تازہ ترین

مزید خبرں

تاریخ    18 جولائی 2019 (00 : 01 AM)   


 ہمارے لیڈروں کو سیکورٹی فراہم کی جائے :بی جے پی ترجمان

جموں// بی جے پی کے ریاستی ترجمان بریگیڈیئر انیل گپتا نے پارٹی لیڈر ڈاکٹر طاہر چودھری پر ہوئے مبینہ حملے کے حوالے سے سرکار سے پارٹی کے لیڈروں کو سیکورٹی فراہم کرنے کا مطالبہ کیا ہے ۔ موصوف ترجمان نے ترکوٹہ نگر میں واقع پارٹی کے ہیڈ کوارٹر میں بدھ کے روز ایک پریس کانفرنس کے دوران کہا: 'حکومت کو اس قسم کی وارداتوں جو جان لیوا ہیں، کا سنجیدہ نوٹس لینا چاہئے ، ہم پارٹی کی بات آگے رکھیں گے یہ ہمارا روز مرہ کا کام ہے ، اس سے پہلے کہ کوئی بڑا حادثہ پیش آئے سرکار کی ذمہ داری ہے کہ وہ لیڈروں کو سیکورٹی فراہم کرے '۔ انیل گپتا نے کہا کہ جمہوریت میں نظریاتی اختلافات کا ہونا ضروری ہے لیکن ہم سیاسی لوگ ہیں ہماری کسی کے ساتھ کوئی ذاتی دشمنی نہیں ہے ۔ انہوں نے کہا: 'ہم سیاسی لوگ ہیں، ہماری کسی کے ساتھ کوئی ذاتی دشمنی نہیں ہے ، نظریاتی اختلافات ہوسکتے ہیں کیونکہ جمہوریت کے اندر اگر نظریاتی اختلافات نہیں ہوں گے تو جمہوریت چل نہیں سکتی'۔ مسٹر گپتا نے کہا کہ ہم نے اس سلسلے میں ایک ایف آئی آر درج کیا ہے اور ہماری مانگ ہے کہ ملوث نوجوانوں کو تلاش کیا جائے ۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے پاس سیکورٹی نہیں ہے اور ہماری پارٹی نے اس سلسلے میں سرکار کو لکھا ہے لیکن ابھی تک ہمیں سیکورٹی فراہم نہیں کی گئی۔ بریگیڈیئر انیل گپتا نے مزید کہا کہ جس طرح سری نگر میں سیکورٹی ریویو کیا گیا اسی طرح جموں میں بھی سیکورٹی ریویو کیا جانا چاہئے ۔ قابل ذکر ہے کہ بی جے پی لیڈر ڈاکٹر طاہر چودھری کو گزشتہ دنوں موٹر سائیکل پر سوار کچھ نوجوانوں نے نروال علاقے میں ایک پل کے نزدیک روک کر پٹائی کی تھی اور انہیں جان سے مارنے کی دھمکی دی تھی۔
 

