تازہ ترین

موسم دوسرے روز بھی خراب رہا

راجوری //خطہ پیر پنچال میں مسلسل دوسرے روز بھی موسم خراب رہاجس کی وجہ سے سردی کی شدت میں اضافہ ہوگیاہے ۔ اس دوران بالائی علاقوں میں برفباری ہوئی جبکہ نچلے علاقے میں بارش کا سلسلہ جاری رہا۔دوسرے روز وقفے وقفے سے بارشیں اور برفباری ہوتی رہی جس کی وجہ سے سردی کی شد ت بڑھ گئی ہے اور لوگ پریشان حال ہیں تاہم اس دوران کسی بھی علاقے سے کسی طرح کے جانی یا مالی نقصان کی اطلاع نہیں ۔کوٹرنکہ کے نصیر احمد، طارق راتھراورمظفر خان کاکہناہے کہ بارش تو ضروت تھی لیکن جس طرح سے آندھی طوفان چل رہاہے اس سے لوگ پریشان حال ہیں اور بجلی سپلائی بھی منقطع ہوگئی ہے ۔انہوںنے کہاکہ کئی علاقوں میں بجلی ہے ہی نہیں جبکہ کچھ علاقوں میں کٹوتی بہت زیادہ کی جارہی ہے ۔ انہوںنے کہاکہ وہ ہر ایک مشکل کو سہہ لیںگے لیکن محکمہ بجلی عذاب بن کر نازل نہ ہو اور سپلائی جاری رکھی جائے ۔  

سرحدی کشیدگی تعلیمی نظام پر اثرانداز

 مینڈھر//سرحدی تحصیل بالاکوٹ میں تعلیمی نظام سرحدی کشیدگی کے باعث بری طرح سے متاثر ہورہاہے ۔ہندوپاک افواج کے درمیان پائی جارہی کشیدگی اور روز روز کی فائرنگ وگولہ باری بالاکوٹ کے طلباء کیلئے پریشانی کا باعث ہے جنہیں سکولوںسے غیر اعلانیہ چھٹیاں کرنی پڑتی ہیں ۔مقامی لوگوں کاکہناہے کہ گولہ باری کے دوران  کئی درجن سکول بند ہو جاتے ہیں جس کی وجہ سے بچے تعلیم حاصل نہیں کر پاتے اور جب حالات ٹھیک ہوتے ہیں تو اساتذہ باری باری ڈیوٹی پر جاتے ہیں لیکن محکمہ تعلیم کے اعلیٰ آفیسران کوٹس سے مس نہیں اور وہ اس جانب کوئی توجہ نہیں دے رہے ۔محمد رقیب،عاشق حسین اور ریاض احمد کا کہناہے کہ اساتذہ نے ہفتے ہیں آنے جانے کے لئے دن مقرر کئے ہوتے ہیں جس کی وجہ سے سکولوں میں حاضری بھی بہت کم دیکھنے کو ملتی ہے اورچونکہ کئی سکول تار بندی کے اندر ہیں اس لئے ان تک جانے کی کوئی کوشش نہیں کرتا۔انہوںنے کہاکہ اس

ایم جی نریگا ملازمین کی منڈی میں کام چھوڑ ہڑتال

  منڈی// ایم جی نرگا سکیم کے تحت کام کر رہے ملازمین نے تنخواہیں نہ ملنے اور دیگر مطالبات پر محکمہ کے خلاف کام چھوڑ ہڑتال جاری رکھی ہوئی ہے ۔ منڈی میں ملازمین نے بدھ سے کام چھوڑ ہڑتال شروع کرنے کا اعلان کرتے ہوئے محکمہ کے خلاف احتجاج کیا ۔ملازمین کاکہناہے کہ انہیں گزشتہ چھہ ماہ سے تنخواہیں نہیں دی گئیں جس کی وجہ سے ان کومالی مشکلات کاسامناہے جبکہ ان کے لئے حکومت کوئی جاب پالیسی بھی وضع نہیں کررہی ۔کشمیر عظمیٰ سے بات کرتے ہوئے جی آر ایس اشتیاق احمد نے کہا کہ گزشتہ چھہ ماہ سے انہیں تنخواہیں نہیں مل رہیں ۔انہوں نے کہا کہ منڈی اور لورن بلاک کے تمام کام ایم جی نریگا ملازمین سے لیا جا رہا ہے مگر انہیں تنخواہیں نہیں دی جاتی ۔انہوںنے کہاکہ اس سلسلہ میں انہوں نے کئی مرتبہ محکمہ کے اعلیٰ افسران سے بھی رجوع کیا اور مانگ کی کہ تنخواہیں وقت پر ادا کی جائیں لیکن ان کے کانوں جوں تک نہیں رینگ

