تازہ ترین

نیویارک کے پرہجوم علاقے میں پائپ بم دھماکہ

واشنگٹن// نیویارک کے محکمہ پولیس نے کہا ہے کہ اس کے اہل کار مین ہیٹن کے علاقے میں بم دھماکے کے بعد موقع پر پہنچ گئے ہیں اور ضروری کارروائی کررہے ہیں۔پولیس کی ایک ٹویٹ میں بتایا گیا ہے کہ یہ دھماکہ مین ہیٹن کی 42 سٹریٹ اور 8 ویں ایونیو پر واقع مڈٹاو¿ن میں ہوا۔مقامی میڈیا چینل ڈبلیو اے بی سی نے پولیس کے حوالے سے کہا ہے کہ دھماکہ ممکنہ طور پر پائپ بم کا تھا جسے زیر زمین ایک گذرگاہ میں نصب کیا گیا تھا۔میڈیا رپورٹس کے مطابق دھماکے میں متعدد افراد زخمی ہوئے ہیں۔ڈبلیو پی آئی ایکس ٹیلی وڑن کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ سب وے ٹنل میں ایک شخص کو حراست میں لیا گیا ہے جس پر ایک اور بم رکھنے کا شبہ ہے۔میڈیا ذرائع کا کہنا ہے کہ پیر کی صبح یہ دھماکہ ایک بس اسٹیشن کے قریب ہوا۔خبررساں ادارے اے پی نے بتایا ہے کہ دھماکے کے مقام کے قریب سے گذرنے والی سب ویز کی آمد و رفت میں تاخیر ہو رہی ہے۔نیویارک کے

یروشلم اسرائیل و فلسطین کا مشترکہ دارالحکومت ہے: یورپی یونین

 واشنگٹن//یورپی یونین نے واضح کیا ہے کہ یروشلم اسرائیل اور مستقبل کی فلسطینی ریاست کا مشترکہ دارالحکومت ہونا چاہیے اور اس مقصد کا حصول دونوں فریقین کے درمیان براہِ راست مذاکرات سے ہی ممکن ہے۔صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے یونین کی خارجہ امور کی نگران فیڈیریکا موگیرینی نے کہا کہ تمام یورپی ملکوں کا مشترکہ موقف ہے کہ یروشلم صرف اسرائیل کا دارالحکومت نہیں بلکہ اسے دونوں ریاستوں کا دارالحکومت بننا چاہیے۔انہوں نے کہا کہ وہ یورپی یونین کے اس موقف سے فلسطین کے صدر محمود عباس کو آگاہ کرچکی ہیں اور پیر کو اسرائیلی وزیرِاعظم نیتن یاہو سے ہونے والی ملاقات میں ان پر بھی یہ بات واضح کردیں گی۔اسرائیلی وزیرِاعظم پیر کو برسلز میں یورپی یونین کے وزرائے خارجہ سے ملاقات کر رہے ہیں جس کے ایجنڈے میں امکان ہے کہ یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کا حالیہ امریکی فیصلہ سرِ فہرست ہوگا۔اسرائیلی وزیرِا

جامعہ ازہر کے بعد قبطی چرچ کے پوپ نے بھی امریکی نائب صدر سے ملاقات منسوخ کردی

 قاہرہ// امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے مقبوضہ بیت المقدس سے متعلق حالیہ متنازع فیصلے کے بعد مصر کے قبطی چرچ کے روحانی پیشوا پوپ تواضروس دوم نے بھی احتجاج کے طور پر امریکی نائب صدر مائیک پینس سے قاہرہ میں ان کے دورے کے موقع پر ملاقات نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔قبطی چرچ نے ہفتے کے روز ایک بیان میں کہا ہے کہ امریکی صدر نے بتی المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرتے وقت لاکھوں عرب عوام کے احساسات اور امنگوں کا خیال نہیں کیا ہے۔چرچ کا کہنا ہے کہ اس صورت حال کے پیش نظر پینس کا ان کے دورہ مصر کے موقع پر استقبال نہیں کیا جائے گا۔مائیک پینس دسمبر کے دوسرے پندرھواڑے میں کرسمس سے قبل مصر اور اسرائیل کے دورے پر ا?نے والے ہیں۔ان کا یہ دورہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے یروشیلم کو اسرائیل کا دارالحکومت قرار دینے کے فیصلے کے بعد زیادہ اہمیت اختیار کر گیا ہے۔اس سے پہلے شیخ الازھر نے بھی ٹرمپ کے فلسطین مخالف اعلا

