تازہ ترین

غیر قانونی تارکین وطن کا معاملہ

واشنگٹن//سان فرانسسکو کے ایک وفاقی جج نے غیر قانونی تارکین وطن کے لئے محفوظ سمجھے جانے والے شہروں کے لیے وفاقی فنڈز روکنے سے متعلق صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے ایک حکمنامے کو معطل کر دیا ہے۔امریکی ڈسٹرکٹ جج ولیم اورک نے منگل کو ایک عارضی حکمنامہ جاری کیا جو اس وقت تک موثر رہے گا جب کہ ٹرمپ کیحکمنامے کی ایک شق پر عدالت میں کارروائی ہو گی۔25 جنوری کو جاری کئے گئے اس ایکزیکٹیو آرڈر میں وفاقی فنڈنگ کو ان شہروں کے لئے روک دینے کے لئے کہا گیا تھا۔سان فرانسسکو اور اس کے قریب واقع سانتا کلارا کاؤنٹی نے اپنے دلائل میں کہا کہ اس حکمنامے سے اربوں ڈالر کے وفاقی فنڈز خطرے میں پڑ گئے ہیں۔صدر ٹرمپ نے کہا تھا کہ غیر قانونی تارکین وطن کو سہولتیں فراہم کرنے والے شہر اپنے ان اقدامات کی وجہ سے امریکی لوگوں اور خود ہماری جمہوریہ کے ڈھانچے کو بے پناہ نقصان پہنچاتے ہیں۔جسٹس ڈپارٹمنٹ کے وکلاء نے کہا کہ فنڈز کی مقدار ک

امریکہ نے تھاڈ میزائل شکن نظام جنوبی کوریا میں منتقل کرنا شروع کر دیا

شمالی کوریا کے ساتھ بڑھتی ہوئی کشیدگی کے تناظر میں امریکی فوج نے بدھ کو میزائل شکن دفاعی نظام "تھاڈ" کے کچھ آلات جنوبی کوریا میں اس کی تنصیب کی جگہ پر منتقل کرنا شروع کر دیے ہیں۔جنوبی کوریا کی وزارت دفاع نے ایک بیان میں کہا کہ "جنوبی کوریا اور امریکہ نے شمالی کوریا کے جوہری اور میزائل خطے کے ردعمل میں تھاڈ نظام ابتدائی آپریشنل صلاحیت پر کام شروع کر دیا تھا۔"ٹرمینل ہائی آلٹیٹیوڈ ایریا ڈیفنس سسٹم "تھاڈ" کے اولین آلات مارچ میں جنوبی کوریا بھیجے گئے تھے۔ وزارت دفاع کا بدھ کو کہنا تھا کہ دیگر آلات سیونگجو کاونٹی میں تنصیب کے مقامات پر پہنچا دیے گئے ہیں۔جنوبی کوریا اور امریکہ کا کہنا ہے کہ تھاڈ نظام کا واحد مقصد شمالی کوریا کے میزائلوں کے خطرے کا مقابلہ کرنا ہے۔گو کہ چین تھاڈ کی یہ کہہ کر مخالفت کرتا ہے کہ یہ اس کی سلامتی کے لیے خطرہ ہے، لیکن اس نے شمالی کو

چین کا مقامی ساختہ طیارہ بردار بحری جہاز تیار

 بیجنگ//چین نے مقامی سطح پر تیار کردہ طیارہ بردار بحری جہاز بدھ کو باضابطہ طور پر سمندر میں اتارا ہے۔یہ اس نوعیت کا چین کا دوسرا اور مقامی طور پر تیار کیا گیا پہلا بحری جہاز ہے۔سرکاری میڈیا کے مطابق شمال مشرقی بندرگاہ ڈالیان میں اس بحری جہاز کو "خشکی سے پانیوں میں منتقل کیا گیا"۔چین کا طیارہ بردار بحری جہاز ایک ایسے وقت سمندر میں اتارا گیا ہے جب امریکہ اور شمالی کوریا کے درمیان حالیہ دنوں میں انتہائی کشیدگی دیکھی جا رہی ہے۔امریکہ نے اپنے جنگی بحرے بیڑے اور آبدوز کو جزیرہ نما کوریا میں متعین کیا ہے جس پر پیانگ یانگ کی طرف سے شدید تحفظات کا اظہار کیا گیا اور چین نے فریقین کو کشیدگی میں اضافے سے گریز کا مشورہ دیا ہے۔اس سے قبل چین نے اپنا پہلا طیارہ بردار بحری جہاز "لیااوننگ" (سویت یونین ساختہ) یوکرائن سے خرید کر اسے مرمت کے بعد بحال کیا تھا۔چینی میڈیا کے مطابق اب

