تازہ ترین

کورونا مخالف اقدام: وزیراعظم سمیت سبھی ارکان پارلیمنٹ کی تنخواہ میں 30فیصد کٹوتی کاآرڈنینس منظور

تاریخ    6 اپریل 2020 (25 : 05 PM)   


نیوز ڈیسک
سرینگر//کورونا وائرس کی وجہ سے پیداحالات سے نمٹنے کےلئے وسائل جٹانے کے مقصد سے مرکزی حکومت نے وزیراعظم سمیت سبھی ارکان پارلیمنٹ کی تنخواہ میں ایک سال تک 30فیصد کی کمی کرنے کےلئے ایک آرڈنینس کو منظوری دی ہے۔
صدر ،نائب صدر اور سبھی گورنروں نے بھی اس آرڈنینس سے الگ خوداپنی مرضی سے ایک سال تک اپنی تنخواہوں میں سے 30فیصد کی کمی کرنے کا اعلان کیا ہے۔
 اس کے علاوہ ارکان پارلیمنٹ کے فنڈ کو دو سال کےلئے ملتوی کرکے اس کی رقم کوبھی ملک کے کنسولیڈیٹیڈ فنڈ میں رکھنے کا فیصلہ کیاگیاہے۔
وزیراعظم نریندرمودی کی صدارت میںمنعقدہ مرکزی کابینہ کی میٹنگ میں اس آرڈنینس کوپیر کے روز منظوری دی گئی۔
اطلاعات و نشریات کے وزیر پرکاش جاوڈیکر نے میٹنگ کے بعد نامہ نگاروں کو بتایا کہ یہ آرڈنینس ارکان پارلیمنٹ کہ تنخواہ ،بھتے اور پنشن سے متعلق آرٹیکل 1954میں ترمیم کےلئے لایا گیا ہے اور ارکان پارلیمنٹ کے آئندہ اجلاس میں اس کےلئے قانون بنایا جائےگا۔آرڈنینس کے التزام گزشتہ یکم اپریل سے نافذ ہوں گے۔