کے ایک وفد جس کی سربراہی ڈاکٹر نریندر سنگھ رینہ کر رہے تھے ، نے لیفٹنٹ گورنر کو طبقے کے بہبودی مسائل کے بارے میں جانکاری دی  جن میں پاکستانی زیرانتظام جموں کشمیر کے رفیوجیوں کیلئے ویلفیئر بورڈ کو تشکیل دینا بھی شامل ہے ۔ دریں اثنا جے کے گورکھا سبھا کے وفد نے سبھا کے صدر کورونا شتری نے لیفٹنٹ گورنر کو اُن کے طبقے کو درپیش مسائل سے آگاہ کرتے ہوئے گورکھا طبقے کیلئے سرکاری نوکریوں کیلئے ریزرویشن اور ترجیح کی مانگ کی ۔ لفٹینٹ گورنر نے وفود کے ارکان کے ساتھ تبادلہ خیال کرتے ہوئے خیال ظاہر کیا کہ حکومت جموں کشمیر کے عوام کے حقوق کا تحفظ کرنے کیلئے حکومت وعدہ بند ہے اور یو ٹی کی کلہم ترقی کیلئے ہر سطح پر کوششیں جاری ہیں ۔ انہوں نے وفود کو یقین دلایا کہ اُن کی جائیز مانگوں اور معاملات کا بغور جائیزہ لیا جائے گا تا کہ اُن کی فلاح و بہبود کیلئے موثر اقدامات اٹھائے جا سکیں ۔