سرحدی کشیدگی تعلیمی نظام پر اثرانداز

 مینڈھر//سرحدی تحصیل بالاکوٹ میں تعلیمی نظام سرحدی کشیدگی کے باعث بری طرح سے متاثر ہورہاہے ۔ہندوپاک افواج کے درمیان پائی جارہی کشیدگی اور روز روز کی فائرنگ وگولہ باری بالاکوٹ کے طلباء کیلئے پریشانی کا باعث ہے جنہیں سکولوںسے غیر اعلانیہ چھٹیاں کرنی پڑتی ہیں ۔مقامی لوگوں کاکہناہے کہ گولہ باری کے دوران  کئی درجن سکول بند ہو جاتے ہیں جس کی وجہ سے بچے تعلیم حاصل نہیں کر پاتے اور جب حالات ٹھیک ہوتے ہیں تو اساتذہ باری باری ڈیوٹی پر جاتے ہیں لیکن محکمہ تعلیم کے اعلیٰ آفیسران کوٹس سے مس نہیں اور وہ اس جانب کوئی توجہ نہیں دے رہے ۔محمد رقیب،عاشق حسین اور ریاض احمد کا کہناہے کہ اساتذہ نے ہفتے ہیں آنے جانے کے لئے دن مقرر کئے ہوتے ہیں جس کی وجہ سے سکولوں میں حاضری بھی بہت کم دیکھنے کو ملتی ہے اورچونکہ کئی سکول تار بندی کے اندر ہیں اس لئے ان تک جانے کی کوئی کوشش نہیں کرتا۔انہوںنے کہاکہ اس

جبی طوطی کی 8ہزار آبادی بہترسڑک رابطے سے محروم

پونچھ//سرحدی ضلع پونچھ کے جبی طوطی میں آباد گائوں نیڑیاں ہاڑی بڈھا کی آٹھ ہزار عوام بہترسڑک سمیت بنیادی سہولیات سے محروم ہے۔ خوبصورت وادیوں میں آباد یہ آٹھ ہزار آبادی آج بھی قدیم طرز کی زندگی گزارنے پر مجبور ہے اورسب سے اہم سڑک سہولت نہ ہونے کی وجہ سے لوگوں کو آج بھی کئی کئی کلو میٹر پیدل سفر کرنا پڑتا ہے جو بزرگوں اور خواتین کے لئے سخت مشکل ترین مرحلہ ہو تا ہے۔ جموں پونچھ شاہرا پر میدانہ کے مقام سے محکمہ تعمیرات عامہ کی طرف سے 3کلو میٹر سڑک تعمیر کی گئی تھی جس کے بعد2007میں عوام کی پر زور اپیل کے بعد اس پرتارکول پچھائی گئی لیکن ساتھ ساتھ مرمت نہ ہونے کی وجہ سے آج اس تین کلو میٹر سڑک کی بھی خستہ حالت ہے۔اس تین کلو میٹر سڑک پر جو مسافر گاڑیاں چلائی جا رہی ہیں، ان کے ڈرائیور عوام سے من مرضی کا کرایہ وصول کر انہیں پریشان کررہے ہیں۔مقامی لوگوں کے مطابق مسافر ٹیمپو چلائے جا رہے ہیں