اسرائیل میں پہلی بارعرب شرعی خاتون جج تعینات

مقبوضہ بیت المقدس//اسرائیلی خاتون وزیر انصاف ایلیت شاکید نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ملک کی تاریخ میں پہلی بار ایک مسلمان عرب خاتون کو جج تعینات کیا گیا ہے جو اسرائیل میں مقیم مسلمانوں کے اسلامی شرعی کیسز نمٹائے گی۔’جیوش ہوم‘ کی خاتون رہ نما شاکید نے کہا کہ مسلمان خاتون جج کی تعیناتی ججوں کی ایک کمیٹی کی طرف سے کی گئی ہے۔ کمیٹی نے ملکی تاریخ میں ھنا خطیب کو پہلی اسلامی شرعی جج تعینات کیا ہے۔خیال رہے کہ جسٹس حناء خطیب نے ایل ایل بھی کررکھا ہے۔ وہ شمالی الخلیل میں طمرہ قصبے میں ایک اسلامی فیملی امور سے متعلق قانون کی ماہر سمجھی جاتی ہیں۔ وہ شادی شدہ ہیں اور چار بچوں کی ماں ہیں۔اسرائیلی خاتون وزیر قانون کا کہنا ہے کہ ہم نے ملک میں پہلی بار ایک مسلمان خاتون جج کو اسلام کے شرعی امور سے متعلق کیسز نمٹانے کے لیے مقرر کیا ہے۔ اسرائیل کی تاریخ میں یہ اپنی نوعیت کا منفرد واقعہ ہے۔اسرائ

ترکی میں ’گولن تحریک کے ایک ہزار حامی‘ گرفتار

انقرہ//ترکی میں پولیس نے ایک ہزار افراد کو حکومت کے مخالف رہنما فتح اللہ گولن کی تحریک سے روابط کے الزام میں گرفتار کر لیا ہے۔ترک حکومت امریکہ میں مقیم فتح اللہ گولن پر گذشتہ برس صدر اردوغان کے خلاف ناکام فوجی بغاوت کروانے کا الزام لگاتی ہے۔یہ گرفتاریاں ترک صدر کے متنازع ریفرینڈم میں کامیابی کے بعد ملک میں ان کے مخالفین پر پہلا بڑا کریک ڈاؤن ہے اور اس کا ہدف ملک کی پولیس فورس میں فتح اللہ گولن کے حامی ملازمین تھے۔اس ریفرینڈم کے بعد صدر اردوغان اب ملک کے ایک انتہائی بااختیار سربراہِ مملکت بن سکتے ہیں۔ترک حکام کے مطابق پولیس کو ابھی مزید 2200 افراد کی تلاش ہے جن میں سے اکثریت کا تعلق ترک پولیس فورس ہی ہے۔ترکی کے وزیرِ داخلہ سلیمان سوئلو کا کہنا ہے کہ 'ملک کے 72 صوبوں سے اب تک 1009 خفیہ 'امام' حراست میں لیے جا چکے ہیں۔'انھوں نے اس کارروائی کو ترکی کے لیے ایک اہم قدم قرار

’شمالی کوریا کی فوجی مشق‘

پیانگ یانگ //جنوبی کوریا کے ذرائع ابلاغ کے مطابق شمالی کوریا نے اپنی افواج کے 85ویں یومِ تاسیس کے موقع پر بڑے پیمانے پر جنگی مشق کی ہے۔اطلاعات کے مطابق شمالی کوریا کی فوج نے اس مشق کے لیے توپخانے کے متعدد یونٹس وونسان کے علاقے میں بھیجے۔شمالی کوریا ماضی میں اپنی افواج کی سالگرہ کے موقع پر میزائل تجربے کرتا رہا ہے اور اس بار یہ خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے کہ ایسا کوئی تجربہ خطے میں پہلے سے کشیدہ صورتحال کو مزید خراب نہ کر دے۔اسی تناظر میں امریکہ کی جنگی آبدوز یو ایس ایس مشی گن بھی جنوبی کوریا پہنچی ہے جبکہ جنوبی کوریا نے کہا ہے کہ اس کی بحریہ جزیرہ نما کوریا کے قریب پہنچنے والے امریکی جنگی بحری جہازوں کے ساتھ مشقیں کرے گی۔حالیہ ہفتوں کے دوران شمالی کوریا اور امریکہ کے درمیان شدید بیان بازی کے بعد کوریائی جزیرہ نما میں کشیدگی میں اضافہ ہوا ہے۔امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے پیر کو شمالی کوریا کو د

