تازہ ترین

شام: کیمیائی ہتھیاروں کے انسپکٹرز تحقیقات کیلئے دومہ میں داخل

 دمشق// بین الاقوامی تحقیق کاروں کی ٹیم شام میں مبینہ کیمیائی حملے کا شکار بننے والے علاقے میں کئی دن کے تعطل کے بعد داخل ہوگئی۔دمشق کے قریب دومہ میں مشتبہ طور پر 7 اپریل کو ہونے والے گیس حملے میں 40 کے قریب افراد ہلاک ہوئے تھے جس کا ذمہ دار مغربی قوتوں کی جانب سے شامی صدر بشار الاسد کو ٹھہرایا جارہا تھا۔ان الزامات کے پیش نظر امریکا، فرانس اور برطانیہ نے شامی فوج کے ٹھکانوں پر میزائل حملے کیے تھے تاہم پیرس کی جانب سے اعتراف کیا گیا کہ یہ معاملہ عزت کا تھا اور اس سے کچھ حل نہیں ہوسکا۔شام کے سرکاری خبر رساں ادارے ثناء￿  نے کیمیائی ہتھیار کے روک تھام کے ادارے (او پی سی ڈبلیو) کا حوالہ دیتے ہوئے کہا تھا کہ کیمیائی ہتھیاروں کے ماہرین کی کمیٹی دومہ میں داخل ہوگئی ہے۔انسپکٹرز مغربی حملے کے وقت دمشق میں داخل ہوئے تھا تاہم انہیں دومہ جانے کی اجازت نہیں دی گئی تھی۔فرانس اور امریکا نے ا

ریم اور روم کی ضرورت ختم کرنے والی نئی میموری تیار

شنگھائی// ہم جانتے ہیں کہ کمپیوٹر سے لے کر اسمارٹ فون تک میں اب بھی دو اقسام کی میموریز استعمال ہوتی ہیں جن میں سے ایک ریڈ اونلی میموری (روم) ہے اور دوسری رینڈم ایکسیس میموری (ریم) ہے لیکن ایک نئی طرح کی میموری سے اب یہ ضرورت ختم ہوجائے گی۔روم کا کام یہ ہوتا ہے کہ وہ کمپیوٹر، لیپ ٹاپ، ٹیبلٹ یا اسمارٹ فون کو بوٹ کرتی ہے جبکہ ریم کی بدولت پروگرام اور ایپس چلائی جاتی ہیں تاہم اب ماہرین نے ایک تیسری قسم کی میموری میں کامیابی حاصل کی ہے جو اپنے بل پر سارے کام کرنے کے ساتھ ساتھ دیگر امور بھی انجام دیتی ہے۔شنگھائی میں واقع فیوڈان یونیورسٹی کے ماہرین نے اس قسم کی میموری پر ایک تحقیقی مضمون شائع کرایا ہے جسے ہفت روزہ سائنسی جریدے نیچر نینوٹیکنالوجی میں شامل کیا گیا ہے۔ تحقیق کے مطابق یہ نئی قسم کی میموری نہ ریم میں شمار ہوتی ہے اور نہ ہی روم کہلائے گی۔ہم جانتے ہیں کہ فوری طور پر ضروری ڈیٹا رینڈ

سی آئی اے ڈائریکٹر کی کم جونگ سے خفیہ ملاقات کا انکشاف

واشنگٹن // امریکی اخبار واشنگٹن پوسٹ نے سی آئی اے ڈائریکٹر مائیک پومپیو کی شمالی کوریا کے سربراہ کم جونگ ان سے خفیہ  ملاقات کا انکشاف کیا ہے، خفیہ ملاقات کاصرف دو لوگوں کو معلوم تھا۔تفصیلات کے مطابق امریکی اخبار واشنگٹن پوسٹ نے دعویٰ کیا ہے کہ نامزد وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے شمالی کوریا کا خفیہ دورہ کیا تھا اور  ٹرمپ کے سفیر کی حیثیت سے شمالی کوریا کے سربراہ کم جونگ ان سے  پیانگ یانگ میں ملاقات کی تھی۔میڈیا رپورٹس کے مطابق سی آئی اے چیف اور کم جونگ ان کی خفیہ ملاقات کا صرف دو لوگوں کو معلوم تھا اور ملاقات کا مقصدصدرٹرمپ اورکم جونگ کی ملاقات کی تفصیلات طے کرنا تھا۔دوسری جانب امریکی صدرڈونلڈ ٹرمپ کا کہنا ہے کہ شمالی کوریا سے اعلیٰ ترین سطح پر براہ راست بات چیت ہو رہی ہے، بہت جلد ان سے ملنے کی امید ہے۔فلوریڈا میں صدر ٹرمپ نے جاپان کے وزیراعظم شِنزو آبے سے ملاقات کے موقع