ڈمپل کی چیف انجینئر سے ملاقات

 جانی پور سڑک کی کشادگی پر احتجاج درج کرایا

جموں//جموں ویسٹ اسمبلی مومینٹ کے صدر سنیل ڈمپل کی قیادت میںحلقہ کے لوگوں پر مشتمل ایک وفد نے چیف انجینئر محکمہ تعمیرات عامہ ناصر گونی کے ساتھ ملاقات کی اور انہیں امبپھلا۔جانی پور ہائی کورٹ روڈ کو کشادہ کرنے کے خلاف احتجاج درج کیا۔وفد نے چیف انجینئر سے کو ئی دوسرا متبادل تلاش کرنے کا مطالبہ کیا ،تاکہ امبپھلا، جانی پور ،نیو پلاٹ ،ہائی کورٹ روڈ تک کے 5۔لاکھ کنبوں ،کاروباریوں ،باشندوں کے جائیداد اور کاروبار کو نقصان نہ ہو۔وفد نے چیف انجینئر سے کہا کہ علاقہ کے تاجر 19 جولائی کو مذکورہ سڑک کی کشادگی کے خلاف ایک زور دار احتجاج کر رہے ہیں۔وفد نے  بتایا کہ علاقہ میں ٹریفک مسلہ حل کرنے،بڑھتے سڑک حادثات اور امبپھلا ۔مانڈا سے جانی پور ہائی کورٹ روڈ سے اکھنور تک چار گلیار سرکیولر روڈ اور امبپھلا ،جانی پور ہائی کورٹ روڈ،روپ نگر، بن تالاب سے اکھنور تک میٹر ریل شروع کرنے کیلئے کاروباریوں نے غیر معینہ عرصہ کی ہڑتال شروع کی۔ چیف انجینئر نے وفد سے کہا کہ عدالت نے گورنر انتظامیہ سے چیف سیکرٹری کی قیادت میں تمام کمشنروں ، صوبائی کمشنر  پر مشتمل ایک کمیٹی تشکیل دینے کی ہدایت کی ہے ،جسے امبپھلا،نیو پلاٹ جانی پور روڈ کی کشادگی کے سلسلہ میں فوری طور رپورٹ پیش کرنے کو کہا گیا ہے۔ڈمپل نے اس موقعہ پر کہا کہ تاجر طبقہ کسی بھی صورت میں کشادگی منصوبہ کو روبہ عمل ہونے کی اجازت نہیں دیں گے۔انہوں نے گورنر سے فوری طور میٹرو ریل کی تعمیر اور اسے شروع کرنے اور امبپھلا ۔مانڈا سے جانی پور ہائی کورٹ روڈ سے اکھنور تک چار گلیار سرکیولر روڈ تعمیر کرنے میں مداخلت کرنے کی اپیل کی ہے کیونکہ سابقہ سرکاریں شہر میں ٹریفک مسلہ سے نمٹنے میں ناکام رہی ہے۔انہوں نے کہا کہ تاجر طبقہ ٹریفک مسائل سے نمٹنے کے لئے موثر کاروائی کرنے کے لئے اپنی ہڑتال جاری رکھے گی۔
 
 
 

 اودہمپور میں کم وولٹیج اور بجلی کٹوتی کا مسئلہ

منکوٹیاکی چیف ا نجینئر سے ملاقات کرکے مسئلہ حل کرنے کی اپیل

اودہم پور //اودہمور میں بجلی کے مسلہ کو لیکر پینتھرز پارٹی کے صدر بلونت سنگھ منکوٹیہ نے بدھ کے روز جموں میں محکمہ بجلی کے چیف انجینئر سدھیر گپتا کے ساتھ ملاقات کی اور انہیں اودہمپور میں کم وولٹئیج اور بجلی کی بار بار کٹوتی سے لوگوں کو ہو رہی پریشانیوں کی جانکاری دی۔ایک بیان کے مطابق انہوں نے کہا کہ گذشتہ چار برسوں سے اودہم پور میں بجلی کٹوتی میں اضافہ ہوا ہیجسکی وجہ سین لوگوں کو تپتی گرمی میں پریشانیاں ہو تی ہیں۔انہوں نے کم  وولٹئیج کے مسلہ سے نمٹنے کیلئیاودہم پور میں نئیسب ۔اسٹیشن قائم کرنے کا مطالبہ کیا ۔انہوں نے کہا کہ اودہمپور کے متعدد پنچایتوں ملہار، اپر سینی، پالا ڈانگا، کاٹلی پٹلہ، پلٹیار، سنموترہ محلہ پنچایت نباترہ، اندرا کالونی رتھیان ، تروا اور دوبے محلہ ،پاٹئیاں محلہ پناچیات پانڈنو، گوجر محلہ بڈولہ،سوراری نالہ ،محلہ پنچایت بٹال، پنچایت پدانو وغیرہ میں بجلی کی کم وولٹئیج اور بغیر شیڈول کی کٹوتی سے کافی پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔چیف انجینئر سدھیر گپتا نے پینتھرز پارٹی کے صدر منکوٹیہ کو مسالہ کا فوری حل کرنے کی یقین دہانی کی اور موقعہ پر ہی ایگزیکٹو انجینئر اودہم پور سے بذریعہ ٹیلیفون بات کرکے مسلہ کو فوری طور حل کرنے کو کہا ۔
 