سعودی عرب کا کمرشل سینما پر پابندی ختم کرنے کا اعلان

 ریاض// سعودی عرب کی حکومت نے اعلان کیا ہے کہ انہوں نے سینما گھروں پر لگی 35 برس پرانی پابندی اٹھاتے ہوئے کمرشل سینما کھولنے کی اجازت دے دی۔فرانسیسی خبررساں ادارے اے ایف پی کے مطابق سعودی وزارت برائے ثقافت کی جانب سے جاری ایک اعلامیے میں کہا گیا کہ‘سال نو کے آغاز کے ساتھ ہی سعودیہ میں کمرشل سینما کھولنے کی اجازت ہوگی اور حکومت لائسنس کے اجزاء کے طریقہ کار کا جائزہ لے رہی ہے’۔واضح رہے کہ دو ہفتے قبل سعودی دارالحکومت میں فلم شو منعقد ہوا تھا جسے شہریوں نے ‘تازہ ہوا کا جھونکا’ قرار دیا تھا۔خیال رہے کہ سعودی عرب نے 1980 میں سینما کو مذہبی اور ثقافتی رویے کے منفی قرار دیتے ہوئے پابندی عائد کی تھی۔قدامت پسندوں کی مخالفت کے باوجود سینما پر پابندی اٹھانے کے فیصلے کو سعودی عرب کے وڑن 2030 کے تناظر میں دیکھا جارہا ہے۔سعودی وزیر برائے ثقافت و اطلاعات عواد بن صالح العو

یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کا معاملہ, قاہرہ میں عرب ممالک کے 22 وزرائے خارجہ کے ہنگامی اجلاس

 قاہرہ //عرب لیگ نے امریکہ سے کہا ہے کہ وہ یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کے فیصلے کو منسوخ کر دے کیونکہ اس سے خطے میں تشدد میں اضافہ ہو گا۔قاہرہ میں عرب ممالک کے 22 وزرائے خارجہ کے ہنگامی اجلاس کے بعد اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ ’امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے بدھ کو کیا گیا اعلان ’عالمی قوانین کی خطرناک خلاف ورزی ہے جس کی کوئی قانونی حیثیت نہیں ہے۔‘عرب لیگ کی جانب سے یہ اعلامیہ مصر کے مقامی وقت صبح تین بجے جاری کیا گیا۔اعلامیے میں مزید کہا گیا ہے کہ امریکہ کا اسرائیل کے پورے یروشلم پر دعوے کو تسلیم کیے جانے سے امریکہ کی اس پالیسی کے منافی ہے جس کے تحت یروشلم کا فیصلہ مذاکرات کے ذریعے ہونے چاہیے۔عرب لیگ کا مزید کہنا ہے کہ ’امریکہ کے فیصلے کی کوئی قانونی حیثیت نہیں ہے۔۔۔ اس سے کشیدگی میں اضافہ ہو گا، غصہ اور بھڑکے گا اور خطرہ ہے کہ خطے میں مزید