کیمیائی حملے کے جواب میں شام پر امریکہ کی وسیع تر پابندیاں

واشنگٹن //امریکہ نے رواں ماہ کے اوائل میں مشتبہ کیمیائی حملے کے جواب میں شامی حکومت کے اہلکاروں پر 'وسیع' پابندی عائد کر دی ہے۔امریکی وزارت خزانہ نے شام کے سائنٹفک سٹڈیز اینڈ ریسرچ سینٹر (ایس ایس آر سی) کے 271 ملازمین کی تمام املاک کو منجمد کرنے کا حکم جاری کیا ہے۔امریکہ کا خیال ہے کہ باغیوں کے قبضے والے قصبے خان شیخون میں جو 80 سے زیادہ ہلاکتیں ہوئی ہیں وہ اعصاب پر اثر انداز ہونے والے عوامل سے ہوئی ہیں۔ جبکہ شام نے اسے جھوٹ قرار دیا ہے۔شام کے صدر بشارالاسد نے چار اپریل کو خان شخون میں رونما ہونے والے واقعات کو مغرب کی کارستانی بتائی ہے تاکہ امریکہ کو شامی حکومت کے ایئر بیس پر میزائل حملے کا بہانہ مل سکے۔خیال رہے کہ اس واقعے کے چند روز بعد حکومتی ایئربیس شعیرات پر امریکہ نے حملہ کیا تھا۔امریکی وزارت خزانہ نے پیر کو اپنے ایک بیان میں کہا کہ ایس ایس آر سی کے 271 ملازمین اس غیر

جنگ زدہ یمن کی مالی مدد میں خلیجی ممالک سب سے آگے

صنعاء //یمن کے وزیراعظم احمد عبید بن دغر نے باغیوں کے ہاتھوں تباہ ملک کی مالی معاونت کیحوالے سے خلیجی ممالک کی خدمات کو شاندار خراج تحسین پیش کیا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ جنگ زدہ یمن کی مالی امداد میں خلیجی ممالک سب سے آگے ہیں۔ جتنی مالی امداد خلیجی ریاستوں کی طرف سے کی گئی دوسرے ممالک کی طرف سے نہیں کی گئی۔ اطلاعات کے مطابق ملک کے عبوری دارالحکومت عدن میں خلیجی مماک کے سفیروں سے ملاقات کے دوران وزیر اعظم بن دغر نے کہا کہ یمنی عوام کی مالی مدد میں خلیجی ممالک اور شاہ سلمان ریلیف سینٹر سب سے آگے رہے ہیں۔ انسانی امداد کارروائیوں میں متحدہ عرب امارات کے ہلال احمر، کویت اور قطر کے امدادی ادارے بھی پیش پیش رہے۔یمنی وزیراعظم کا کہنا تھا کہ ملک میں باغیوں کے خلاف جاری آپریشن میں عرب ممالک نے خود کو جسد واحد کے طور پر تسلیم کرایا ہے۔ یمنی عوام خلیجی ملکوں کی انسانی امداد، صحت اور ریلیف کے شعبوں

شمالی کوریا کے خلاف نئی پابندی عائد کی جائے :ٹرمپ

واشنگٹن//امریکہ کے صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ اقوام متحدہ کی سیکورٹی کونسل کو شمالی کوریا کے خلاف نئی پابندیاں عائد کرنے کیلئے تیار رہنا چاہئے ۔مسٹر ٹرمپ نے اقوام متحدہ کی سیکورٹی کونسل کے 15 سفیروں کے ساتھ کل یہاں ایک میٹنگ میں کہا کہ شمالی کوریا کی جانب سے چھٹے نیوکلیائی بم کا تجربہ کئے جانے کے اندیشہ کے دوران سیکورٹی کونسل کو پیونگ یونگ کے خلاف نئی پابندی لگانے کیلئے تیار رہنا چاہئے ۔انہوں نے کہاکہ شمالی کوریا مسلسل نیوکلیائی اور بیلسٹک میزائل پروگرام چلا رہا ہے ۔ ایسی صورت میں ضروری ہے کہ اس کے خلاف مزید سخت پابندی عائد کی جائے ۔ انہوں نے کہاکہ یہ دنیا کیلئے حقیقی خطرہ ہے ۔    

