تازہ ترین

فرقہ پرستوں کی دہشت گردی پرانتظامیہ کی خاموشی مجرمانہ:اتحادبین المسلمین

جموں//اتحادبین المسلمین جموںجوکہ جموں کے مختلف مکتبہ فکراور مختلف تنظیموں کافورم ہے کے عہدیداران نے یہاں منعقدہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ریاست میں ہورہی انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کی پرزورالفاظ میں مذمت کی ہے۔اس موقعہ پرپروفیسر ظہوالدین سابق صدر شعبہ اْردوجموں یونیورسٹی نے کہافورسزکی طرف سے جو حالیہ دنوںوادی میں انسانی ڈھال کے طور پرکشمیری نوجوان کا استعمال کرنا انتہائی شرم ناک فعل توہے۔اوراس سے بھی زیادہ شرم ناک بیانات بی جے پی لیڈر رام مادھو،بی جے پی ممبرپارلیمنٹ سبرمنیم سوامی،اورمقامی کابینہ وزیر مسٹر گنگا پر شاد کے ہیں جو غیر اخلاقی توہیں مگرغیرانسانی بھی ہیں ۔اس قسم کی بیان بازی کی مذمت کی جانی چاہے۔فورسز کو چاہیئے کہ وہ اس قسم کی غیرا نسانی اورشرم ناک حرکت نہ کرے جس سے انسانی حقوق پاما ہوتے ہوں ۔ایسے حالات میں صبر اور اخلاق کا مظاہرے۔انہوں نے جموں خطے میں فرقہ پرستوں کی بڑھ

ریاسی واقعہ کیخلاف ڈویژنل کمشنردفترکے باہرمظاہرہ

ریاسی//گوجربکروال گوجریوتھ دیش باڈی نے ریاسی میں نام نہاد گائورکشکوں کی طرف سے کئے گئے حملے اورتشددبرپاکرنے کے واقعہ کوایک منظم سازش قراردیتے ہوئے ڈویژنل کمشنر کے دفترکے باہراحتجاجی مظاہرہ کیا۔اس دوران مظاہرین ریاسی واقعہ میں ملوث شرپسندعناصرکے خلاف عبرتباک کارروائی کامطالبہ کررہے تھے۔ مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے گوجربکروال یوتھ دیش باڈی کے ریاستی صدر چوہدری نزاکت کھٹانہ نے کہاکہ جموں کے میدانی علاقوں سے وادی کے بالائی علاقوں کی طرف گوجربکروال خانہ بدوش کئی صدیوں سے نقل مکانی کرتے آرہے ہیں اوروہ اپنے ساتھ مال مویشی لیجاتے ہیں کیونکہ اس قبیلے کاپیشہ ہی مال مویشی پالنا ہے۔ انہوں نے کہاکہ ریاسی ضلع میں شرپسندعناصرکی طرف سے گوجربکروال خانہ بدوشوں پر حملہ ناقابل برداشت ہے ۔انہوں نے کہاکہ نہ صرف غنڈہ عناصرنے گوجربکروالوں کومارپیٹ کانشانہ بنایابلکہ ان کے مال واسباب کوبھی لوٹ لیا۔یہاں تک کہ خوا

حکومت فرقہ پرست عناصرپرنکیل کسنے میں ناکام :پردیش کانگریس کمیٹی

جموں/پردیش کانگریس کے جنرل سیکریٹری شاہنوازچوہدری نے یہاں منعقدہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ریاسی میں خانہ بدوش گوجربکروالوں پر شرپسندعناصرکے حملے کی شدیدالفاظ میں مذمت کرتے ہوئے اسے ریاستی حکومت کی ناکامی قراردیاہے ۔انہوں نے کہاکہ گوجربکروال طبقہ ہندوستان نوازہے اورہرمشکل وقت میں اس طبقہ نے ملک اورریاست کی یکجہتی اورسیکولرروایات کوبرقراررکھنے میں کلیدی رول اداکیاہے ۔انہوں نے کہاکہ ملک دوست طبقہ کوشرپسندعناصرکی طرف سے بربریت کانشانہ بناناقابل افسوس ہے ۔شاہنوازچوہدری نے کہاکہ ریاست میں پی ڈی پی۔مخلوط حکومت کے قیام کے روزِ اول سے ہی فرقہ پرست عناصر متحرک ہوگئے تھے اوران پرلگام لگانے کیلئے حکومت کی جانب سے ٹھوس اقدامات نہیں کئے گئے ۔انہوں نے کہاکہ ریاسی میں شرپسندعناصرکاگوجربکروال طبقہ کے لوگوں پربے دردانہ حملہ جمہوریت کے منافی ہے۔انہوں نے کہاکہ نام نہاد گائورکشکوں کے امن پسندلوگوں پر