اسرائیل دوسرے ملکوں پردباو ڈال رہا ہے

 قاہرہ//فلسطینی وزیرخارجہ ریاض المالکی نےکہا ہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے بیت المقدس کو اسرائیلی ریاست کا دارالحکومت تسلیم کیے جانے کے بعد اسرائیل دوسرے ملکوں پر القدس کو صہیونی ریاست کا دارالحکومت تسلیم کرانے کے لیے دباو¿ ڈال رہا ہے۔اطلاعات کے مطابق قاہرہ میں فلسطینی سفارت خانے میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب میں ریاض المالکی نے کہا کہ فلسطینی قوم نے کلی طورپر القدس بارے امریکی فیصلے کو مسترد کردیا ہے۔ المالکی نے ٹرمپ کے القدس بارے اقدام کو غیرقانونی، غیرآئینی، باطل، عالمی موقف اور امریکا کی روایتی پالیسی کے خلاف قرار دیا۔انہوں نے کہاکہ امریکی اقدام القدس کی آئینی اور قانونی حیثیت تبدیل نہیں کرسکتا۔ القدس فلسطینی ریاست کا اٹوٹ انگ ہے۔ ٹرمپ کے اعلان سے القدس کے بیت المقدس کےآئینی اور مذہبی اسٹیٹس پر کوئی فرق نہیں پڑے گا۔ایک سوال کے جواب میں فلسطینی وزیرخارجہ نے کہا

شامی بحران: شامی حکومت کا وفد جنیوا مذاکرات میں شامل

جنےوا // شامی وزارت خارجہ کے ایک اعلان کے مطابق حکومتی وفد اقوام متحدہ کے زیر سر پرستی مذاکرات میں شرکت کے لیے اتوار کے روز جنیوا واپس آئے گا۔جنیوا مذاکرات کے دوسرے مرحلے کا آٹھواں دور منگل کے روز دوبارہ شروع ہوا جس میں شامی اپوزیشن کے وفد اور شام کے لیے اقوام متحدہ کے خصوصی ایلچی اسٹیفن ڈی میستورا نے شرکت کی۔ ڈی میستورا کے مطابق بات چیت کا حالیہ دور رواں ماہ کے وسط تک جاری رہ سکتا۔شامی حکومت کے وفد کی جنیوا واپسی روس کے دباو¿ اور اقوام متحدہ کے خصوصی ایلچی کی جانب سے خبردار کیے جانے کے بعد عمل میں آئی۔اس کے مقابل اپوزیشن کے وفد کا کہنا ہے کہ بشار کے رخصت ہونے کے مطالبے کو منجمد کرنے اور بات چیت میں ک±رد ڈیموکریٹک یونین پارٹی کی نمائندگی کو قبول کرنے کے لیے وفد کے ارکان پر امریکا اور یورپ کی جانب سے دباو¿ ڈالا گیا۔جنیوا میں بات چیت کا آٹھواں دور نومبر کے اواخر م

لبنان میں اعلانِ یروشلم کے خلاف امریکی سفارت خانے کے باہر مظاہرے اور جھڑپیں

 لبنان//اعلانِ یروشلم کے خلاف لبنان کے دارالحکومت بیروت میں امریکی سفارت خانے کے قریب سکیورٹی فورسز اور مظاہرین کے درمیان جھڑپیں ہوئی ہیں۔ سکیورٹی فورسز نے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے آنسو گیس کا استعمال بھی کیا ہے۔اطلاعات کے مطابق یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کے فیصلے کے خلاف مظاہرین احتجاج کر رہے تھے اور انھوں نے سیاہ جھنڈے اٹھا رکھے تھے۔  

غزہ سے راکٹ حملوں کے بعد اسرائیل کی فضائی کارروائیاں

غزہ // فلسطینی علاقوں میں اسرائیل کی فضائی بمباری سے 2 بچوں سمیت 4 افراد  جان بحق اور سیکڑوں زخمی ہوگئے ہیں جب کہ گزشتہ دو دن کے دوران جام شہادت نوش کرنے والے فلسطینیوں کی تعداد 6 ہوگئی ہے۔امریکا کی جانب سے مقبوضہ بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت قرار دینے اور اپنا سفارت خانہ منتقل کرنے کے اعلان کے بعد مقبوضہ فلسطین میں صورت حال مزید بگڑ گئی ہے، گزشتہ چار روز سے غزہ اور مغربی کنارے میں اسرائیل کے خلاف احتجاج کا سلسلہ مزید تیز ہوگیا ہے۔ اسرائیل نے فلسطینی علاقوں سے راکٹ داغنے کا الزام لگا کر بے گناہ فلسطینیوں پر بمباری کردی ہے۔اسرائیل کا کہنا ہے کہ اس نے غزہ سے راکٹ فائر کیے جانے کے جواب میں فلسطین کے عسکری گروپ حماس کے خلاف فضائی کارروائیاں کی ہیں۔اسرائیلی کا کہنا ہے کہ سنیچر کی صبح کی جانے والی کارروائیوں میں ہتھیار تیار کرنے والے ایک مرکز اور اسلحے کے گودام کو نشانہ بنایا گیا