راہل گاندھی کے انتخاب پر پارٹی کارکنان مسرور

راجوری//راجوری میں کانگریس پارٹی کا ایک اجلاس منعقد ہوا جس کی صدارت کانگریس ضلع صدر سائیں عبدالرشید نے کی ۔کارکنان نے راہل گاندھی کے بحیثیت کانگریس صدر انتخاب پر ایک دوسرے کو مبارکباد پیش کی اور اسے کانگریس پارٹی کیلئے مفید قرارد یا۔اپنے خطاب میں سائیں رشید نے کہاکہ کانگریس کی تاریخ کا سب سے بڑا فیصلہ ہے جس میں راہل گاندھی کو پارٹی کا صدر منتخب کیا گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ایک نوجوان اوربے باک لیڈر کی قیادت میں پارٹی مزید ترقی کریگی ۔ انہوں نے کہاکہ مرکزی حکومت ناکام ہوچکی ہے اور لوگ اپنے غلط فیصلہ پر مایوس ہیں جس کا نتیجہ گجرات اسمبلی انتخابات میں سامنے آنے والا ہے ۔ سائیں عبدالرشید نے کہا کہ بھاجپا نے عوام کے جذبات کی قدر نہیں کی جس کی وجہ سے پورے ملک میں اس کے خلاف عوامی ناراضگی پائی جارہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ جی ایس ٹی لاگو کرکے عوام کا جینا مشکل کردیاگیاہے اورنوٹ بندی نے عوام کی

بی ایم او سرنکوٹ نے پی ایچ سی بفلیاز کا معائنہ کیا

سرنکوٹ//بلاک میڈیکل افسر سرنکوٹ محمد ذوالفقار نے پی ایچ سی بفلیاز کا اچانک دورہ کرکے کام کاج کا جائزہ لیا ۔انہوںنے طبی عملے اور ڈاکٹروں کو سختی سے ہدایت دیتے ہوئے کہاکہ لوگوںکو بہتر سے بہتر طبی خدمات فراہم کی جائیں اور انہیں معیاری ادویات دی جائیں ، انہوںنے کہاکہ کوئی بھی ملازم بغیر اطلاع دیئے گھر نہیں بیٹھے گااور حاضری کو یقینی بنایاجائے گا۔بی ایم او نے کہاکہ لوگوںسے شکایت کا موقعہ نہیں ملناچاہئے اور نظام میں مزید بہتری لائی جائے ۔بی ایم او نے کشمیرعظمیٰ سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ گزشتہ دنوں بفلیاز میں سڑک حادثہ ہواجس کے بعد اس بات کی شکایت ملی کہ پی ایچ سی بفلیاز میں کوئی بھی ملازم حاضر نہیں تھا۔انہوںنے کہاکہ وہ انہی شکایات کی تحقیقات کیلئے بفلیاز گئے اور یہ پایاگیاکہ اس روز دو ملازم موقعہ پر حاضر تھے اور ایک چھٹی پر تھا۔انہوںنے کہاکہ بفلیاز کیلئے ایمبولینس گاڑی درکار ہے جس کیلئے منظو

خبریں

رادھا سوامی محلہ15 دنوں سے پانی سپلائی نہ ہوا بختیار حسین   سرنکوٹ// سرنکوٹ کے محلہ رادھا سوامی وارڈ نمبر چار میں پچھلے پندرہ دنوںسے پانی کی سپلائی متاثر ہے جس کے نتیجہ میں لوگوں کو شدید مشکلات کاسامناہے ۔ مقامی لوگوںنے بتایاکہ سردی کے موسم میں نہ ہی انہیں پینے کا پانی مل رہاہے اور نہ ہی نہانے دھونے کیلئے پانی کاکوئی انتظام ہے ۔ انہوںنے کہاکہ کئی گھر ایسے ہیں جن میں پینے کیلئے پانی نہیں ۔رابطہ کرنے پر اے ای ای پی ایچ ای سرنکوٹ نے بتایا کہ پانی کی سپلائی بجلی کی وجہ سے متاثر ہوئی ہے ۔ انہوںنے کہاکہ بجلی سپلائی پر بور ویل کے ذریعہ پانی فراہم کیاجاتاتھا تاہم ٹرانسفارمر کسی وجہ سے جل گیاہے جس سے پانی کی سپلائی متاثر ہوئی۔ انہوںنے کہاکہ ان کی کوشش ہوگی کہ پانی کی سپلائی کو جلد سے جلد بحال کیاجائے ۔ وہیں محکمہ بجلی کے افسران نے موقعہ پر پہنچ کر ٹرانسفارمر کا جائزہ لیا اور اس