شہریوں کے جان ومال اورانسانی حقوق کے تحفظ پرزور

جموں//نیشنل پنتھرس پارٹی کے سرپرست اعلی پروفیسر بھیم سنگھ نے صدر جمہوریہ پرنب مکھرجی سے پرزو ر اپیل کی کہ وہ جموں وکشمیر کے  ایک کروڑ 20لاکھ ہندستانی شہریوں کی جان و مال اور انسانی حقوق کے تحفظ کے لئے وہاں کے گورنر این این ووہرہ کو دفعہ ۔370کو استعمال کرتے ہوئے فوراًً گورنر راج لگانے کی ہدایت دیں ۔پروفیسر بھیم سنگھ نے جموں وکشمیر کی حکومت کے ذریعہ وہاں ایک نیا عوام مخالف حکم دینے کی سخت مذمت کی جس کے تحت جموں وکشمیر میں تمام طرح کے میڈیا ، فیس بک ، ٹوئٹر، وہاٹس ایپ، کیو کیو،وی چیٹ، او زون، ٹمبلر، گوگل پلس،اسکائپ ، وائبرلائن، اسنیپ چیٹ،پرنٹرسٹ،ٹیلی گرام اور ریڈٹ وغیرہ پر مکمل پابندی  لگا دی گئی ہے اور ا ب  پی ڈی پی۔ بی جے پی حکومت لوگوں کے سانس لینے پر بھی پابندی لگانے سے پیچھے نہیں ہٹے گی۔ انہوں نے کہاکہ ایسے مظالم تو ڈوگرہ راج میں مہاراجاؤں کے وقت بھی لوگوںپر نہیں ہوئے

گوجرطبقہ کاوفدوزیراعلیٰ سے ملاقی

؎جموں//وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی نے یہاں متعدد وفود ملاقی ہوئے اورانہوںنے درپیش مسائل اُن کی نوٹس میں لائے اور ان کے ازالہ کی مانگ کی۔مسعود چودھری کی قیادت میں گوجربکروال طبقے کے ایک وفد نے جموں میں ٹرائبل ریسرچ سینٹر قائم کرنے اور خانہ بدوش طبقے کے لئے ایک معقول باز آبادکاری پالیسی لاگو کرنے کی مانگ کی۔ڈوڈہ سے آئے ایک او ر وفد نے ضلع میں مختلف مقامات پر سیلاب سے بچائو کیلئے حفاظی باندھ تعمیر کرنے کی مانگ کی جو حالیہ سیلابوں میں بہہ گئے ہیں ۔وزیر اعلیٰ سے ٹھیکداروں کا ایک وفد بھی ملاقی ہوااور انہیں درپیش مسائل کا ازالہ طلب کیا۔وزیرا علیٰ نے وفود کو بغور سنا اور یقین دلایا کہ ان کے مسائل کا جائزہ لیا جائے گا۔  

ریاست سیاسی عدم استحکام کی جانب گامزن: دیویندر رانا

جموں//ریاست میں سیاسی عدم استحکام کو انتظامی سطح پر بد نظمی اورلوگوںمیں پائی جانے والی مایوسی کی بنیادی وجہ قرار دیتے ہوئے نیشنل کانفرنس کے صوبائی صدر دیویندر سنگھ رانا نے ریاست کے حالات انتہائی تشویشناک حد تک خراب ہو گئے ہیں۔ انہوں نے کہا ہے کہ پی ڈی پی بی جے پی مخلوط سرکار نے عوام کی جانب اپنی ذمہ داریوں کو خیر باد کہہ دیا ہے جس کی وجہ سے پوری ریاست میں لاقانونیت کا دور دورہ ہے ، انتظامی سطح پر بد نظمی ہے جب کہ ترقیاتی سرگرمیاں تعطل کا شکار ہو گئی ہیں۔ جموں کشمیر کے حوالہ سے مرکز ی سرکار کی خاموشی کو معنی خیز قرار دیتے ہوئے رانا نے کہا کہ ریاست حکومت ہند کے لئے آخری ترجیح ہو کر رہ گئی ہے ، تینوں خطوں کے عوام کو درپیش مسائل کے ازالہ کے بجائے بی جے پی قیادت معاملات کو مزید پیچیدہ بنا رہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ منفی سیاست کرنے والے کشمیر کے بگڑتے حالات کو حقیر سیاسی مفادات کے لئے استعمال