فرانس کی عدالت نے بچے کا نام ’جہاد‘ رکھنے پر پابندی لگادی

پیرس// فرانس کی ایک عدالت نے ’جہاد‘ نامی بچے کا نام تبدیل کرکے جاہد رکھ دیا۔بین الاقوامی میڈیا رپورٹس کے مطابق فرانسیسی عدالت نے والدین کو اپنے بچے کا نام ’جہاد‘ رکھنے پر پابندی لگاتے ہوئے اسے تبدیل کرنے کا حکم سنا دیا۔ عدالتی حکم میں کہا گیا ہے کہ والدین ’جہاد‘ کی بجائے کوئی بھی دوسرا نام منتخب کرسکتے ہیں۔جنوب مغربی شہر ٹولوس کی عدالت نے اپنے فیصلے میں فوری طور پر پیدائشی سرٹیفکیٹ سے بچے کا نام ’جہاد‘ تبدیل کرنے کا حکم دیتے ہوئے  سرٹیفکیٹ میں درج نام کے پہلے لفظ ’جاہد‘ کو اصلی نام کے طور پر رکھنے کی ہدایت کردی۔واضح رہے کہ لفظ جہاد کے معنی جدوجہد کے ہیں تاہم اس وسیع المفہوم والے لفظ کو مغربی ممالک اور غیر مسلم قتل و غارت کے طور پر لیتے ہیں۔  

کیمیائی حملے کے ثبوتوں سے چھیڑ چھاڑ نہیں ہوئی:روس

لندن//روس نے شام میں مشتبہ کیمیائی حملے والی جگہ پر ثبوتوں کے ساتھ کسی طرح کی چھیڑ چھاڑ کرنے کے الزام سے انکار کیا ہے ۔بی بی سی کی رپورٹ کے مطابق روس کے وزیر خارجہ سرگئی لاوروف نے ایک انٹرویو میں کہاکہ میں دعوے کے ساتھ کہہ سکتا ہوں کہ روس نے اس جگہ پر کوئی چھیڑ چھاڑ نہیں کی ہے ۔برطانیہ اور امریکہ کا الزام ہے کہ روس داوما میں مشتبہ کیمیائی حملہ کے ثبوت مٹانے کے لئے شامی حکومت کی مدد کررہا ہے ۔ بین الاقوامی تفتیش کار داوما قبصہ تک نہیں پہنچ سکے ہیں۔ امریکہ نے کیمیائی ہتھیاروں کی نگرانی کرنے والے بین الاقوامی گروپ کو ہوشیار کیا تھا کہ مشتبہ کیمیائی حملے والی جگہ پر روس ثبوتوں کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کرسکتا ہے ۔ آرگنائزیشن فار پروہی بیشن آف کیمکل ویپنس (او پی سی ڈبلیو) پوری دنیا میں کیمیائی ہتھیاروں کو تباہ کرنے اور انکی روک تھام کے لئے کام کررہی ہے ۔اس دوران  تفصیلات کے مطابق روسی فوج کا ک

’ٹرمپ، امریکی صدارت کیلئے اخلاقی طور نااہل ‘:سابق ایف بی آئی سربراہ

واشنگٹن// امریکی خفیہ ادارے ایف بی آئی کے سابق سربراہ جیمس کومی نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو صدارت کے لیے ’اخلاقی طور پر نااہل‘ قرار دے دیا۔ڈان اخبار کی رپورٹ کے مطابق امریکی نشریاتی ادارے اے بی سی نیوز کو دیئے گئے ایک انٹرویو میں سابق سربراہ ایف بی آئی نے کہا کہ ڈونلڈ ٹرمپ جھوٹ بولنے کے عادی ہیں اور وہ اپنے ’ارد گرد افراد کے لیے بدنما داغ ہیں‘۔خیال رہے کہ جیمس کومی کے بیان کے بعد امریکی صدر اور ان کے درمیان ایک نئی لفظی جنگ کا آغاز ہوگیا اور ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے ٹوئٹر اکاؤنٹ پر ایف بی آئی کے سابق سربراہ کو ’ناپسندیدہ‘ شخص قرار دیا اور کہا کہ انہیں جیل میں ہونا چاہیے تھا۔مزید پڑھیں: ڈونلڈ ٹرمپ کے خلاف جنسی طور پر ہراساں کرنے کے الزامات کی تحقیقات کا مطالبہجیمس کومی کی جانب سے یہ انٹرویو ایک ایسے وقت میں دیا گیا کہ جب ان کی یادگار ’ایک اعلیٰ و