خطہ پیر پنچال میں برفباری اور شدید بارشیں

 منڈی/راجوری//ریاست بھر کی طرح پونچھ اور راجوری میں بھی پیر کو موسم نے اپنا مزاج بدلا اوربالائی علاقوں میں برفباری جبکہ نشیبی علاقوں میں شدید بارشیں شروع ہوئیں جس کا سلسلہ آخری اطلاعات تک جاری تھا۔ موسم کی اچانک تبدیلی سے عام زندگی مفلوج بن کر رہ گئی اورساتھ ہی سردی میں بھی بہت زیادہ اضافہ ہواہے ۔مقامی لوگوںنے گرم ملبوسات کے ساتھ ساتھ کانگڑی اور دیگر چیزوں کا استعمال کرنا بھی شروع کردیاہے ۔دور دراز علا قوںلورن ،ساوجیاں ،اڑائی ، بیدار،بلنائی ، شاہ پور گلی ،میدان، چھیلہ ڈھانگری ،اتولی وغیرہ کے لوگوںنے انتظامیہ سے اپیل کی ہے کہ ان علاقہ جات میں تیل خاکی ،راشن اور دوسری اشیائے ضروریہ فراہم کی جائیں تاکہ کسی مشکل کاسامنا نہ کرناپڑے ۔لورن کے ایک مقامی شخص محمداسلم نائیک نے کہا کہ ضلع کے جن علاقہ جات میں برف باری ہوتی ہے، ان میں انتظامیہ کو عوام کے لئے تمام تر سہولیات پہنچانی چاہئیں ۔ ان

سرنکوٹ میں3 ڈاکٹروں سمیت 5ملازم غیرحاضر

سرنکوٹ//سب ضلع ہسپتال سرنکوٹ کا ایس ڈی ایم سرنکوٹ نریش ڈینگرا نے اچانک دورہ کرکے معائنہ کیا جس دوران تین ڈاکٹروں سمیت پانچ ملازمین کو ڈیوٹی سے غیر حاضر پایاگیاجن کے خلاف اظہار وجوہ کا نوٹس جاری کیاگیاہے۔ایس ڈی ایم کے ساتھ نائب تحصیلدار سرنکوٹ عبدالغنی اعوان بھی تھے۔معائنہ کے دوران تین ڈاکٹر اور دو ملازم غیر حاضر پائے گئے جن کے نام اظہار وجوہ کا نوٹس جاری کیاگیاہے۔ایس ڈی ایم نے لیبارٹری،ادویات اور حاضری رجسٹر کا بھی معائنہ کیا اور ہدایات جاری کیں کہ معیاری ادویات کااستعمال کیاجائے ۔ایس ڈی ایم نے بلاک میڈیکل آفیسر سرنکوٹ کو ہدایات جاری کیں کہ غیر حاضر رہنے کا کوئی بھی جواز نہیں ہو سکتا اور ملازمین کی حاضری کو یقینی بنایاجائے ۔انہوںنے کہاکہ محکمہ صحت میں غیر حاضری نہیںہونی چاہئے کیونکہ ڈاکٹر یا عملہ کی کسی بھی وقت ضرورت پڑ سکتی ہے ۔انہوںنے کہاکہ غیر حاضر رہنے والوں کے خلاف سخت کارروائی کی

منجاکوٹ میں گاڑیوں کا ٹکراو

 منجاکوٹ//منجاکوٹ کے ککوڑہ علاقے میں جموں پونچھ شاہراہ پر ایک مسافر بس نے مخالف سمت سے آرہی سکارپیو کو ٹکر ماردی جس کی وجہ سے اس کا ڈرائیور شدید زخمی ہواہے ۔سکارپیو گاڑی زیر نمبرJK12-78000 پونچھ سے راجوری کی طرف جا رہی تھی جو جموںسے پونچھ جارہی ویڈیو کوچ زیر نمبرJK02BB-2247سے ٹکراگئی جس کے نتیجہ میں دونوں گاڑیوں کے اگلے حصے کو زبردست نقصان پہنچا اور خاص کر سکارپیو کے شیشہ ٹوٹ گئے اور وہ اندردھنس گئی ۔حادثے کے نتیجہ میںسکارپیوکاڈرائیور محمد اکرم سکنہ بھینچ پونچھ شدید طور پر زخمی ہواجسے مقامی لوگوں کی مدد سے فوری طور پر ضلع ہسپتال راجوری منتقل کردیاگیا۔اس حادثے میں بس میں بیٹھے کچھ لوگوں کو بھی معمولی زخم آئے ہیں تاہم مرہم پٹی کرنے کے بعد انہیں گھر بھیج دیاگیاہے ۔اس سلسلے میں پولیس تھانہ میں ایک کیس درج کرکے تحقیقات شروع کردی گئی ہے ۔وہیں مسافر بس کا ڈرائیورمسافروںکو وہیں چھوڑ کر بھ