کشتواڑ کازمینی رابطہ ہنوز منقطع

کشتواڑ//ڈوڈہ کشتواڑ شاہراہ کے مسلسل بند رہنے کی وجہ سے بدھ کے روز بھی کشتواڑ ضلع کا زمینی رابطہ بقیہ دنیا کے ساتھ منقطع رہا، قابل ذکر ہے کہ پیر کے روز قصبہ سے 20کلو میٹر دور درابشالہ کے قریب کلگاڑی کے مقام پر چٹانیں کھسکنے سے یہ شاہراہ مسدود ہو گئی تھی اور محکمہ کی طرف سے ہر ممکن کوششیں کئے جانے کے باوجود ابھی تک اسے آمد و رفت کے قابل نہیں بنایا جا سکا ہے ۔ محکمہ ٹریفک کے حکام نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ اگر تازہ چٹانیں نہ گر آئیں تو آج یعنی جمعرات کی صبح پسی پرعارضی طور یکطرفہ ٹریفک کا سلسلہ بحال کر لیا جائے گا، تاہم پچھلے چند روز سے مسلسل چٹانیں گر رہی ہیں جس کی وجہ سے ملبہ ہٹانے کے کام میں بھی رکاوٹ آ رہی ہے ۔اس دوران محکمہ تعمیرات عامہ نے گرتی ہوئی چٹانوں سے ہونے والے نقصانات سے بچنے کیلئے منفرد تکنیک اپنائی ہے، فائر برگیڈکی گاڑیوں سے پانی کا پریشر ڈالا جا رہا ہے تا کہ لٹک رہی چ

’ گوجربکروالوں پر حملہ آرایس ایس کی منظم سازش کانتیجہ ‘

جموں//گوجربکروال سٹوڈنٹس ویلفیئرایسوسی ایشن نے ریاسی میں نام نہاد گائورکشکوں کی طرف سے کئے گئے حملے اورتشددبرپاکرنے کے واقعہ کوایک منظم سازش قراردیتے ہوئے ملزمان کے خلاف سخت کارروائی کامطالبہ کیاہے ۔یہاں منعقدہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے گوجربکروال سٹوڈنٹس ویلفیئرایسوسی ایشن کی ترجمان نجمہ شمشیر نے ریاسی میں گوجربکروالوں پر حملے کوآرایس ایس کی منظم سازش قراردیتے ہوئے طبقہ کے لیڈران کی خاموشی اورریاسی میں متاثرہ کنبوں سے ملاقات نہ کرنے کیلئے تنقیدکانشانہ بنایا۔انہوں نے کہاکہ غنڈہ عناصرنے مال مویشی لوٹنے کے علاوہ خواتین کی عزت لوٹنے کی بھی کوشش کی ہے۔انہوں نے کہاکہ ایک طرف وزیراعظم ’بیٹی بچائو۔بیٹی پڑھائو‘ کانعرہ لگاتے ہیں اوردوسری طرف گوجربکروال خواتین کی عزت پر آرایس ایس کے غنڈے حملے کرتے ہیں ۔انہوں نے کہاکہ اس سے پہلے ہریہ چک ، سرورسانبہ وغیرہ میں بھی گوجربستیوں پرآ