افریقہ: مسلمانوں نے اذان کے لیےواٹس ایپ استعمال کی تجویز مسترد کردی

گھانا// افریقی ملک گھانا میں محکمہ ماحولیات نے لاؤڈ اسپیکر پر پابندی اور اذان کے لیے واٹس ایپ استعمال کرنے کی تجویز دے دی جسے مقامی مسلمانوں نے احتجاج کرتے ہوئے مسترد کردیا۔تفصیلات کے مطابق گھانا کے حکام کا کہنا ہے کہ مساجد شور کے مسائل میں اضافے کا سبب بن رہی ہیں، مسلمان اذان کے لیے لاؤڈ اسپیکر کی جگہ واٹس ایپ میسجز استعمال کرکے لوگوں کو نماز کے لیے بلائیں۔گھانا حکام کی جانب سے مسلمانوں کے خلاف اس متعصبانہ تجویز پر مقامی علما نے شدید رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ لاؤڈ اسپیکر کی آواز تو کم کی جاسکتی ہے لیکن ٹیکسٹ مسیجز کی تجویز ناقابل قبول ہے۔مقامی مسلمانوں کا مؤقف ہے کہ وہ صبح سویرے اذان دے کر کوئی برائی نہیں کرتے، چرچ کے لاؤڈ اسپیکر مساجد سے بھی بڑے ہیں، مساجد میں لاؤڈ اسپیکروں پر پابندی تعصب کا شاخسانہ ہے اور یہ انسانی حقوق کی خلاف ورزی ہے۔  

سابق عراقی صدر صدام حسین کا مقبرہ مسمار، لاش قبر سے غائب

بغداد// عراقی شہر تکریت میں صدام حسین کا مقبرہ فضائی بمباری سے تباہ ہوگیا ہے جب کہ ان کی لاش بھی قبر سے غائب ہے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق سابق عراقی صدر صدام حسین کا مقبرہ فضائی بمباری میں تباہ ہوگیا ہے جب کہ ان کی قبر سے لاش بھی غائب ہے۔ صدام حسین کو دسمبر 2006 میں پھانسی دی گئی تھی اور ان کی لاش کو اس وقت کے صدر جارج ڈبلیو بش کے حکم پرعراقی شہر تکریت بھیجا گیا تھا جہاں صدام حسین کے قبیلے ابونصرکے سربراہ شیخ مناف علی الندا نے لاش وصول کرکے لاش کو سابق عراقی صدر کے آبائی علاقے العوجا میں دفن کرکے اس پر مقبرہ بنا دیا تھا۔صدام حسین کی تاریخ پیدائش 28 اپریل ہے اور ہرسال اسی روز ان کی قبر پر زائرین کی بڑی تعداد اور اسکول کے بچے حاضری دیتے ہیں تاہم اب مقامی میڈیا نے علاقے کے رہائشیوں کے بیانات کے بعد اس بات کا انکشاف کیا ہے کہ عراقی طیاروں کی بمباری کے نتیجے میں سابق صدر صدام حسین کا

