تازہ ترین

ٹرمپ کی افغانستان سے متعلق پالیسی کا اعلان

ورجینیا // امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے افغانستان پالیسی میں پاکستان پر الزامات کی بوچھاڑ کردی اور آئندہ کیلئے پاکستان سے ایک بار پھر ڈومور کا مطالبہ کردیا۔آرلینگٹن کے فوجی اڈے سے خطاب کرتے ہوئے ڈونلڈ ٹرمپ نے افغانستان کیلئے امریکی پالیسی میں پاکستان سے متعلق پالیسی بیان کرتے ہوئے الزام لگایا ہے کہ پاکستان میں دہشتگردوں کی مبینہ پناہ گاہوں پر خاموش نہیں رہیں گے، پاکستان افراتفری پھیلانے والے افراد کو پناہ دیتا ہے، انہوں نے کہا کہ پاکستان سے نمٹنے کے لئے اپنی سوچ تبدیل کر رہے ہیں جس کیلئے پاکستان کو پہلے اپنی صورتحال تبدیل کرنا ہوگی۔ جنوبی ایشیا میں اب امریکی پالیسی کافی حد تک بدل جائے گی۔امریکی صدر نے ایک طرف پاکستانی عوام کی دہشتگردی کیخلاف قربانیوں کو سراہا تو دوسری جانب واضح کیا کہ پاکستان اربوں ڈالر لینے کے باوجود دہشتگردوں کو پناہ دے رہا ہے جب کہ ہم دہشتگردی کیخلاف پاکستان کی مالی م

چین پاکستان کی حمایت میں سامنے آگیا

بیجنگ// امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے کڑی تنقید کے بعد چین پاکستان کی حمایت میں میدان میں آگیا۔ٹرمپ کے بیان پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے چینی وزارت خارجہ نے کہا کہ چین اور پاکستان ایک دوسرے کو بہترین دوست سمجھتے ہیں اور دونوں ممالک کے ایک دوسرے کے ساتھ سفارتی، معاشی اور سکیورٹی کے حوالے سے گہرے روابط ہیں۔ پاکستان دہشت گردی کے خلاف جنگ میں ہراول محاذ پر ڈٹا ہوا ہے، جس میں اس نے بے شمار قربانیاں دیں اور اہم کردار ادا کیا ہے۔چینی وزارت خارجہ کی ترجمان ہوا شن ینگ نے نیوز بریفنگ دیتے ہوئے عالمی برادری پر پاکستان کی قربانیوں کا مکمل اعتراف کرنے کے لئے زور دیا۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں خوشی ہے کہ پاکستان اور امریکا باہمی احترام کی بنیاد پر دہشت گردی کیخلاف ایک دوسرے سے تعاون کرتے ہیں اور خطے و پوری دنیا کی سلامتی و استحکام کے لیے مل جل کر کام کرتے ہیں۔  

ہنگنی کو ٹ رامحال میں تصادم

کپوارہ// سرحدی ضلع کپوارہ کے ہنگنی کو ٹ رامحال ہندوارہ میں فوج اور جنگجوئوں کے درمیان گھمسان کی جھڑپ میںایک جنگجو جا ں بحق ہوا ہے۔ فوج کو ہنگنی کوٹ رامحال ویلگام کے جنگلی علاقہ میں جنگجوئوں کے چھپے ہونے کی ایک مصدقہ اطلاع ملی تھی جس کے بعد فوج کی6راشٹریہ رائفلز اور سپیشل آپریشن گروپ ہندوارہ نے پورے علاقہ کو محاصرے میں لیکر تلاشی کارروائی شروع کی ۔پولیس کا کہنا ہے کہ جو نہی فوج اور پولیس نے ہنگنی کو ٹ کے جنگلی علاقہ میں تلاشی کارروائی شروع کی تو وہا ں گھنی جھاڑیو ں میں چھپے بیٹھے جنگجو ئوںنے فوج پر اندھا دھند فائرنگ کی جس کے بعد طرفین کے درمیان خون ریز تصادم آ رائی شروع ہوئی ۔ابتدائی طور پرفوج نے دعویٰ کیا کہ جھڑپ میں ایک عد م شناخت جنگجو جاں بحق ہوگیا ۔ پولیس کا کہنا ہے علاقہ میں فوجی کمک روانہ کی گئی ہے اور علاقہ کے ایک بڑے حصہ کو محاصرے میں لیا گیا ہے ۔ ہنگنی کو ٹ میں فوج اور جنگجو