’سٹیٹس آف وومن اِن انڈیااینڈ وومن سٹڈیزسنٹرس‘

جموں//جموں یونیورسٹی کے سنٹرفاروومنز سٹڈیز کی جانب سے ’’سٹیٹس آف وومن اِن انڈیااینڈ وومن سٹڈیزسنٹرس ‘‘ کے عنوان سے خصوصی لیکچرکاانعقاد کیاگیا۔اس دوران ناموراکیڈمیکشن اور یوجی سی سٹینڈنگ کمیٹی کی رکن ڈاکٹرانجلی نے موضوع سے متعلق لیکچرپیش کیا۔انہوں نے کہاکہ ملک کے مختلف حصوں میں قائم خواتین سے متعلق مراکز خوش اسلوبی سے کام کررہے ہیں۔ انہوں انہوں نے پریواروں میں خواتین کے رول اوراہمیت کوبیان کیا۔انہوں نے کہاکہ خواتین کو سماج میں مضبوط ومستحکم بنانے کی ضرورت ہے۔وائس چانسلر جموں یونیورسٹی نے پروگرام کی صدارت کی۔اس دوران خطاب کرتے ہوئے جموں یونیورسٹی کے وومن سٹڈیز کی کاوشوں کوسراہا۔انہوں نے کہاکہ موجودہ دورمیں خواتین مردوں سے کندھاملاکر کام کررہی ہیں۔ اس سے پہلے ڈائریکٹرسنٹرفار وومن سٹڈیز پروفیسرسمن جموال نے مہمانوں کااستقبال کیا۔اس موقعہ پر ڈاکٹر شیام نرائن لال نے ب

جموں وکشمیر کواپریٹو یونین لمٹیڈ کے زیراہتمام سیمینار

جموں //امداد باہمی اور لداخ امور کے وزیر چھرینگ دورجے نے ریاست میں کواپریٹو تحریک کوبحال کرنے کی اہمیت کو اُجاگر کرتے ہوئے نوجوانوں اور خواتین پر زور دیا کہ وہ اس تحریک میں بھرپور شرکت کریں تا کہ وسائل کو سماج کی بہتری کے لئے ایک صحیح سمت دی جاسکے۔وزیر موصوف جموں وکشمیر کواپریٹو یونین لمٹیڈ کی طرف سے منعقدہ ایک سییمنار سے خطاب کر رہے تھے۔اس موقعہ پر وزیر موصوف نے جموں صوبے کی مارکیٹنگ سوسائٹیوں کے صد نشینوں کے مسائل کے بارے میں جانکاری حاصل کی۔ انہوں نے یونین کی طرف سے کئے جارہے اقدامات کی سراہنا کی اور کہا کہ کواپریٹو سوسائٹیوں کو ریاست میں اقتصادی طور فعال بنانے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کواپریٹو تحریک کے بارے میں لوگوں میں جامع بیداری پیدا کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔رجسٹرار کواپریٹو بشیر احمد بٹ نے بھی اس موقعہ پر خطاب کیا۔تقریب میں کئی دیگر اعلیٰ افسران بھی موجود تھے۔  

الطاف بخاری نے محکمہ اعلیٰ تعلیم کے کام کاج کا جائیزہ لیا

جموں // حکومت نے نئے نرسنگ کالجوں، سکول آف آرکیٹکٹ اور انسٹی چیوٹ آف میتھمیٹکل سائنسز میں رواں تعلیمی سیشن سے داخلہ عمل شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔یہ فیصلہ آج یہاں وزیر تعلیم سید محمد الطاف بخاری کی صدارت میں منعقدہ ایک میٹنگ کے دوران لیا گیا۔اس موقعہ پر تعلیم کی وزیر مملکت پریا سیٹھی بھی موجود تھیں۔میٹنگ میں اعلیٰ تعلیم کے اداروں کے کام کاج،نئے اداروں میں داخلے، وزیر اعظم خصوصی سکالر شِپ سکیم اور دیگر معاملات پر تفصیل سے تبادلہ خیال کیا گیا۔میٹنگ میں اعلیٰ تعلیم کے کمشنر سیکرٹری اصغر علی سامون اور مختلف محکموں کے کئی دیگر اعلیٰ افسروں نے بھی شرکت کی۔الطاف بخاری نے حکام سے کہا کہ وہ نئے قائم کئے گئے کالجوں اور اداروں میں داخلہ عمل شروع کریں ۔ اس موقعہ پر بتایا گیا کہ ریاست میں پی ایم ایس ایس ایس کی عمل آوری کے حوالے سے سال2017-18 کے لئے لگ بھگ2 ہزار اُمیدواروں نے رجسٹریشن کی ہے جبک