امریکا امن عمل کی سرپرستی کا اہل نہیں رہا : محمود عباس

 غزہ // فلسطینی صدر محمود عباس نے باور کرایا ہے کہ امریکا اب فلسطینیوں اور اسرائیلیوں کے درمیان امن عمل کی سرپرستی کا اہل نہیں رہا۔ فلسطینی صدر کا یہ بیان امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے بیت المقدس کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کے جواب میں سامنے آیا ہے۔جمعے کے روز جاری ایک بیان میں عباس نے کہا کہ "ہم بیت المقدس کے حوالے سے امریکی موقف کو ایک بار پھر مسترد کرتے ہیں۔ اس موقف کے ساتھ امریکا کسی طور بھی امن عمل کی سرپرستی اور نگرانی کرنے کے قابل نہیں رہا"۔محمود عباس نے عالمی برادری کی جانب سے متفقہ طور پر مذکورہ امریکی فیصلے کی مذمّت کا خیر مقدم کیا۔ جمعے کی شام امریکی فیصلے پر بحث کے لیے سلامتی کونسل کے اجلاس میں یہ مذمّت واضح طور پر دیکھنے میں آئی۔عباس نے زور دے کر کہا کہ امریکی فیصلے کو مسترد کرنے کے حوالے سے عالمی برادری کا اتفاقِ رائے فلسطینی عوام کے حقوق اور ان کے مس

ٹرمپ کے فیصلے کے خلاف کوالالمپور میں ملین مارچ

 کوالالمپور//ملائیشیا کے صدر مقام کوالالمپور میں کل جمعہ کے روز نماز جمعہ کے اجتماعات کے بعد لاکھوں افراد نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی طرف سے مقبوضہ بیت المقدس کو اسرائیلی ریاست کا دارالحکومت قرار دیے جانے کے خلاف احتجاجی جلوس نکالا۔اطلاعات کے مطابق کوالالمپور میں ہونے والے اس عظیم الشان مظاہرے کے شرکاء نے امریکی سفارت خانہ کی طرف مارچ کیا اور سفارت خانے کے باہر دھرنا بھی دیا۔ مظاہرین نے ہاتھوں میں بینرز اور کتبے اٹھا رکھے تھے جن پر امریکا اور اسرائیل کے خلاف شدید نعرے درج تھے۔اس موقع پر حکمراں جماعت ’اومنو‘ کے سربراہ خیری جمال نے امریکی سفارت خانے میں ایک احتجاجی یاداست بھی جمع کرائی۔ اس یاداشت میں کہا گیا ہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا القدس کے بارے میں فیصلہ غیر قانونی اور ناقابل قبول ہے۔یاداشت میں کہا گیا ہے کہ جناب صدر آپ کا القدس کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرنے

القدس سے متعلق امریکی صدر کا فیصلہ

    نیو یارک //اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے ہنگامی اجلاس میں یورپی ممالک نے بیت المقدس یروشلم کو اسرائیل کا دارلحکومت قرار دینے کے امریکی فیصلے پر تنقید کرتے ہوئے اس کو اقوام متحدہ کی قراردادوں کے خلاف قرار دے دیا۔سلامتی کونسل کے اجلاس میں برطانیہ، فرانس، جرمنی، اٹلی اور سویڈن کے سفیروں نے امریکی فیصلے کو خطے کے امن کے لیے غیرمفید قرار دیا۔امریکہ کے بیت المقدس کے حوالے سے فیصلے پر 8ممالک کی جانب سے طلب کیے گئے ہنگامی اجلاس کے مشترکہ اعلامیہ میں پانچ یورپی ممالک نے فیصلے کی مخالفت کرے ہوئے واضح طور پر کہا کہ ٹرمپ کا یہ قدم اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قرار دادوں کے مطابق نہیں ہے اور غیر مفید ہے۔اجلاس میں سفیروں کی جانب سے ٹرمپ کے فیصلے کے بارے میں کہا گیا کہ یہ چلا ہوا کارتوس نظر آتا ہے اور اقوام متحدہ کے اجلاس میں کیا توقعات ہیں کچھ نہیں۔ تاہم ایک سفیر نے کہا کہ یہاں پر

یروشلم کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرنے کا معاملہ

 غزہ//مقبوضہ بیت المقدس کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرنے کے امریکی اعلان کے خلاف دنیا بھر میں مسلمانوں نے احتجاجی مظاہرے شروع کردیے ہیں جس میں فیصلے پر شدید غم و غصے کا اظہار کیا جارہا ہے۔ فلسطینی تنظیم حماس کے سربراہ اسماعیل ہنیہ کی اپیل پر ملک بھر میں امریکی فیصلے کے خلاف یومِ غضب منایا جارہا ہے، غزہ میں فلسطینیوں اور اسرائیلی فوجیوں کے درمیان جھڑپوں اور احتجاجی مظاہرین پر صیہونی فوج کے تشدد اور فائرنگ کے نتیجے میں 104 افراد زخمی ہوئے ہیں۔اہلِ فلسطین امریکی اعلان کے ردعمل میں آج دوسرے روز بھی سراپا احتجاج ہیں جس کی وجہ سے بعض علاقوں میں مکمل ہڑتال ہے اور تعلیمی ادارے بھی بند ہیں جب کہ خواتین اور بچوں سمیت مظاہرین سڑکوں پر امریکی صدر کی تصاویر اور جھنڈے جلارہے ہیں۔ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی طرف سے مقبوضہ بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کئے جانے کے بعد فلسطین میں ایک نئی

مقبوضہ بیت المقدس کا اسلامی تشخص کبھی ختم نہیں ہوگا: امام حرم

 مکہ مکرمہ//الحرمین ا لشریفین انتظامیہ کے سربراہ اور حرم مکی شریف کے امام وخطیب شیخ ڈاکٹر عبد الرحمن السدیس نے کہا ہے کہ بیت المقدس عرب اور اسلامی شہر ہے اور اس کی یہ شناخت کبھی ختم نہیں گی۔الحرمین الشریفین کے علماء کی نمائندگی کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ بیت المقدس مسلمانوں کا قبلہ اول اور تیسرا حرم شریف ہے۔ یہ رسول اکرمکی جائے اسراء بھی ہے۔ مسئلہ فلسطین اور بیت المقدس کے حوالے سے سعودی عرب کا اصولی موقف ہے۔  

القدس بارے ٹرمپ کا فیصلہ باطل ہے: شاہ عبداللہ، محمود عباس

 عمان // اردن کے فرمانروا شاہ عبداللہ دوم اور فلسطینی اتھارٹی کے سربراہ محمود عباس نے صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی طرف سے مقبوضہ بیت المقدس کو صہیونی ریاست کا دارالحکومت قرار دیے جانے کی شدید مذمت کرتے ہوئے اسے ’باطل‘ قرار دیا ہے۔اطلاعات کے مطابق عمان میں شاہی دیوان کی جانب سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ مملکت کے فرمانروا شاہ عبداللہ دوم نے فلسطینی بھائیوں کے ساتھ مکمل حمایت کا اعلان کیا ہے۔ اردن فلسطینیوں کے تاریخی حقوق اور دیرینہ مطالبات کی حمایت جاری رکھے گا۔ القدس کے بارے میں امریکی صدرکا فیصلہ ناقابل قبول ہے۔ اردن کی حکومت مشرقی بیت المقدس کو فلسطینی ریاست کا دارالحکومت بنانے کی مساعی جاری رکھے گی۔قبل ازیں فلسطینی اتھارٹی کے سربراہ محمود عباس نے عمان میں اردنی فرمانروا شاہ عبداللہ دوم سے ملاقات کی۔ ملاقات میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی طرف سے بیت المقدس کو اسرائیلی ری