۔2010ایجی ٹیشن:عمر قیوم مبینہ حراستی قتل کیس

سرینگر// ریاستی محکمہ داخلہ نے انسانی حقوق کمیشن کی اس ہدایت کو تسلیم کرنے سے انکار کردیا ہے جس میں کہا گیا تھا کہ حکومت 2010ایجی ٹیشن کے دوران مبینہ طور پولیس حراست میں جاں بحق ہوئے 16سالہ طالب علم عمر قیوم (صورہ) کے حق میں3لاکھ روپے کا ایکسگریشیا ریلیف واگذار کرے ۔محکمہ داخلہ نے کمیشن کے سامنے رپورٹ پیش کرتے ہوئے کہاہے کہ مہلوک نوجوان عمر قیوم سنگ بازی اوردیگر غیر قانونی سرگرمیوں میں ملوث تھا لہٰذا اسے حکومت کے ایکسگریشیا ریلیف دائرے میں نہیں لایا جاسکتا۔ 25 اگست 2010 کو مبینہ طور پولیس ٹارچر کی وجہ سے جاں بحق ہونے والے عمر قیوم ولد عبدالقیوم ساکن ملک صاحب صورہ کے والدین کی طرف سے ہیومن رائٹس کمیشن میں ایک عرضی دائر کی گئی تھی جس میں اس واقعہ کی اعلیٰ سطحی تحقیقات اورملوثین کو قانونی شکنجے میں لانے کی درخواست کی گئی تھی ۔کئی سماعتوں کے بعد کمیشن کے چیئرمین جسٹس (ر) بلال نازکی نے

ووہرا اور راجناتھ سنگھ کی ملاقات

نئی دہلی//ریاستی گور نر این این ووہرا نے نئی دلی میں مرکزی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ کے ساتھ ملاقات کی ،جس کے دوران دونوں لیڈروں کے درمیان این آئی اے مہم ،آرٹیکل35اے ،ملی ٹنسی اور مجموعی سیکورٹی وسلامتی امورات پر تبادلہ خیال کیا ۔30منٹ کی میٹنگ کے دوران ووہرا نے مرکزی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ کو جموں وکشمیر کی مجموعی صورتحال کے حوالے سے آگاہی فراہم کی ۔میٹنگ میںجموں وکشمیر کی مجموعی سیکورٹی اور سلامتی امورات کے علاوہ 35اے پر شروع ہوئی بحث پر خصوصی تبادہ خیال ہوا۔  

پنشن مراعات کا حصول،4رکنی وزارتی گروپ تشکیل

سرینگر// سپریم کورٹ اور ریاستی عدالت عالیہ کے حکم کی تعمیل میں ریاستی حکومت نے بالآخر جموں وکشمیر اندسٹریز لمیٹڈ اور جموں وکشمیر ہینڈی کرافٹس کارپوریشن کے ملازمین کو ریاست میں لاگو سرکاری سروس رولز کی رو سے بعد از ریٹائرمنٹ پنشن مراعات سے مستفید کرنے کیلئے منظوری دی ہے ساتھ ہی اس فیصلے کو عملی جامہ پہنانے کیلئے 4وزراء پر مشتمل ایک وزارتی گروپ تشکیل دیا ہے ۔محکمہ جنرل ایڈمنسٹریشن ڈیپارٹمنٹ کی جانب سے جاری آرڈر زیر نمبر 1079-GAD OF 2017 بتاریخ 21 اگست 2017 میں کہا گیا ہے کہ وزارتی گروپ کی تشکیل کیلئے منظوری دی جارہی ہے جو جے کے انڈسٹریز لمیٹڈ اور جے کے ہینڈی کرافٹس کارپوریشن کے ملازمین کے حق میں بعد از ریٹائرمنٹ پینشن مراعات کی واگذاری کیلئے فندز کی واگذاری کے حوالے سے متعینہ مدت کے دوران سفارشات پیش کرے گی ۔نئے تشکیل شدہ وزارتی گروپ میں وزیر صنعت و تجارت کنونیرہونگے جبکہ وزیردیہی ترقی