عرب لیگ کے رہنماؤں کا شام میں کیمیائی حملے پر عالمی تحقیق کا مطالبہ

ریاض//سعودی عرب کے شہر دہران میں عرب لیگ کے رہنماؤں نے کانفرنس کے اختتام پر شام میں کیمیائی حملے کے استعمال پر عالمی سطح پر تحقیق کا مطالبہ کیا ہے اور ایران کی دوسرے ممالک میں مبینہ مداخلت کی مذمت کی ہے۔واضح رہے کہ علاقائی حریف سعودی عرب اور ایران کئی دہایئوں سے خطے میں برتری قائم کرنے کے لیے تگ و دو میں مصروف ہیں اور اب اس کے لیے دوسرے ممالک جیسے شام اور یمن میں پراکسی جنگ میں مصروف ہیں۔عرب لیگ کا یہ اجلاس امریکہ، برطانیہ اور فرانس کی جانب سے شام پر میزائل حملوں کے اگلے روز شروع ہوا ہے۔ یاد رہے کہ عرب لیگ نے شام کی رکنیت سات سال قبل منسوخ کر دی تھی۔خبر رساں ادارے روئٹرز کے مطابق کانفرنس کے اختتام پر میڈیا کو دی گئی دستاویز شامل ممالک کے رہنماؤں کے مشترکہ بیان میں کہا گیا کہ 'ہم اپنے شامی بھائیوں پر استعمال ہونے والے کیمیائی حملے کی بھرپور مذمت کرتے ہیں اور عالمی برادری سے مطالبہ

امریکہ شام میں مزید قیام پر راضی: فرانسیسی صدر

 فرانس//فرانس کے صدر ایمینوئل میخواں نے کہا ہے کہ انھوں نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو راضی کر لیا ہے کہ وہ شام سے اپنی فوج کو وطن واپس نہ بلائیں اور انھیں شام میں 'طویل مدت' کے لیے تعینات کریں۔یاد رہے کہ اس ماہ کے آغاز میں صدر ٹرمپ نے کہا تھا کہ 'امریکہ شام سے بہت جلد نکل جائے گا۔'ٹی وی انٹرویو میں فرانس کے صدر نے مزید کہا کہ انھوں نے صدر ٹرمپ کو کہا ہے کہ شام پر حملوں کی تعداد محدود رکھیں۔واضح رہے کہ سنیچر کو امریکہ نے اپنے اتحادی فرانس اور برطانیہ کے ساتھ شامی حکومت کے دوما پر مبینہ کیمیائی حملے کے جواب میں ٹوماہاک میزائلوں سے حملہ کیا تھا۔میخواں کے بیان کے بعد وائٹ ہاؤس کی ترجمان سارہ سینڈرز نے کہا: 'امریکی مشن میں تبدیلی نہیں آئی ہے۔ صدر اس بارے میں واضح ہیں کہ امریکہ جتنا جلد ممکن ہو وہاں سے نکل آئے۔'تاہم انھوں نے کہا کہ امریکہ دولت اسلامیہ کو مکمل ط

ٹرمپ کو شام میں افواج موجود رکھنے کیلئے منایا گیا : میکرون

 پیرس//فرانس کے صدر امینوئل میکرون نے کہاکہ انہوں نے امریکہ کے صدر ڈونالڈ ٹرمپ کو شام میں افواج موجود رکھنے کے منا لیا گیا ہے ۔مسٹر میکرون نے کہاکہ شام میں مشترکہ فضائی حملوں سے پہلے مسٹر ٹرمپ سے فون پر بات چیت میں انہوں نے ان کو شام میں موجود رہنے کے لئے منا لیا ہے ۔ بی ڈبلیو ٹی وی، آر ایم سی ریڈیو اور میڈیا پارٹ آن لائن نیوز پر نشر اور شائع مسٹر میکرون کے انٹرویو میں شام پر مشترکہ فضائی حملوں میں فرانس کے شامل ہونے پر اپنا موقف رکھتے ہوئے انہوں نے کہاکہ ہم اس فریم ورک میں کارروائی کرنے کے لئے مکمل بین الاقوامی قانونی جواز رکھتے ہیں۔مسٹر میکرون نے کہاکہ اقوام متحدہ سلامتی کونسل کے تین رکن ممالک نے شام میں مداخلت کی ہے ۔رائٹر ۔    