یروشلم پر امریکی فیصلے سے انتہا پسندی کو فروغ مل سکتا ہے:چین

 بےجنگ //چین کے سرکاری میڈیا نے کہا ہے کہ یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کے امریکی صدر کے فیصلے کے بڑے پیمانے پر منفی اثرات مرتب ہوں گے۔اخبارات کے کچھ اداریوں میں کہا گیا ہے کہ ٹرمپ کا یہ فیصلہ امریکی سر زمین پر مزید دہشت گرد حملوں کی راہ ہموار کر سکتا ہے اور اس سے امریکی معیشت کو بھی نقصان پہنچ سکتا ہے۔اخبارات کا کہنا ہے کہ صدر ٹرمپ کے اس فیصلے سے واشنگٹن اور عرب دنیا میں اس کے اتحادیوں کے درمیان تعلقات میں بگاڑ پیدا ہوگا۔چینی اخبارت کے مطابق بیجنگ میں اس فیصلے کو خطرناک اور غیر دانش مندانہ تصور کیا جا رہا ہے۔سرکاری ٹیلی وڑن پر دن بھر نشر کی جانے والی طویل دورانیے کی ایک رپورٹ میں یہ خدشہ ظاہر کیا گیا ہے کہ ٹرمپ کے فیصلے سے مشرق وسطیٰ میں عدم استحکام جنم لے سکتا ہے۔چائنا گلوبل ٹائمز نے اپنی ایک رپورٹ میں یہ پیش گوئی کی ہے کہ اس سے عرب اور مسلم اقوام ایک دوسرے کے قریب

بھارت کا ڈرون چینی سرحد میں داخل

  سرینگر // چین نے دعوی کیا ہے کہ ایک بھارتی ڈرون اس کی ہوائی سرحد میں دراندازی کرنے کے بعد واپس اپنے علاقے میں جاکر تباہ ہو گیا۔ ویسٹرن تھیٹرکاامبیٹ بیورو کے ڈپٹی ڈائرکٹر ژانگ شوئی لی نے کہا کہ یہ حالیہ دنوں کا واقعہ ہے۔ انہوں نے تاہم واقعہ کے اصل مقام کے بارے میں کوئی تفصیل نہیں بتائی۔ چین کی سرکاری نیوز ایجنسی ژنہوا نے مسٹر شوئی لی کے حوالہ سے کہا کہ ہندوستان نے چین کی علاقائی خودمختاری کی خلاف ورزی کی ہے۔ ہمالیائی سطح مرتفع کے ایک علاقہ پر دونوں ممالک کے درمیان اس سال موسم گرما میں تنازعہ ابھر کر سامنے آیا تھا۔گزشتہ جون میں ہندوستان، چین اور بھوٹان کی سرحد پر واقع ڈو?لام / ڈوگلانگ سطح مرتفع تک چین کی جانب سے سڑک کی تعمیر کی ہندوستان نے سخت مخالفت کی تھی۔اس علاقے پر بھوٹان کے قبضے کا ہندوستان حمایت کرتا ہے جبکہ چین بھی اس کا مدمقابل ہے۔ ہندوستان نے چین کے تازہ دعوے کو لے کر اب