حکومت امن کیلئے اعتماد بڑھانے کی وعدہ بند: حق خان

جموں //دیہی ترقی اور پنچائتی راج کے وزیر عبدالحق خان نے کہا ہے کہ وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی کی سربراہی والی حکومت ریاست میں امن برقرار رکھنے کی وعدہ بند ہے۔ لولاب وادی میں آج ایک سڑک کا سنگ بنیاد رکھنے کے بعد ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر موصوف نے کہا کہ حکومت تمام مسائل اور مشکلات کو حل کرنے کی ضمن میں کام کر رہی ہے۔ انہوں نے اس حوالے سے لوگوں کا تعاون طلب کیا۔وزیر نے1.26کروڑ روپے کی لاگت والی سڑک کا ورنو میں سنگ بنیادرکھا۔انہوں نے کہا کہ حکومت لوگوں کے مسائل سے پوری طرح واقف ہے اور انہیں حل کرنے کے لئے ہر طرح کے اقدامات کئے جارہے ہیں۔ انہوں نے افسروں سے کہا کہ وہ متواتر لوگوں کے ساتھ رابطے میں رہیں تا کہ لوگوں کی راحت رسائی ہوسکے۔  

الٹا چور کوتوال کو ڈانٹے،بھگوا تنظیموں کی کال پر ریاسی بند

جموں//بھگوا تنظیموں کی کال پر ریاسی اور اس کے گرد و نواح کے قصبوں میں مکمل بند رکھا گیا ، وہ پولیس پر خانہ بدوشوں کو ’ملک دشمن نعرے لگانے اور مویشیوں کی اسمگلنگ ‘ کے جرم میں گرفتار کرنے میں ناکام رہنے پر احتجاج کر رہے تھے۔ اے بی وی پی ، وشوہندو پریشد، بجرنگ دل ، ٹرنسپورٹروں اور تجارتی تنظیموں کا مطالبہ تھا کہ ان 11افراد کو فوری طور پر رہا کیا جائے جنہیں خانہ بدوشوں پر ایک پولیس چوکی کے اندر تشدد کرنے کے الزام میں گرفتار کیا گیا ہے ۔ ان تنظیموں کے نمائندوں نے قصبہ میں ریلی نکالی اور انتظامیہ کو یادداشت پیش کی۔ بند کی وجہ سے علاقہ میں کشیدگی چھائی رہی تاہم کسی ناخوشگوار واقعہ کی کوئی اطلاع نہیں ہے ۔ انتظامیہ نے سیکورٹی کا خاطر خواہ انتظام کیا ہوا تھا، ریاستی پولیس کے علاوہ سی آر پی ایف بھاری تعداد میں تعینات رہی۔ قابل ذکر ہے کہ پولیس نے گوجر کنبہ پر بلا اجازت مویشی لے کر چلن

گجر بکروالوں پر حملہ

 سرینگر//نیشنل کانفرنس کے سینئر لیڈر اور ایم ایل اے کنگن میاں الطاف احمدنے ریاسی میں گاﺅ رکشکوں کی جانب سے گجر بکروال خانہ بدوشوں پرمبینہ حملے اور مار پیٹ اورپولیس کی جانب سے کوئی بھی کاروائی عمل میں نہ لانے پر شدید تشویش کا اظہار کیا ہے ۔اپنے ایک بیان میں میاں الطاف نے کہا کہ جمعہ کے روز ریاسی علاقے میں گجر بکروال خانہ بدوشوں پر کچھ گاﺅ رکشکوں نے حملہ کر کے انہیں شدید مارپیٹ کی جب وہ تلواڈ علاقے سے اپنے مال مویشیوں کے ساتھ جارہے تھے ۔ انہوںنے کہا کہ گاﺅ رکشک سماج میں بد امنی پھیلانا چاہتے ہیں جبکہ پولیس ہاتھ پر ہاتھ دھرے ان کا تماشہ دیکھ رہی ہے ۔میاں الطاف نے حکومت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ وہ ہمالیاتی پہاڈیوں میں رہنے والے گجر بکروال خانہ بدوشوں اور ان کے مال ومویشیوں کی حفاظت کو یقینی بنانے کےلئے ٹھوس اقدامات اٹھائیں جبکہ ملوثین کے خلاف سخت کاروائی عمل میں لانے بھی زور دیا ہے ۔&n