شام پر امریکی حملہ، پڑھیں کیا کہتا ہے عالمی میڈیا

امریکہ //امریکہ نے کیمیائی حملہ کا بہانہ بنا کر اپنے اتحادی ممالک برطانیہ اور فرانس کے ساتھ مل کر ہفتہ کی صبح شام پر حملہ کر دیا۔ امریکہ کا دعویٰ ہے کہ اس نے شام میں کیمیکل ہتھیاروں کو تباہ کر دیا ہے۔ امریکہ کی زیر قیادت اس حملہ میں شام کے مخصوص اہداف کو نشانہ بنایا گیا۔ امریکی صدر ٹرمپ نے کہا کہ شام پر حملوں کا یہ تسلسل برقرار رہے گا۔ امریکی حملہ پرعالمی میڈیا نے اپنے اپنے انداز میں کچھ اس طرح سے تبصرہ کیا ہے۔الجزیرہ ڈاٹ کام نے سعودی عرب میں منعقد عرب لیگ کے اجلاس میں شام پر امریکی حملہ کی مذمت نہ کرنے کا الزام لگاتے ہوئے کہا ہے کہ اس اجلاس میں امریکی حملہ پر چپی سادھی گئی اور اس کے خلاف ایک لفظ بھی زبان سے نہیں بولا گیا۔ خبر میں کہا گیا ہے کہ عرب لیگ کے رہنماوں نے شام تنازعہ پر تبادلہ خیال تو ضرور کیا لیکن شام پر ہوئے امریکی حملہ پر انہوں نے کچھ بھی نہیں بولا۔ اس بات پر بھی اظہار افس

شام نے دوبارہ کیمیائی حملہ کیا، توامریکا پھر میزائل داغے گا‘:ٹرمپ

واشنگٹن// امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ایک بار پھر شامی حکومت کو خبردار کیا ہے کہ اگر صدر بشار الااسد اور اتحادیوں نے دوبارہ شامی شہریوں پر کیمیائی بم گرائے ’تو امریکا اور اتحادی دوبارہ حملہ کرنے کے لیے پوری طرح تیار ہے‘۔تفصیلات کے مطابق ٹرمپ کی جانب سے یہ دھمکی امریکا اور اتحادیوں فرانس اور برطانیہ کی جانب سے شام کے شہر ڈوما پر گذشتہ ہفتے کیمیائی حملوں کے جواب میں گذشتہ روز مشترکہ فوجی کارروائی کے بعد سامنے آئی ہے۔گذشتہ سات برس سے شام میں جاری خانہ جنگی کے جواب میں شامی حکومت کے خلاف امریکا اور اس کے اتحادیوں کی جانب سے کی گئی موجودہ فوجی کارروائی سب سے زیادہ بڑا حملہ تھا۔ جس میں شام پر 107 میزائل داغے گئے۔دوسری جانب شامی حکومت اور اتحادی مسلسل ڈوما میں کیمیائی حملوں کی تردید اور مذمت کرتی آرہی ہے۔واضح رہے کہ شام کے اہم اتحادی روس کی جانب سے امریکا اور اتحادیوں کے حملے کے بع

اقوام متحدہ نے میانمار کی فوج کو جنگجو گروپوں کی لسٹ میں شامل کیا

اقوام متحدہ//اقوام متحدہ کی نئی رپورٹ میں میانمار کی افواج کو پہلی مرتبہ عالمی ادارے کی جانب سے حکومت اور جنگجو گروپوں کی بلیک لسٹ میں شامل کیا گیا ہے ، جس کی وجہ تنازعات سے گہرے علاقے میں مبینہ طور پر ریپ اور دیگر جنسی استحصال کے واقعات ہیں۔امریکی خبر رساں ادارے ایسوسی ایٹڈ پریس (اے پی) کے مطابق اقوام متحدہ کے جنرل سیکریٹری انٹونیو گوٹریس کی جانب سے سلامتی کونسل کو بھیجی جانے والی رپورٹ میں کہا گیا کہ عالمی میڈیکل اسٹاف اور بنگلہ دیش میں رہنے والے تقریباً 7 لاکھ روہنگیا مسلمانوں نے نشاندہی کی ہے کہ بیشتر روہنگیا مسلمانوں کو بدترین جسمانی تشدد اور جنسی استحصال کا نشانہ بنایا گیا۔اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل انٹونیو گوٹریس کا کہنا تھا کہ یہ واقعات مبینہ طور پر میانمار فوج، جو ٹاٹمادا کے نام سے جانی جاتی ہے ، ان کی جانب سے اکتوبر 2016 سے اگست 2017 کے عرصے میں روہنگیا آبادی میں جنگجوؤں کے