ایس ڈی ایم سرنکوٹ نے افسران کی میٹنگ طلب کی

سرنکوٹ //ڈاک بنگلہ سرنکوٹ میں ایس ڈی ایم سرنکوٹ نریش ڈینگرا نے تحصیل آفیسران کی جائزہ میٹنگ لی۔اس موقعہ پر ایس ڈی ایم نے افسران کو ہدایت جاری کی کہ لوگوں کے مسائل ترجیحی بنیادوں پہ حل کئے جائیں تاکہ کسی بھی قسم کی شکایت کا موقعہ نہ ملے۔انہوں نے محکمہ پی ایچ ای کے کاموں کا جائزہ لیا اور سختی سے ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا کہ لوگوں کو پانی کی سپلائی وقت پر مہیا کرائی جائے۔ انہوںنے محکمہ امورصارفین کو وقت پر راشن فراہم کرنے کی ہدایت دی جبکہ محکمہ بجلی کو سپلائی نظام میں بہتری کے اقدامات کرنے پر زور دیاگیا۔ایس ڈی ایم نے محکمہ صحت ،محکمہ تعلیم ،میونسپل کمیٹی، محکمہ زراعت اور محکمہ سوشل ویلفیئرو محکمہ تعمیرات عامہ کے افسران سے بھی تعمیروترقی کے کاموں کی جانکاری حاصل کی ۔انہوںنے کہاکہ سبھی ملازمین اور افسران ایمانداری سے کام کریں اور اپنی حاضری کو یقینی بنائیں ۔ 

کسانوں کیلئے بیداری کیمپ

   مینڈھر //ڈاک بنگلہ مینڈھر میںمحکمہ باغبانی کی طرف سے کسانوں کی جانکاری کیلئے ایک کیمپ منعقد کیاگیا۔ اس کیمپ میں ڈھائی سو کے قریب کسانوں نے شرکت کی جن کومحکمہ کی طرف سے چلائی جارہی متعدد سکیموں کے بارے میں جانکاری فراہم کی گئی اوران سے مستفید ہونے پر زور دیاگیا۔ ایس ڈی ایم مینڈھر راہل کمار یادو (آئی اے ایس ) کے علاوہ سی ایچ او پونچھ سشیل کمار ، ہارٹی کلچر ڈیولپمنٹ افسر سید مدثر شاہ اور محمد رفیق بھی اس موقعہ پر موجود تھے ۔

راہ ملن بس سروس ،89مسافر آر پارہوئے

   پونچھ //ہفتہ وار چلنے والی آر پار راہ ملن بس سروس کے ذریعہ 89مسافروں نے حد متارکہ کا سفر کیا ۔اس دوران پاکستانی زیر انتظام کشمیر سے تعلق رکھنے والے42افراد اپنے رشتہ داروںسے ملاقات کے بعد وطن واپس روانہ ہوگئے جبکہ 3مسافر پونچھ سے اُس پار اپنے رشتہ داروں سے ملنے کیلئے گئے ۔اسی طرح سے پاکستانی زیر انتظام کشمیر سے پونچھ پہنچنے والی بس کے ذریعہ 40افراد آئے جن میں4افراد اپنے رشتہ داروںسے ملاقات کے بعد واپس گھرپہنچے ۔  

خبریں

درہال:بارش کے ساتھ ہی بجلی غائب  درہال // درہال میں بارش شروع ہونے کے ساتھ ہی بجلی غائب ہوگئی ہے جس پر مقامی لوگوں نے برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ محکمہ بجلی کی لاپر واہی کا سلسلہ شروع ہوگےاہے ۔مقامی لوگوں کاکہناہے کہ سردیوں کے موسم میں انہیں بجلی کی زیادہ ضرورت رہتی ہے لیکن بدقسمتی سے اسی موسم میں بجلی کی سپلائی متاثر ہوتی ہے اورمتعلقہ حکام کوٹس سے مس نہیں ۔ سرتاج احمد ،ذوالقفار علی اور امجد مرزا نے بتایا کہ پیر کے روز صبح سے ہی بارش کا سلسلہ شروع ہوگےا جس کے ساتھ ہی محکمہ بجلی نے درہال میں بجلی کاٹ دی اور 12گھنٹے گزر جانے کے باوجود بجلی سپلائی بحال نہ ہوئی ۔ انہوں نے محکمہ بجلی کے خلاف سخت برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اس معاملے میں جب راجوری ایگزیکٹو انجینئرسے بات کرتے ہیں تو یہ کہہ کرٹال دیاجاتاہے کہ بجلی کٹوتی والا ونگ ہی الگ ہے لہٰذا دوسرے ایگزیکٹو انجینئر سے بات کی

