راجوری تا تھنہ منڈی خستہ حال سڑک کشادگی کی منتظر

حتمی فیصلے کیلئے طرفین کے مابین اجلاس آئندہ ہفتے متوقع :ایس ڈی ایم

تاریخ    16 مئی 2019 (00 : 01 AM)   


طارق شال
تھنہ منڈی // راجوری۔تھنہ منڈی خستہ حال سڑک کئی کشادگی کی منتظر ہے جبکہ سڑک کی کشادگی کے سلسلہ میں کئی ایک مقامات پر مقامی لوگوں کی جانب سے اعتراصات پیش کئے گئے ہیں جن پر حتمی فیصلے کیلئے آئندہ ہفتے اجلاس متوقعہ ہے ۔راجوری ۔تھنہ منڈی اور بفلیاز سڑک جسکی لمبائی تقریبا 44 کلو میٹر ہے،کافی اہمیت کی حامل ہے اور ضلع پونچھ کے بفلیاز کے مقام پر تاریخی مغل روڈ کے ساتھ ملتی ہے۔ مقامی لوگوں کی جانب سے کئی دہائیوں سے سڑک کی کشادگی کی مانگ کی جارہی ہے جبکہ اس وقت مغل شاہراہ کے کھلنے کی وجہ سے راجوری تھنہ منڈی سڑک پر ٹریفک میں بھی اضافہ ہو گیا ہے لیکن سڑک کی خستہ حالی اور ون وے ہونے کی وجہ سے مسافروں کو دقتوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے ۔ حالانکہ محکمہ ٹریفک کی طرف سے جاری شدہ حکم کے مطابق اس سڑک پر یکطرفہ ٹریفک چلنے کی اجازت دی جارہی ہے۔ تاہم اسکے باوجود اس سڑک پر جگہ جگہ جام لگنے کی وجہ سے عام راہگیروں اور مسافروں کو کافی مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہاہے ۔ضلع ترقیاتی کمشنر راجوری کی ہدایات کے باوحود بارڈ روڈ آرگنائزیشن کی کارگردگی غیر تسلی بخش ہے۔محکمہ گریف کشادگی سے قبل مرمت کرنے میں لیت ولعل سے کام لے رہا ہے۔ مغل روڈ جو ائنٹ ایکشن کمیٹی کے قائم مقام چیر مین الحاج عبدالرشید شال نے گریف حکام پر غیر سنجیدگی کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ محکمہ گریف راجوری۔ تھنہ منڈی اور بفلیاز سڑک کی مرمت اور اسکی کشادگی کرنے میں دلچسپی نہیں رکھتا۔ چیر مین موصوف نے زمین مالکان سے بھی اپیل کی کہ انہیںچاہیے کہ سڑک کی کشادگی میں رکاوٹوں کو دور کر کے تعمیر کے کام کو شروع  کرنے میں تعاون دیں۔اس ضمن میں سب ڈویژنل مجسٹریٹ تھنہ منڈی ڈاکٹر محمد تنویر خان نے کہا کہ راجوری۔ تھنہ منڈی سڑک کی کشادگی کے سلسلہ میں تمام کاغذات مکمل ہوچکے ہیں۔ انہوں نے بتا یا کہ پلانگڑھ کے مقام سے زمین مالکان نے اعتراض پیش کیا ہے کہ سروے میں یکطرفہ کاروائی کی گئی۔ا نہوں نے بتا یا کہ ضلع انتظامیہ راجوری اور باڈر روڈ آرگنائزیشن کی مشترکہ میٹنگ اگلے ہفتے متوقع ہے جسمیںزمین مالکان کے اعتراضات کو سن کر روڈ کی کشادگی کے بارے میں حتمی فیصلہ لیاجائے گا۔
 

تازہ ترین