فرانس الیکشن میں لا پین نے نیشنل فرنٹ کی صدارت چھوڑ دی

پیرس //فرانس میں انتہائی دائیں بازو نظریات کی حامل صدارتی امیدوار ماری لا پین نے اپنی سیاسی جماعت نیشنل فرنٹ کی صدارت کا عہدہ چھوڑنے کا اعلان کر دیا ہے۔لا پین کی جانب سے یہ اعلان فرانسیسی انتخابات کے دوسرے مرحلے میں پہنچنے کے بعد کیا گیا ہے جہاں ان کا سامنا امینیول میکروں سے ہوگا۔پہلے مرحلے میں امینیول میکروں نے 24 فیصد ووٹ جبکہ ماری لا پین 21.3 فیصد ووٹ حاصل کیے تھے۔ابتدائی اندازوں کے مطابق امینیول میکروں دوسرے مرحلے میں پسندیدہ ترین امیدوار ہیں جبکہ لا پین کا کہنا ہے کہ 'ہم جیت سکتے ہیں، ہم جیتیں گے۔'انھوں نے اپنا پارٹی عہدہ چھوڑنے کا اعلان کرتے ہوئے جس فرانسیسی اصطلاح کا استعمال کیا اس سے ظاہر ہوتا ہے کہ یہ فیصلہ عارضی ہے۔انھوں نے ٹی وی چینل فرانس ٹو کو بتایا کہ فرانس ایک 'فیصلہ کن لمحے' کی جانب بڑھ رہا ہے۔ماری لا پین کا کہنا تھا کہ 'آج شام سے میں نیشنل فرنٹ کی

فرانس صدارتی انتخابات:ووٹنگ کا آغاز، 11 امیدواروں کے درمیان مقابلہ

فرانس //فرانس میں صدارتی انتخابات میں ووٹنگ کا آغاز ہو گیا ہے جبکہ تین روز قبل پیرس پولیس پر ہونے والے قاتلانہ حملے کے بعد سکیورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے ہیں۔اتوار کو ہونے والے انتخابات کے لیے ملک بھر میں تقریباً 50 ہزار پولیس اہلکار اور سات ہزار فوجی تعینات کیے گئے ہیں۔خیال رہے کہ فرانس میں ہونے والے ان صدارتی انتخابات میں کل 11 امیدواروں کے درمیان مقابلہ ہے جن کا تعلق مختلف نظریات کی حامل جماعتوں سے ہے۔اگر کوئی بھی امیدوار 50 فیصد سے زیادہ ووٹ نہ لے سکا تو یہ انتخاب دوسرے مرحلے میں چلا جائے گا جس کے دوران پہلے اور دوسرے نمبر پر آنے والے دو امیدواروں کے درمیان مقابلہ ہو گا۔فرانس میں مقامی وقت کے مطابق صبح آٹھ بجے پولنگ کا آغاز ہوا۔ ووٹنگ فرانس کے وقت کے مطابق شام آٹھ بجے تک جاری رہے گی۔اِن انتخابات کو یورپ کے مستقبل کے لیے بہت اہم قرار دیا جا رہا ہے جس میں اس وقت چار امیدواروں ص

سائنس مخالف سوچ کے خلاف سائنس دانوں کے مظاہرے

لندن//دنیا کے چھ سو سے زیادہ شہروں میں سائنس دانوں نے ایک ایسے مظاہرے میں حصہ لیا جس کی اس سے پہلے کوئی نظیر موجود نہیں ہے۔سائنس دانوں کا کہنا ہے کہ انہیں ٹھوس حقائق پر مبنی علم کے خلاف سیاست دانوں کے بڑھتے ہوئے حملوں پر تشویش ہے۔ہزاروں سائنس دانوں اور ان کے حامیوں نے ہفتے کے روز دنیا بھر کے اہم شہروں میں اس مظاہرے میں حصہ لیا جن میں آسٹریلیا، برازیل، کینیڈا، کیپ ٹاؤن ، لندن، میڈرڈ، نائیجیریا اور سیول شامل ہیں۔برلن میں مظاہرے کا بندوبست کرنے والوں کا کہنا ہے کہ ان کے احتجاجی مارچ میں 10 ہزار سے زیادہ افراد شریک ہوئے۔انہوں نے پلے کارڈ اور بینر اٹھا رکھے تھے جن پر لکھا تھا کہ ہمیں ٹھوس شواہد پیش کرنے والے ماہرین پسند ہیں اور قیاس آرائیاں نہیں بلکہ حقائق اہمیت رکھتے ہیں، وغیرہ۔جنیوا میں مظاہرین نے جو پلے کارڈ اٹھا رکھے تھے ان پر درج تھا کہ سائنس تاریکی میں شمع کی مانند ہے اور سائنس جوا