حکومت جموں میںفرقہ پرستوںکو لگام لگانے کیلئے اقدام اٹھائے :اتحادبین المسلمین

جموں//اتحاد بین المسلمین جموّںکاایک اجلاس یہاںعباس منزل جموں میںزیر صدارت پروفیسر ظہورالدین سابقہ صدر شعبہ اْردوجموں یونیورسٹی منعقد ہوا۔ اجلاس میں جموں خطے میں فرقہ پرستوں کی بڑھتی ہوئی دہشت گردی پرانتظامیہ کی مجرمانہ خاموشی پراظہارے تشویش کرتے ہوئے کہا برمی مہاجرین کی آڑ میں فرقہ پر جموں کے ماحول کو خراب کرنے کی دوڑ میں لگے ہیں جو نہایت ہی افسوس ناک اور غیراخلاقی عمل ہے اس کے خلاف سرکار کو کارروائی کرنی چاہیئے۔انہوں نے کہا یہ لوگ ریاست جموں کشمیر میں صرف چھ یا سات ہزار کی تعداد میں ہیں جبکہ باقی غیرملکی مہاجرین کی یہاں تعداد لاکھوں میں ہے۔اس لئے سبھی مہاجرین کے ساتھ ایک جیسا سلوک کیا جا نا چاہے۔ہم اس سلسلہ میں دیگرغیر مسلم بھائیوں کی حمایت سے احتجاجی پروگرام کریں گئے۔اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے مقررین نے کہا کہ برمی مہاجر مسلمانوں کا مسئلہ ایک انسانی مسئلہ ہے۔اس پر سیاست کے بجائے انسا

ریاسی میں خانہ بدوشوں پرحملہ معاملہ

ریاسی//گوجربکروال گوجریوتھ دیش باڈی نے ریاسی میں نام نہاد گائورکشکوں کی طرف سے کئے گئے حملے اورتشددبرپاکرنے کے واقعہ کوایک منظم سازش قراردیتے ہوئے ملزمان کے خلاف سخت کارروائی کامطالبہ کیاہے ۔یہاں منعقدہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے گوجربکروال یوتھ دیش باڈی کے ریاستی صدر چوہدری نزاکت کھٹانہ نے کہاکہ جموں کے میدانی علاقوں سے وادی کے بالائی علاقوں کی طرف گوجربکروال خانہ بدوش کئی صدیوں سے نقل مکانی کرتے آرہے ہیں اوروہ اپنے ساتھ مال مویشی لیجاتے ہیں کیونکہ اس قبیلے کاپیشہ ہی مال مویشی پالنا ہے۔ انہوں نے کہاکہ ریاسی ضلع میں شرپسندعناصرکی طرف سے گوجربکروال خانہ بدوشوں پر حملہ ناقابل برداشت ہے ۔انہوں نے کہاکہ نہ صرف غنڈہ عناصرنے گوجربکروالوں کومارپیٹ کانشانہ بنایابلکہ ان کے مال واسباب کوبھی لوٹ لیا۔یہاں تک کہ خواتین کی عزت لوٹنے کی بھی کوشش کی گئی ۔کھٹانہ نے کہاکہ ابھی تک ایک دس سالہ لڑکا &

شرپسندوں کوحکومت کی پشت پناہی سیکولرتانے بانے کیلئے خطرہ :شاہنوازچوہدری

جموں//پردیش کانگریس کے جنرل سیکریٹری شاہنوازچوہدری نے ریاسی میں خانہ بدوش گوجربکروالوں پر شرپسندعناصرکے حملے کی شدیدالفاظ میں مذمت کرتے ہوئے اسے ریاستی حکومت کی ناکامی قراردیاہے ۔ یہاں جاری پریس بیان میں پردیش کانگریس کے جنرل سیکریٹری شاہنوازچوہدری نے کہاکہ ریاست میں پی ڈی پی۔مخلوط حکومت کے قیام کے روزِ اول سے ہی فرقہ پرست عناصر متحرک ہوگئے تھے اوران پرلگام لگانے کیلئے حکومت کی جانب سے ٹھوس اقدامات نہیں کئے گئے ۔انہوں نے کہاکہ ریاسی میں شرپسندعناصرکاگوجربکروال طبقہ کے لوگوں پربے دردانہ حملہ جمہوریت کے منافی ہے۔انہوں نے کہاکہ نام نہاد گائورکشکوں کے امن پسندلوگوں پرحملوں کی بڑھتی ہوئی واردات سے جمہوری اقدارکوزک پہنچ رہی ہے۔ انہوں نے کہاکہ گوجربکروال طبقہ کے لوگوں نے ہندوستان کے ساتھ وفاداری کی ہے لیکن شرپسندعناصر طبقہ کے لوگوں کومختلف مقامات پرہراساں کررہے ہیں جوکہ باعث شرم اورافسوسناک ب