تکنیکی خرابی کا نتیجہ: وزارت خارجہ

 نئی دہلی// ہندستان نے کہا کہ اس کا ڈرون تکنیکی خرابی کی وجہ سے سکم سیکٹر میں حقیقی کنٹرول لائن پار کرکے چینی سرحد میں داخل ہوگیا تھا۔ چین کی طرف سے اس پر سخت ناراضگی درج کرانے اور اسے سرحد میں غیرقانونی دراندازی قرار دیئے جانے کے بعدیہاں وزارت خارجہ کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ کل ایک بغیرپائلٹ کا ڈرون ہندستانی علاقہ میں باقاعدہ تربیتی پرواز پر تھا جو اچانک تکنیکی خرابی کی وجہ سے کنٹرول کھو بیٹھا اور سکم سیکٹر میں حقیقی کنٹرول لائن کو پارکر چین کی سرحد میں داخل ہوگیا۔وزارت خارجہ نے کہا کہ اس پورے معاملہ کی تفتیش طے شدہ ضابطوں کے تحت کی جارہی ہے۔ اس سے پہلے چین کی سرکاری خبررساں ایجنسی ڑنہوا نے اپنی خبروں میں چین کے مغربی فوجی کمان کے ڈپٹی چیف شوئلی ڑانگ کے حوالے سے کہا تھا کہ چین کی سرحد میں اس طرح ہندستانی ڈرون کا داخل ہونا چین کی خودمختاری کی خلاف ورزی ہے جس کی چین سخ

اسرائیلکے دارالحکومت کاتنازعہ

واشنگٹن//امریکہ کے اعلیٰ حکام کے مطابق صدر ڈونلڈ ٹرمپ یکطرفہ طور پر یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کر لیں گے جبکہ سعودی عرب کے شاہ سمیت دیگر ہنماؤں نے انھیں متنبہ کیا ہے کہ اس کے سنگین نتائج برآمد ہو سکتے ہیں۔ٹرمپ انتظامیہ کے اعلی اہلکاروں کی جانب سے صدر ٹرمپ کی جانب سے یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کے حوالہ سے بیان ایسے وقت کیا گیا ہے جب بدھ کو صدر ٹرمپ کا خطاب متوقع ہے ۔اس سے پہلے امریکی صدر نے منگل کو متعدد علاقائی رہنماؤں کو فون کر کے بتایا کہ وہ اسرائیل میں امریکی سفارت خانے کو تل ابیب سے یروشلم منتقل کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں۔سعودی عرب کی سرکاری پریس ایجنسی کے مطابق شاہ سلمان نے ڈونلڈ ٹرمپ کو بتایا کہ اسرائیل میں امریکی سفارت خانے کو تل ابیب سے یروشلم منتقل کرنے یا یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے سے 'دنیا بھر کے مسلمانوں میں اشتعال پیدا ہو سکتا ہے

رضی ثقل میں تبدیلی سے زلزلوں کی منٹوں قبل پیشگوئی ممکن : ماہرین

 پیرس//دنیا بھر میں زلزلوں سے سالانہ ہزاروں اموات ہوتی ہیں اور اب تک زلزلوں کو دنیا میں تیز ترین اموات والی آفت قرار دیا جاتا ہے لیکن اب تک ان کی پیش گوئی محال ہے۔زلزلے زمین کی چٹخے ہوئے رخنوں (فالٹ) میں حرکت کی وجہ سے آتے ہیں اور اگر چند منٹ قبل بھی ان کی پیش گوئی ممکن ہو تو اس سے لاتعداد قیمتی جانیں بچائی جاسکتی ہیں۔ فی زمانہ زلزلے شناخت کرنے والے وارننگ نظام زلزلوں کی امواج نوٹ کرتے ہیں جو زمین میں سات سے آٹھ کلومیٹر فی سیکنڈ کی رفتار سے سفر کرتی ہیں جبکہ کشش ثقل کے اثرات ایک سیکنڈ میں 3 لاکھ کلومیٹر کا سفر طے کرتے ہیں یعنی اگر سطح زمین پر کششِ ثقل میں ہونے والی معمولی تبدیلیوں کو نوٹ کرنے کا کوئی طریقہ واضع کرسکیں تو اس سے 40 ہزار گنا تیزی کے ساتھ زلزلوں کو محسوس کرنا ممکن ہوجائے گا۔اسی تحقیق کو آگے بڑھاتے ہوئے پیرس میں انسٹی ٹیوٹ آف ارتھ فزکس نے 2011 میں جاپان میں آنے و