امریکہ اور یورپی یونین کے درمیان آزاد تجارت کا معاہدہ متوقع

واشنگٹن//یورپی یونین سے برطانیہ کی علیحدگی کا فیصلہ اس معاہدے کی راہ ہموار کرنے میں ایک محرک ثابت ہوا ہے۔ اخبار نے لکھا ہے کہ جرمنی کی چانسلر آنگلہ مرخیل نے مسٹرٹرمپ کو اس معاہدے کے لیے آمادہ کیا۔امریکہ یورپی یونین کے ساتھ آزاد تجارت کا معاہدہ کر سکتا ہے۔ روزنامہ ٹائمز نے اپنی ہفتے کی اشاعت میں لکھا ہے کہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے یورپی بلاک کے ساتھ تجارتی معاہدے پر اپنی رضامندی ظاہر کر دی ہے۔اخبار نیذرائع کے حوالے سے کہا ہے کہ دونوں فریق معاہدہ کرنے پر تیار ہیں۔یورپی یونین سے برطانیہ کی علیحدگی کا فیصلہ اس معاہدے کی راہ ہموار کرنے میں ایک محرک ثابت ہوا ہے۔ اخبار نے لکھا ہے کہ جرمنی کی چانسلر آنگلہ مرخیل نے مسٹرٹرمپ کو اس معاہدے کے لیے آمادہ کیا۔برطانیہ 2019 میں یورپی یونین سے الگ ہونے تک یورپی بلاک سے ایسا کوئی معاہدہ نہیں کرسکتا۔ٹائمز نے وہائٹ ہاؤس کے قریبی ذرائع کے حوالے سے کہا ہے کہ

افغانستان میں سے فوجیوں کی موت پر ایک دن کا قومی سوگ

مزارِشریف//افغانستان کے شمالی شہر مزارِشریف کے پاس فوجی ٹھکانے پر طالبانی حملے میں مارے گئے فوجیوں کی موت پر ایک دن کے قومی غم کا اعلان کیا گیا ہے ۔افغانستان وزارت دفاع نے ایک بیان میں بتایا کہ فوج کے ٹھکانے پر ہوئے طالبانی حملے میں 100 سے زائد فوجیوں کی موت ہو گئی ہے ۔ تاہم وزارت نے مارے گئے فوجی کی حقیقی تعدادکے بارے میں کچھ نہیں بتایا لیکن دیگر ذرائع کے مطابق حملے میں قریب 140 فوجی مارے گئے ہیں۔افغانستان کے صدر اشرف غنی نے طالبان کے اس حملے کی سخت لہجے میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ یہ ایک بزدلانہ فعل ہے ۔ مسٹر غنی نے فوجیوں کی موت پر دکھ کا اظہار کرتے ہوئے کل ایک دن کے قومی سوگ اعلان کیا۔ انہوں نے اتوار کو تمام سرکاری دفاتر اور اداروں میں قومی پرچم کو آدھا جھکانے کے احکام دیئے ہیں۔مسٹر غنی نے سینئر سیکورٹی حکام کے ساتھ ایک ہنگامی میٹنگ بھی کی جس میں حملے کی تحقیقات سنجیدگی سے کرنے پر تب