پی ڈی پی سینئر لیڈر و سابق ریاستی وزیر صوفی غلام محی الدین کا انتقال

کپوارہ//پیپلز ڈیمو کریٹک پارٹی کے سینئر لیڈر اور سابق وزیر جنگلات صوفی غلام محی الدین مختصر علالت کے بعد منگل کو صورہ میڈیکل انسٹی چیو ٹ میں انتقال کر گئے جس کے نتیجے میں وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی کا دورئہ کپوارہ ملتوی کر دیا گیا ۔صوفی غلام محی الدین سرحدی ضلع کپوارہ کے ہندوارہ سے تعلق رکھتے تھے او ر انہیںعلاقہ میں معروف تاجر کے نام سے جانا جاتا تھا۔وہ مرحوم خواجہ عبدالغنی لون کے سب سے قریبی ساتھیوں میں شمار ہوتے تھے۔انتہائی شریف النفس اور ملنساری انہیں خواجہ لون کی قربت سے حاصل ہوئی تھی۔مرحوم کی ہلاکت کے بعد وہ سیاسی میدان میں قسمت آزمائی کرنے کیلئے  آگئے اور انہو ں نے 2002کے انتخابات میں آزاد امید وار کی ٹکٹ پر ہندوارہ حلقہ انتخاب سے الیکشن لڑنے کا فیصلہ کر لیا اور یو ں اپنی سیاسی زندگی کا سفر شروع کیا ۔صوفی غلام محی الدین بحثیت آ زاد امیدوار الیکشن جیت کر اس وقت کے کانگریس ،پی

۔35اےگیا تو ہمارا وجود مٹ جائیگا

سرینگر// نیشنل کانفرنس صدر ڈاکٹر فاروق عبداللہ نے کہا ہے کہ ریاست کے ہر ایک پشتینی باشندے کو اتحاد و اتفاق سے کام لینے کی ضرورت کے ساتھ ساتھ دفعہ35Aاور دفعہ370کیخلاف ہورہی سازشوں کا ڈٹ کر مقابلہ کرنے کیلئے آگے آنا چاہئے ۔ یہ دفعات جموں وکشمیر کی پہچان، الگ آئین اور الگ جھنڈے کو آئین ہند میں تحفظ فراہم کرتی ہیں اور ان دفعات کا محافظ بن کر دفاع کرنا ہمارا فرض بنتا ہے۔وہ پارٹی عہدیداروں کے ساتھ تبادلہ خیال کررہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ دفعہ35A اور 370سے ہی آج تک جموں وکشمیر کی شناخت قائم ہے اور ان کے نہ رہنے سے ہمارا وجود ختم ہوجائے گا اور ہماری تہدیب و تمدن کا کہیں نام و نشان باقی نہیں رہے گا، جس کیلئے آنے والے نسلیں ہمیں معاف نہیں کریں گی۔انہوں نے ریاست کے کونے کونے میں نیشنل کانفرنس کی جانب 35Aسے متعلق جانکاری مہم پر اطمینان کا اظہار کیا اور عوام سے اپیل کی کہ وہ جانکاری کیمپوں میں

اکنامک الائنس کا راج بھون مارچ ناکام

سرینگر//پولیس نے دفعہ35Aکے ساتھ مبینہ چھڑ چھاڑ کرنے کے خلاف تجارتی پلیٹ فارم کشمیر اکنامک الائنس کے گورنر ہاوس تک مارچ  پر بریک لگاتے ہوئے نصف درجن احتجاجی مظاہرین کو حراست میںلیا۔الائنس نے29اگست کو اس کیس کی تاریخ شنوائی کے روز دکانوں،گاڑیوں اور تجارتی کمپلکسوں پر سیاہ پرچم نصب کرنے کی اپیل کرتے ہوئے ریاستی ہائی کورٹ تک مارچ کرنے اور چیف جسٹس کو میمورنڈم پیش کرنے کا اعلان کیا ہے۔کشمیر اکنامک الائنس میں شامل درجنوں اکائیوں کے نمائندے سرینگر کی پریس کالونی  کے نزدیک نمودار ہوئے اور دفعہ35Aکو مبینہ طور پر مسخ کرنے کے خلاف احتجاج کیا۔احتجاجی مظاہرین نے اپنے ہاتھوں میں بینئر اور پلے کارڑ اٹھا رکھے تھے ،جن پر35Aکی مجوزہ منسوخی کے خلاف نعرے تحریر کئے گئے تھے۔احتجاجی مظاہرین نے گورنر ہاوس تک جانے  کی کوشش کی  تاہم  پولیس نے مظاہرین کو منتشر ہونے کیلئے کہا۔پولیس اور مظ