 

 ایمپلائزجوائنٹ ایکشن کمیٹی (آر)کی کشمیر چلو کال

 23جولائی کو سرینگر کی پرتاپ پارک میں احتجاج کریں گے 

جموں // جے اینڈ کے ایمپلائز جوائنٹ ایکشن کمیٹی (آر)کی جانب سے بدھ کے روز یہاں منعقدہ ایک پریس کانفرنس میں تمام سرکاری ملازموں سے کشمیر چلو کی کال دی گئی ،جہاں سرکاری ملازمین 23جولائی کو پرتاپ پارک سرینگر میںاکٹھا ہو کر احتجاج کریں گے ۔ان باتوں کا اظہار جے اینڈ کے ایمپلائز جوائنٹ ایکشن کمیٹی (آر) کے ریاستی صدر بابو حسین ملک کی جانب سے بدھ کے روزمنعقدہ ایک پریس کانفرنس میں کیا۔انہوں نے کہا کہ ایسو سی ایشن کی جانب سے ملازمین کے دیرینہ مسلہ حل کرنے میں سرکار کی ناکامی کے خلاف احتجاج کیا جا رہا ہے، جس میں ریاست کے تمام ملازمین شرکت کریں گے۔ پریس کانفرنس میں شرکت کرنے والوں میں یش پال شرما ، کلونت سنگھ سمبیال، نریش شرما ، وکاس چندر، ارون شرما ، انوسوئیا گپتا، مختیار سنگھ ، ارون بخشی، رنکو گل، ستیش دتہ، انیل سنگھ سلاتھیہ، پون کمار، منشی شرما، روہت جارج، تنویر حسین ، یونس راہی،نیرج شرما ،مدن سنگرال، بھوپیندر سنگھ و دیگران بھی شامل تھے۔پریس کانفرنس میں جن مطالبات پر بحث کی گئی اُن میں :  ایس آر او۔520کو واپس لینا ،جو کہ ملازمین کے مفاد کے خلاف ہے۔ تامم یومیہ اجروں پر کام کرنے والوں ، کنٹریکچول ملازمین ، کنسالڈیٹڈ، نئیڈ بیسڈ ملازمین ،سیزنل لیبئرروں ، آنگن واڑی ورکرں ،ہیلپروں کو باقاعدہ بنانے ،آنگن واڑی ورکروں ک تنخواہ ماضٰ کے عمل کے طرح نہ کہ سرپنچ کے ذریعہ سے واگُذار کرنے کا مطالبہ بھی شامل ہے۔گذشتہ70دنوں سے ہڑتال پر بیٹھے کنٹریکچول اساتذہ/لیکچرارون کی سروسز جاری رکھنے کا مطالبہ ، کلرکل کیڈر کی تنخواہوں میں تفاوت کو 01/1996  سے دور کرنے، سول سکرٹریٹ کے طرز پر دیگر دفاتر میں بھی پانچ دنوں کا ہفتہ منانے ،میڈیکل الائونس میں اضافہ کرکے اسے 5000روپے فی مہا کرنے کا مطالبہ بھی شامل ہے۔
 
 