راجوری میں بجلی کاکٹوتی شیڈول عوام کے لئے درد سر

 راجوری // موسم سرما شروع ہوتے ہی محکمہ بجلی کی طرف سے آنکھ مچولی شروع ہوگئی ہے جس کی وجہ سے عوام سخت پریشان ہے ۔ راجوری قصبہ میں یہ سلسلہ پچھلے ایک ماہ سے جاری ہے جس کی وجہ سے عام لوگوں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہا ہے ۔ مقامی لوگوں نے محکمہ بجلی کے خلاف برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ہزاروں کی تعداد میں محکمہ بجلی کے اہلکاروں کی ملی بھگت سے غےر قانونی کنکشن چل رہے ہیں جس کی وجہ سے فیس اداکررہے صارفین کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہا ہے ۔ ایک مصدقہ اطلاع کے مطابق راجوری قصبہ میں غےر ریاستی باشندوں کی ایک بڑی تعداد موجود ہیں جو پولیس لائنز کے گردونواح میں کرایہ کے مکانوں اور دوکانوں میں مقیم ہیں جنہوں نے غےرمحکمہ بجلی کے اہلکاروں سے مل کر تقریبا 25سو سے زائد غےر قانونی کنکشن لگوائے ہوئے ہیں جن کی ذرئع سے وہ بائلر ،ہیٹر اور دیگر الکٹرانک مشینیں چلارہے ہیں جس کی وجہ سے بجلی سپلائی میں

ٹاٹا سوموحادثے کا شکار، 8مسافر زخمی

اجوری// راجوری سے سرینگر جارہی ایک ٹاٹا سوموبفلیاز کے مقام پر حادثہ کاشکار ہوگئی جس کے نتیجہ میں8افراد زخمی ہوئے ہیں ۔ٹاٹا سومو زیر نمبر JK11A-2583 بفلیاز کے قریب ڈرائیور کے قابوسے باہر ہوکر ایک گہری کھائی میں جاگری میں جس میں سوار 8مسافر زخمی ہوگئے ۔ زخمیوں کو مقامی لوگوں اور پولیس کی مدد سے بفلیاز ہسپتال پہنچایاجہاں تمام زخمیوںکی حالت خطرے سے باہر بتائی جارہی ہے ۔زخمیوں کی شناخت مختار احمد ولد نذیر حسین ساکنہ کالاکوٹ ، عبدالرشید محمد عبداللہ ، گلاب جان دختر محمد عبداللہ ،محمد شفیع ولد محمد عبداللہ ، زبیدہ اختر زوجہ عبدالرشید ساکنان چرار شریف بڈگام، خادم حسین ولد محمد صدیق ساکنہ کوٹرنکہ منزہ کوثر زوجہ محمد ریاض ساکنہ کوٹرنکہ کے طور پر ہوئی ہے ۔وہیں ڈرائیور فیاض محمود ولد نذیر حسین ساکنہ عظمت آباد تھنہ منڈی موقعہ سے فرار ہوگیا۔ بتایاجارہاہے کہ ڈرائیور پوری طرح سے تربیت یافتہ بھی نہیں ت