ہند وستان اور پاکستان کی شدید مذمت

 نئی دہلی// بھارت کے وزیر اعظم نریندر نودی نے افغانستان کے مزار شریف میں فوجی ٹھکانے پر طالبانی حملے کی آج سخت مذمت کرتے ہوئے ہلاک جوانوں کے اہل خانہ کے تئیں تعزیت کا اظہار کیا۔  مسٹر مودی نے اپنے غم پیغام میں کہا ''مزار شریف پر فوجی ٹھکانے پر کل کئے گئے طالبانی حملے کی سخت مذمت کرتا ہوں اور اس حملے میں شہید جوانوں کے اہل خانہ کے تئیں تعزیت کا اظہار کرتا ہوں۔ادھر پاکستان نے افغانستان کے شمالی صوبے بلخ میں ایک فوجی اڈے پر ہونے والے دہشت گرد حملے کی شدید مذمت کی ہے۔افغانستان کے شمالی شہر مزار شریف کے ایک فوجی اڈے پر جمعہ کو عسکریت پسندوں کے حملے میں کم از کم 140 افراد ہلاک ہوگئے تھے جن میں اکثریت افغان فوجیوں کی ہے۔دفتر خارجہ سے ہفتہ کو جاری ہونے والے بیان میں پاکستان نے ان حملوں کی شدید مذمت کرتے ہوئے اپنے اسی موقف کو دہرایا کہ پاکستان ہر طرح کی دہشت گردی کے خلاف ہے۔

چھ مسلم ممالک کے خلاف سفر ی پابندی

سان فرانسسکو//چھ مسلم اکثریتی ممالک کے شہریوں پر سفر پابندی سے متعلق امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے حکمنامہ کو اگلے ماہ امریکہ کی ایک اپیل کورٹ میں چیلنج کیا جائے گا۔ اس بار امریکہ کی زیادہ تر ریپبلکن ریاستیں اس پابندی کی حمایت کرنے کے لئے متحد ہو گئی ہیں۔ ایک ڈیموکریٹک ریاست کے اٹارني جنرل نے بھی اس ہفتے ان سفر ی پابندیوں پر جاری قانونی جنگ میں حصہ لینے سے انکار کر دیا ہے ۔قانون کے کچھ ماہرین کے مطابق زیادہ تر ریپبلکن ریاستوں کے اس پابندی کی حمایت میں آنے سے اس بات کا امکان ہے کہ مسٹر ڈونالڈ ٹرمپ کے اصل ایگزیکٹو آرڈر میں گزشتہ ماہ کی گئي ترمیم کے بعد عدالت میں امریکی حکومت کا موقف مضبوط رہے گا۔ اس سے پہلے جمعرات کو 16 ڈیموکریٹک ریاستوں کے اٹارني جنرل اور کولمبیا نے عدالت میں ایک ' فرینڈ آف دی کورٹ' نامی عرضی دائر کی جس میں انہوں نے عدالت کو بتایا کہ ہوائی ریاست بھی سفر سے متعلق پاب

پناہ گزینوں کا بحران

واشنگٹن//امریکہ نے تصدیق کی ہے کہ وہ آسٹریلیا کے ساتھ کیے جانے والا پناہ گزینوں کی آبادکاری کے معاہدے کی پاسداری کرے گا۔آسٹریلیا کا دورہ کرنے والے امریکہ کے نائب صدر مائیک پینس نے آسٹریلوی وزیر اعظم میلکم ٹرن بل کے ساتھ ملاقات کے بعد پریس کانفرنس میں کہا کے امریکہ اس معاہدے کی پاسداری ضرور کرے گا لیکن اس کی حمایت یا تعریف نہیں کرے گا۔امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کچھ عرصے قبل اس معاہدے کو 'احمقانہ' قرار دیا تھا۔یہ معاہدہ سابق امریکی صدر باراک اوباما کی حکومت میں طے پایا تھا جس کے تحت آسٹریلیا میں پناہ کی درخواست دینے والے 1250 پناہ گزینوں کو امریکہ میں پناہ دی جانی تھی۔آسٹریلوی حکومت نے ایک متنازع فیصلے کے بعد پناہ گزینوں کو قبول کرنے سے انکار کر دیا ہے۔ ان پناہ گزینوں میں سے اکثریت ایران، افغانستان اور عراق کے مردوں کی ہوتی ہے جن کو آسٹریلیا بحرالکاہل میں ناؤرو اور پاپوا نی