جموں کے امن کودرہم برہم کرنے کی مذمت

جموں// گوجربکروال اصلاحی کمیٹی نے ریاسی میں خانہ بدوش گوجربکروالوں پر گئورکشکوں کے حملے کو ایک منظم سازش قراردیتے ہوئے ریاستی حکومت پرفرقہ پرست عناصرکی حوصلہ افزائی کرنے کاالزام عائدکیاہے۔ یہاں جاری پریس بیان میں گوجربکروال اصلاحی کمیٹی کے جنرل سیکریٹری چوہدری اخترحسین نے کہاہے کہ 21 اپریل کو ریاسی میں موسمی نقل مکانی کے دوران گوجربکروالوں پر منظم سازش کے تحت حملہ اور مال مویشی کولوٹنا ، عورتوں ،مردوں وبچوں کوزدوکوب کرنا قابل افسوسناک وقابل مذمت ہے ۔انہوں نے کہاکہ اس شرمناک حملے میں آرایس ایس کے غنڈے ملوث ہیں ۔ انہوں نے کہاکہ حملے کامقصد خانہ بدوش غریب قبائلی ، مفلس کوڈراکردہشت پیداکرنے ، مال دولت نقدی ، گھریلوسامان کولوٹ کرلیجانے ، عورتوں کوہراساں کرنا،زدوکوب کرکے زخمی کرنا باعث تشویش ہے۔ چوہدری اخترحسین نے کہاکہ خانہ بدوش صدیوں سے نقل مکانی کی روایت کوبرقراررکھے ہوئے ہیں لیکن  

کنٹریکچول لیکچراروں کی بھوک ہڑتال جاری

جموں//کنٹریکچول لیکچراروں(10+2) کی طرف سے مطالبات کے حق میں بھوک ہڑتال 70 ویں روز بھی جاری رہی ۔ کنٹریکچول لیکچراروں نے نمائش گرائونڈ کے باہر سیا ہ جھنڈے اٹھاکر حکومت مخالف نعرے بازی کی۔اس دوران سراپااحتجاج عارضی لیکچرار خدمات کی مستقلی خصوصی قانون 2010 کے تحت کرنے کامطالبہ کررہے تھے۔اس قانون کے تحت سات سال مکمل کرچکے عارضی ملازمین کو مستقل کرنے کیلئے کہاگیاہے۔اس دوران مظاہرین نے وزیرتعلیم الطاف بخاری کے خلاف نعرے بازی کی۔ انہوں نے کہاکہ جب تک ہماری مانگیں پوری نہیں ہوں گی بھوک ہڑتال ختم نہیں کی جائے گی ۔سراپااحتجاج کنٹریکچول لیکچرار ’’بخاری صاحب انصاف کرو انصاف کرو اور بخاری تیرے راج میں کنٹریکچول بھوکاسوتاہے ‘‘ کے نعرے بلندکررہے تھے۔10+2 کنٹریکچول لیکچرارز فورم کے صدر ارون بخشی نے مطالبہ کیاہے کہ حکومت کے آرڈر نمبر 1584 edu آف 2003 اور آرڈر نمبر 1328 آف جی

آر این ٹی سی پی کے تحت اسامیوں کا انٹر ویو اب27 اپریل کو

جموں //ضلع ٹی بی افسر سوپور کے مطابق ترمیم شدہ نیشنل ٹیوبر کلوسس کنٹروک پروگرام کے تحت ڈسٹرکٹ پروگرام کوارڈی نیٹر، اکاؤنٹنٹ، سنیئر ٹریٹمنٹ سُپر وائزر اور لیب ٹیکنیشن اسامیوں کے لئے جو انٹر ویو25 اپریل2017 کو لئے جانے والے تھے اب وہ27 اپریل کو دِن کے ایک بجے ڈاک بنگلہ بارہمولہ میں لئے جائیں گے۔