اسمبلی کا خصوصی اجلاس طلب کیا جائے

 سرینگر//آئین کی دفعہ35اے پر اسمبلی کا خصوصی اجلاس طلب کرنے کا مشورہ دیتے ہوئے سیول سوسائٹی کی کارڈی نیشن کمیٹی نے کہا ہے کہ ریاست کے تینوں خطوں کے لوگوں کی رائے اس حوالے سے ایک ہے۔ 35اے اور دفعہ370کو ریاستی عوامی کیلئے آئینی تحفظ قرار دیتے ہوئے جی این شاہین،مظفر احمد شاہ ،مفتی ناصر الاسلام اور جگموہن سنگھ رینہ نے کہا کہ اس حساس معاملے پر تمام مکاتب فکر کے لوگوں میں اتفاق رائے پیدا کرنا ضروری ہے۔’’جموں کشمیر کے ہم لوگ‘‘ نامی کارڈی نیشن کمیٹی نے اس بات پر سخت برہمی کا اظہار کیا کہ جموں کشمیر میں دفعہ370کے وجود میں آنے کے ساتھ ہی اس کو کھوکھلاکرنے کی کوششیں شروع کی گئیں۔سرینگر میں ایک مشترکہ پریس کانفرنس کے دوران بار کے سابق جنرل سیکریٹری جی این شاہین،عوامی نیشنل کانفرنس کے سنیئر نائب صدر مظفر احمد شاہ،سکھ کارڈی نیشن کمیٹی کے سربراہ جگموہن سنگھ رینہ اور مف

چین کیساتھ سرحدی کشیدگی کے بیـچ

لیہہ//صدر جمہوریہ ہند رام ناتھ کووند نے پیر کے روز لیہہ کا ایک روزہ دورہ کیا۔ ہندوستان اور چین کے درمیان جاری سرحدی کشیدگی اور لداخ میں چین کے ساتھ لگنے والی سرحد ’لائن آف ایکچول کنٹرول‘ پر 15 اگست کو دونوں اطراف کے فوجیوں کے مابین پتھروں کے تبادلے کے تناظر میں صدر جمہوریہ کے اس دورے کو خاصی اہمیت دی جارہی ہے۔ صدر جمہوریہ کے اس ’دورہ لداخ‘ کی سب سے بڑی اور خاص بات یہ ہے کہ ملک کے صدر جمہوریہ کا عہدہ سنبھالنے کے بعد یہ کووند کا دہلی سے باہر کسی ریاست کا پہلا دورہ ہے۔ صدر جمہوریہ پیر کی صبح یہاں پہنچے اور ایک شاندار تقریب میں لداخ سکاؤ ٹس ریجیمینٹل سنٹراور رجمنٹ کی پانچ بٹالینوں کو ’صدارتی کلرس‘ پیش کئے۔  اس سے قبل جموں وکشمیر کے گورنر این این ووہرا، وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی، فوجی سربراہ راوت ، کابینی وزراء اور دیگر مقامی سول ، پولیس و ملٹری ع

کشمیر یونیورسٹی کرگل اور لیہہ سیٹلائٹس کیمپس کا افتتاح

کرگل //وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی جو لداخ خطے کے تین روزہ دورے پر ہیں ،نے  یہاں کشمیر یونیورسٹی کے دو سیٹ لائیٹ کیمپس کا افتتاح کیا ۔ لداخ خطے میں سیٹ لائیٹ کیمپس کا قیام مقامی لوگوں کی دیرینہ مانگ تھی ۔ دونوں کیمپس میں درس و تدریس اور طلاب و اساتذہ کیلئے رہایشی سہولیات دستیاب ہیں ۔ کرگل میں وزیر اعلیٰ کو بتایا گیا کہ کشمیر یونیورسٹی کے سیٹ لائیٹس کیمپس کی تعمیر پر 29 کروڑ روپے کی لاگت آئی ہے اور اس میں 150 طلاب کیلئے درس و تدریس و رہایشی سہولیت دستیاب ہے ۔ پہلے مرحلہ میں کرگل کیمپس میں انفارمیشن ٹیکنالوجی ، عربی اور باٹنی مضامین پڑھائے جائیں گے ۔ طلاب کے ساتھ تبادلہ خیال کرنے کے دوران محبوبہ مفتی نے طلاب کو اپنے علاقوں سے سیٹ لائیٹ کیمپس تک لانے اور لے جانے کیلئے بس کی فراہمی کا اعلان کیا ۔ انہوں نے کیمپس میں فارسی ، ایجوکیشن اور کچھ فروغ ہُنر مضامین متعارف کرنے کی بھی ہدایت دی ۔ وز