شمالی کوریا بظاہر جوہری تجربہ کرنے کیلئے تیار : رپورٹ

کوریا//شمالی کوریا کی جوہری تجربے کرنے کی تنصیب کی سیٹیلائیٹ سے حاصل کردہ تصاویر سے ماہرین کا خیال ہے کہ یہاں ہونے والی سرگرمی ظاہر کرتی ہیں کہ پیانگ یانگ جوہری ہتھیاروں کا تجربہ کر سکتا ہے۔یہ بات واشنگٹن میں جان ہاپکنز یونیورسٹی کے یو ایس-کوریا انسٹیٹیوٹ نے جمعہ کو بتائی۔شمالی کوریا کی ہتھیاروں سے متعلق پیش رفت کا جائزہ لینے کے لیے انسٹیٹیوٹ کی مختص کردہ ویب سائٹ "38 نارتھ" کی رپورٹ میں کہا گیا کہ بظاہر ایسا لگتا ہے کہ پیانگ یانگ کی طرف سے حکم ملتے ہی کسی بھی وقت یہ تنصیب جوہری تجربہ کرنے کے قابل ہے۔سائٹ کے مطابق سیٹیلائیٹ سے لی گئی تصاویر میں تنصیب کے خاص طور پر شمالی حصے میں نئی سرگرمیاں دیکھی گئی ہیں۔ان تصاویر میں سرنگوں میں استعمال ہونے والی چار گاڑیاں، آلات سے لدا ایک چھوٹا ٹرک اور خیمہ دکھائی دیتا ہے جس میں نیچے دیگر آلات رکھے ہو سکتے ہیں۔مزید برآں انتظامیہ کے مرکزی

نیوکلیائی معاہدہ

بیروت / واشنگٹن//ایران اور امریکہ نے 2015 میں طے پانے والے تاریخی جوہری معاہدے کے نفاذ کے سلسلے میں ایک دوسرے پر الزام لگایا ہے ۔ امریکہ نے ایران پر جوہری معاہدے کے قوانین پر عمل نہ کرنے کا الزام لگایا ہے جبکہ ایران کے سینئر سفارتکار نے امریکہ کو معاہدے کے تحت کئے گئے وعدوں کو پورا کرنے میں کوتاہی کا الزام عائد کیا ہے ۔دونوں ممالک کے درمیان تاریخی نیوکلیائی معاہدے پر یہ الزام تراشیوں کا دور امریکی وزیر خارجہ ریکس ٹلرسن کی جانب سے ایران کے خلاف بین الاقوامی اقتصادی پابندیوں کی منسوخی کے اقدامات کا جائزہ لینے کے بارے میں امریکی کانگریس کو ایک خط کے ذریعے مطلع کئے جانے کے بعد شروع ہواہے ۔مسٹر ٹلرسن نے اپنے خط میں کہا ہے کہ ایران معاہدے کے دائرے میں جوہری پروگراموں پر تو عمل کر رہا ہے لیکن بہت سے دیگر ذرائع سے خطے میں'اسپانسر دہشت گردی' میں ان کا کردار اہم ہے جس پر بحث کی ضرورت ہے

ایرانی مداخلت تنازعہ اسرائیل۔ فلسطین سے زیادہ خطرناک: نکی ہیلی

اقوام متحدہ//امریکا نے سلامتی کونسل پر زور دیا ہے کہ وہ فلسطین۔ اسرائیل تنازع پر زیادہ توجہ مرکوز کرنے کے بجائے مشرق وسطیٰ میں ایران کی تباہ کن سرگرمیوں پر نظر رکھے، کیونکہ عرب خطے میں ایرانی مداخلت زیادہ خطرناک اور تباہ کن ثابت ہو رہی ہے۔ اطلاعات کے مطابق سلامتی کونسل کے اجلاس سے خطاب کرتے امریکی سفیر نکی ہیلی نے کہا کہ مشرق وسطیٰ میں جاری تنازعات کا بنیادی سبب ایران ہے۔ انہوں نے دھمکی آمیز لہجے میں کہا کہ امریکا اپنے اتحادیوں کیساتھ مل کر ایران کو اقوام متحدہ کی قراردادوں پر عمل درآمد پر مجبور کرے گا۔ ایران کی طرف سے یہ امداد عرب خطے کو عدم استحکام سے دوچار کرنے کی سازش ہے۔امریکی سفیر کا کہنا تھا کہ فلسطین۔ اسرائیل تنازع بھی اہم ہے اور اسے حل کرنے کے لیے اقدامات کی ضرورت ہے، مگر خطے میں ایران کی بڑھتی مداخلت زیادہ خطرناک ہے۔ سلامتی کونسل ایران کی مشرق وسطیٰ میں سرگرمیوں کی روک تھام