کچہری کے درمیان تصادم آرائی ،16زخمی

 مینڈھر//مینڈھر کے بھیرہ گاﺅں میں اس وقت 16افراد زخمی ہوگئے جب ایک معاملہ حل کرنے کیلئے بلائی گئی کچہری میں دو دوگروپوںکے درمیان تصادم آرائی ہوگئی ۔ذرائع کے مطابق محمد افسر ولد الف دین اورغلام دستگیر ولد عبدالحمید ساکن بیرہ کے درمیان چل رہے کسی معاملے کو حل کرنے کیلئے ایک کچہری رکھی گئی تھی جس دوران دونوں گروپوں کے درمیان پہلے تلخ کلامی ہوئی اور بعد میں شدید تصادم ہواجس کے نتیجہ میں سولہ افراد زخمی ہوئے جن میںسے کچھ کو شدید چوٹیں آئی ہیں ۔ایک افسر نے بتایاکہ زخمیوں کو فوری طور پر مقامی ہسپتال منتقل کیاگیاجہاں سے کچھ کو راجوری ہسپتال منتقل کیاگیاہے جبکہ باقی کا علاج مینڈھرمیں ہی چل رہاہے ۔زخمیوں کی شناخت اشفاق احمد ، طالب حسین ، محمد یاسمین ، مہناز اختر ، ولی داد ، ذوالفقار احمد ، شہناز اختر ، محمد طاہر ، رسالت علی ، رفاقت علی ، شہناز کوثر ،رخسانہ کوثر ، محمد وسیم ، محمد نوید ، شہن

کلام فاؤنڈیشن پونچھ کے زیر اہتمام یک روزہ سیمینار

پونچھ//اے پی جے عبد الکلام ہیومن ویلفیئر فاؤنڈیشن پونچھ کے بینر تلے کنونشن سینٹر ڈگری کالج پونچھ میں یک روزہ سیمینار کا انعقاد کیا گیا جس کا عنوان’’ تعلیم۔تقسیم کے درد کا مداوا‘‘ تھا۔ اس موقعہ پر قومی اقلیتی کمیشن کے سابق چیئر مین وجاہت حبیب اللہ ،ریاستی خواتین کمیشن کی چیئر پرسن نعیمہ مہجور اوربابا غلام شاہ بادشاہ یونیورسٹی کے سابق وائس چانسلر ڈاکٹر مسعود چوہدری مہمانان کے طور پر شریک ہوئے ۔تینوں مقررین نے تقسیم ہند کو ایک المیہ قرار دیتے ہوئے حکومتوں سے مطالبہ کیا کہ وہ تقسیم سے پیدا ہوئے درد کی دوا کا انتظام کرے ۔انہوںنے حصول تعلیم کو سب سے بڑا ہتھیارقرار دیتے ہوئے کہا کہ قوموں کا مستقبل تعلیم سے ہی جڑاہواہوتا ہے اورجو قومیں مشکل حالات اور تکالیف میں بھی حصول علم کے لئے جدوجہد کرتی ہیں ان کا مستقبل ہمیشہ روشن رہتا ہے اس لئے کشمیر کے رہنے والے وہ سرحدی لوگ جو

بالی بھگت کا دورہ ٔ بدھل

 راجوری //وزیر صحت بالی بھگت سنگھ نے پرائمری ہیلتھ سنٹر بدھل کا درجہ بڑھانے کا اعلان کرتے ہوئے اسے کمیونٹی ہیلتھ سنٹر بنانے کایقین دلایاہے ۔ اپنے دورہ راجوری کے دوران انہوںنے بدھل کے طبی مراکز کامعائنہ کیا جس دوران مقامی لوگوںنے مانگ کی کہ وسیع آبادی اور مریضوں کی بھیڑ کو دیکھتے ہوئے بدھل کے پرائمری ہیلتھ سنٹر کا درجہ بڑھایاجائے جس پر وزیر موصوف نے انجینئروں کوہدایت دی کہ وہ اضافی عمارت کی تعمیر کیلئے تین ہفتوں کے اندراندر ڈی پی آر پیش کریں ۔انہوںنے بدھل کیلئے ایک ایمبولینس گاڑی فراہم کرنے کا اعلان بھی کیا ۔انہوںنے بدھل کے طبی مرکز کا معائنہ بھی کیا اورکام کاج کا جائزہ لیا ۔انہوںنے ڈاکٹروں کو ہدایت دی کہ وہ مریضوںکو بہتر سے بہتر علاج فراہم کریں ۔انہوںنے ہسپتال میں صفائی ستھرائی پر بھی زور دیا۔وزیر موصوف نے کمیونٹی ہیلتھ سنٹر کنڈی کوٹرنکہ کا معائنہ بھی کیا اور طبی عملہ و مریضوںسے