شام پر حملہ: مشن کامیابی سے تکمیل کو پہنچا:امریکہ

واشنگٹن//امریکا کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اتحادی کے ساتھ مل کر شام میں کیے گئے حملے کو کامیاب کارروائی قرار دے دیا جبکہ اس حملے کے بعد روس اور اس کے اتحادی کے ساتھ سرد جنگ میں اضافہ ہوگیا ہے۔روس کی درخواست پر اس حوالے سے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کا اجلاس بھی بلالیا گیا ہے جبکہ امریکی اتحادی برطانیہ اور فرانس سمیت دیگر ممالک نے اس کارروائی کو شام کے علاقے میں باغیوں کے آخری قلعے دوما میں کیے گئے مبینہ کیمیائی حملے کا جواب قرار دیا۔پینٹاگون کے اعلیٰ عہدیدار لیفٹننٹ جنرل کینتھ میکینزی کا کہنا تھا کہ حملے شام کے برسوں سے جاری کیمیائی ہتھیاروں کے منصوبوں اس حملے کے باعث نقصان ہوگا۔امریکی صدر نے ٹویٹر میں اپنے پیغام میں کہا ہے کہ 'گزشتہ شب ایک مکمل کارروائی کی گئی، فرانس اور برطانیہ کو ان کی دانشمندی اور ان کی بہترین فوجی طاقت پر شکریہ ادا کرتا ہوں'۔پینٹاگون کے ترجمان ڈانا وائٹ نے صحا

جب تک شام کی موجودہ قیادت ہے

برسلز// نیٹو کے جنرل سیکریٹری جینزاسٹولٹن برگ کا کہنا ہے کہ امریکہ، برطانیہ اور فرانس کے مشترکہ حملوں نے شامی حکومت کی حملے کرنے کی صلاحیتوں کو متاثر کیا۔تفصیلات کے مطابق امریکہ برطانیہ اور فرانس نے شام پرحملوں کے حوالے سے نیٹو کو بریفنگ دی جس میں کہا گیا کہ مشترکہ حملے کیمیائی حملوں کے خلاف آخری حل کے طور پرکیے گئے۔امریکہ اور اس کے اتحادیوں نے نیٹوکو بریفنگ کے دوران بتایا کہ مشترکہ حملوں سے شام کی حملے کرنے کی صلاحیتوں کو نقصان پہنچا ہے۔دوسری جانب نیٹو کے جنرل سیکریٹری جینزاسٹولٹن برگ نے بریفنگ کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ امریکہ اور اس کے اتحادیوں کی جانب سے شام پرحملے کا مقصد کیمیائی ہتھیاروں کو ختم کرنا تھا۔جینزاسٹولٹن برگ کا کہنا تھا کہ شام پرامریکہ، برطانیہ اور فرانس کی جانب سے کیے جانے والے حملے سے شام کو واضح پیغام دیا گیا ہے کہ وہ کیمیائی ہتھیاروں کے استعمال سے باز

امریکا اور اتحادیوں کا شامی کیمیائی تنصیبات پر حملہ

واشنگٹن//امریکا نے برطانیہ اور فرانس کے ساتھ مل کر شام میں مبینہ کیمیائی ہتھیاروں کی تنصیبات پر فضائی حملہ کر دیا۔امریکی حکام کی جانب سے دعویٰ کیا گیا کہ یہ حملہ شام کے صدر بشارالاسد کے احکامات پر شہریوں کے خلاف کیمیائی ہتھیاروں کے استعمال کے جواب میں کیا گیا۔غیر ملکی خبر رساں اداروں کے مطابق ان حملوں کا اعلان گزشتہ رات امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے کیا گیا تھا۔انہوں نے کہا تھا کہ ’ میں امریکا کی مسلح افواج کو حکم دیتا ہوں کہ وہ شامی ا?مر بشارالاسد کی کیمیائی ہتھیاروں کی تنصیبات کو نشانہ بنائیں‘۔اس حکم کے بعد رات گئے شام کے دارالحکومت دمشق میں زور دار دھماکوں کی آوازیں سنائیں دی گئیں، امریکا کی جانب سے بحری بیڑے سے بڑے طیارے اور بحیرہ روم سے کروز میزائیل داغے گئے۔ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا تھا کہ ’ امریکا بشارالاسد پر تب تک معاشی، سفارتی اور فوجی دباؤ ڈالے گا جب تک وہ شام