وراج کلا کیندر کی جانب سے تعزیتی اجلاس منعقد 

جموں //وراج کلا کیندر کی جانب سے یہاں بدھ کے روز ایک تعزیتی اجلاس کا اہتمام کیا گیا ،جس میں وراج کلا کیندر کی سابقہ نائب۔ صدر اور جموں کی ایک نامور سماجی کارکن و دانشور للتا نندا کو انکے موت پر دکھ کا اظہار کیا گیا ،جن کا انتقال14جولائی کو ہوا ہے۔وراج کلا کیندر کے صدر راج بھارتی نے مرحومہ کو خراج ادا کرتے ہوئے کہا کہ مرحومہ کیندر کی بانی ممبر اور نائب صدر رہی ہیں،جنھوں نے وراج کلا کیندر کے فروغ کیلئے اپنی خدما ت پیش کیں اور سماجی کام کرکے سماجی خدمات کیں۔مرحومہ کو خراج عقیدت ادا کرنے والوں میں کیندر کی نائب صدر سرلا کوہلی، جنرل سیکرٹری سوشما شرما ، جوائنٹ سیکرٹری سنیتا بھان ۔ممبر نرملا پادھا ودیگران بھی شامل تھے۔ 
 
 

کٹھوعہ پولیس کی جانب سے الوداعی تقریب

حافظ قریشی 
 
کٹھوعہ // کٹھوعہ پولیس کی جانب سے تبدیل ہورہے ڈی ایس پی آر کے پریہار اور ایس آئی اشونی کو شاندار الوداع کیا۔ اس سلسلہ میں منعقدہ ایک تقریب کا اہتمام کیا گیا ،جس میں تمام افسروں نے شرکت کی۔شرکت کرنے والے افسروں میں نئے ڈی ایس پی کمپوننٹ ڈیپک ڈیگرہ بھی شامل تھے ،جنھوں نے بدھ کے روز ہی اپنے عہدہ کا چاج بھی سنبھال لیا۔الوداعی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ایس ایس پی کٹھوعہ نے تبدیل ہو رہے افسر کی جانب سے بارڈر سیکورٹی گرڈ کو مستحکم بنانے میں انجام دی گئی خدما ت کی ستائش کی ،چنانچہ بارڈر سیکورٹی کٹھوعہ پولیس کے لئے ایک بڑا چلینج ہے ،جسے افسر نے بخوبی نبھایا ۔انہوں نے تبدیل ہوئے افسر کو اگلی ذمہ واری کے لئے نیک خواہشات پیش کیں۔کٹھوعہ پولیس نے سب انسپکٹر اشونی کمار کو بھی شاندار الوداع دیا ،جنھیں کٹھوعہ ضلع سے بتدیل کیا گیا ہے۔ایس اسی پی نے دونوں افسروں کیلئے اچھی صحت اور شاندار کئیر ئیر کی تمنا کی۔
 
 

کٹھوعہ میں منشیات فروش گرفتار

حافظ قریشی 
 
کٹھوعہ//کٹھوعہ پولیس نے منشیات کے خلاف اپنی  فیصلہ کن مہم جاری رکھتے ہوئے بدھ کے روز ایک منشیات فروش کو گرفتار کرکے اسکے قبضہ سے 6گرام ہیروئن برآمد کی۔پولیس کی جانب سے اجرابیان کے مطابق پولیس پوسٹ مرہین کے سب ا نسپکٹر  اشونی نے متھورا چوک پر چیکنگ کے دوران ایک منشیات فروش کو گرفتار کیا،جس کی پہچان سنجے شرما ولد اوتم چند ساکنہ مرار چک ،بشناہ جموںکے بطور کی گئی ہے۔دوران تلاشی اسکے قبضہ سے 6گرام ہیروئن برآمد کی گئی۔پولیس نے اس سلسلہ میں ایک معاملہ زیر ایف آئی آر نمبر 140/2019  زیر دفعہ 8/21/22 این ڈی پی ایس ایکٹ درج کرکے مزید تحقیقات شروع کر دی ہے۔کٹھوعہ پولیس ضلع میں عام لوگوں خصوصاً نوجوانوں کو منشیات کی بدعت اکھاڑ پھینکنے کے لئے کئے جارہے اقدام کی جانکاری دے رہی ہے ۔پو لیس نے عوام سے اپیل کی ہے کہ وہ علاقہ کو منشیات سے پاک رکھنے کے لئے آگے آئیں ،تاکہ اس بدعت کو ضلع سے دور پھینکا جا سکے۔