بشارالاسد کا کیمیائی حملہ انسان نہیں شیطان کا کام ہے، ڈونلڈ ٹرمپ

 واشنگٹن// امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ شامی صدر بشارالاسد کا کیمیائی حملہ انسان نہیں شیطان کا کام ہے جبکہ امریکا کیمیائی ہتھیاروں کے پھیلاؤ کو سختی سے روکے گا۔امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے قوم سے خطاب میں شام پر حملے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ امریکی مسلح افواج کو شامی ا?مر بشارالاسد کی کیمیائی ہتھیاروں کی تنصیبات پر حملے کا حکم دیا ہے، برطانیہ اور فرانس کے ساتھ مل کر یہ مشترکہ ا?پریشن کیا جارہا ہے، اس کارروائی کا مقصد کیمیائی ہتھیاروں کی تیاری، پھیلاؤ اور استعمال کو سختی سے روکنا ہے، ہم شامی حکومت کے خلاف اس طرح کی کارروائی اس وقت تک جاری رکھیں گے جب تک وہ ممنوعہ کیمیائی ہتھیاروں کا استعمال بند نہیں کردیتی۔ڈونلڈ ٹرمپ نے شام کے صدر بشار الاسد کے کیمیائی حملوں کے بارے میں کہا کہ اس بدترین اور شیطانی حملے میں بچوں اور بڑوں کے دم گھونٹ دیے گئے اور شدید اذیت میں مبتلا کیا گیا، یہ ک

اتحادیوں کا حملہ عالمی قوانین کی کھلم کھلا خلاف ورزی:بشار الاسد

دمشق//شام کے صدر بشار الاسد کا کہنا ہے کہ شامی سرزمین پر امریکہ اور اس کے اتحادیوں کے میزائل حملے 'بین الاقوامی قوانین کی کھلم کھلا خلاف ورزی ہیں'۔ادھر روس نے امریکہ کو متنبہ کیا ہے کہ ''یہ ممکن نہیں کہ اس قسم کے اقدامات پر ردعمل کا سامنا نہ کرنا پڑے ''۔شام کی سرکاری خبر رساں ایجنسی نے حکام کے حوالہ سے کہا ہے کہ ''جب دہشت گرد ناکام ہوئے تو امریکہ، برطانیہ اور فرانس نے مداخلت کر دی اور شام پر جارحیت پر کمربستہ ہو گئے ۔''بیان میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ ''شام کے خلاف یہ جارحیت ناکام ہو جائے گی۔''خبر رساں ادارے کے مطابق میزائل حملوں میں دمشق کے شمال مشرق میں ایک تحقیقی مرکز کو نشانہ بنایا گیا جبکہ دارالحکومت کے اردگرد واقع دیگر عسکری تنصیبات بھی نشانہ بنی ہیں۔صنعا نیوز کا کہنا ہے کہ حمص میں عسکری ڈپوز کو نشانہ بنانے والے میزائلوں کو تبا

دبئی میں کچرے سے بنے لباس زیب تن کرنے والی خواتین

دبئی// مارسکا اور ماریٹا نامی خواتین نے سڑکوں سے کچرا اْٹھانے کے لیے انوکھا طریقہ اختیار کرتے ہوئے کچرے سے بنا ہوا لباس زیب تن کر رکھا ہے جس میں وہ راہ چلتے کچرا جمع کرتی ہیں۔ غیر ملکی خبررساں ادارے کے مطابق مارسکا اور ماریٹا نامی خواتین نے پلاسٹک کے بڑے بڑے کوٹ سلوا کر اسے زیب تن کیا جسے خصوصی طور پر اس طرح تیار کیا گیا ہے کہ وہ راہ چلتے کچرا اٹھا کر اسے لباس کے مخصوص حصوں میں محفوظ رکھ سکتی ہیں اور بعد ازاں اسے ٹھکانے لگا دیتی ہیں۔ان دونوں خواتین نے یہ خصوصی لباس کچرا اٹھانے اور صفائی ستھرائی کے شعور کو اجاگر کرنے کے لیے زیب تن کیے ہیں اور اس مہم کا مقصد ماحول کو آلودہ ہونے سے بچانا ہے جب کہ یہ مہم گزشتہ ماہ 24 مارچ کو ’اَرتھ آر‘ کے دن شروع کی گئی اور 22 اپریل کو  ’ارتھ ڈے‘ تک جاری رہے گی۔ اس دوران دونوں خواتین متحدہ عرب امارات کے تمام بڑے شہروں کا دورہ