دفعہ 35اے کی اصلی فائل گم نہیں ہوئی

نئی دہلی // مرکزی سیکریٹری داخلہ نے کہا ہے کہ 35Aسے متعلق کشمیر فائل کو بہت جلد ڈھونڈا جائیگا۔داخلہ سیکریٹری راجیو مہا ریشی نے اس بات کی تصدیق کی کہ فائل گم ہوگئی ہے لیکن ساتھ ہی کہا کہ فائل سوچھ بھارت مشن کے تحت ضائع نہیں کی گئی ہے۔ایک ٹی وی چینل کیساتھ بات کرتے ہوئے راجیو مہاریشی نے کہا کہ 35Aکی اصلی فائل غائب نہیں ہوئی ہے۔ انکا کہنا تھا’’ یہ وہ فائل نہیں جس پر اُس وقت کے اٹارنی جنرل نے اپنی رائے دی تھی،بلکہ یہ وہ فائل ہے جس پر 1954میں آئین میں ترمیم سے متعلق مرکزی کابینہ کا نوٹ لکھا ہوا ہے‘۔تاہم انکا کہنا ہے کہ انہیں امید ہے کہ فائل کو بہت جلد ڈھونڈا جائیگا۔داخلہ سیکریٹری نے فائل غائب ہونے کے معاملے کو ناقص طور پر ریکارڈ جمع رکھنا قرار دیا ہے۔انکا کہنا ہے کہ اہم کاغذات کی گمشدگی دیرینہ معاملہ ہے لیکن جو بہت اہم اور دیرنہ فائلیں ہیں انہیں ڈھونڈنا کوئی مشکل بھی نہیں

نوگام سیکٹر میں جے سی او دل کا دورہ پڑنے سے فوت

 کپوارہ//سرحدی ضلع کپوارہ کے نو گام ہندوارہ سیکٹر میں ایک جونیئر کمیشنڈ آفیسر کی موت  دل کا دورہ پڑنے سے واقع ہوئی ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ نوگام سیکٹر کے حد متارکہ پر واقع تنبہ پوسٹ میں تعینات 20ڈوگرہ ریجمنٹ سے وابستہ صوبیدار شیو دیو سنگھ کی اتوار کی شام حالت اچانک خراب ہوگئی جس کے بعد مذکورہ فوجی کو اسپتال منتقل کیا گیاتاہم ڈاکٹرو ں نے اسے مردہ قرار دیا ۔فوجی افسر کی لاش اسکے گھر بھیج دی گئی  ۔پولیس نے معاملہ کی نسبت کیس زیر دفعہ 174RPCکے تحت درج کر کے تحقیقات شروع کی ۔  

قومی ترانے پر کھڑا نہ ہونے کا شاخسانہ

حیدر آباد //حیدر آباد کے ایک سنیما گھر میں قومی ترانہ بجائے جانے پر کھڑا نہ ہونے کی پاداش میں بارہمولہ سے تعلق رکھنے والے 3کشمیری طلباء کوگرفتار کرکے ان کے خلاف ایف آئی آر درج کی گئی ہے، تاہم انہیں ضمانت پر چھوڑ دیا گیا۔حیدر آباد تلنگانہ کے الحبیب کالج آف انجینئرنگ میں بی ٹیک کی تربیت حاصل کررہے3کشمیری طلباء سنیچر کو ’’بریلی کی برفی‘‘ نامی ہندی فیچر فلم دیکھنے کیلئے راجندر نگر پولیس اسٹیشن کے تحت آنے والے علاقے میں قائم ایک سنیما ہال میں گئے ہوئے تھے۔ان طلاب کی شناخت جمیل گل، عمر فیض اور مدبر شبیر کے طور پر ہوئی ہے اور ان کا تعلق شمالی کشمیر کے بارہمولہ ضلع سے ہے۔ سنیما انتظامیہ نے پولیس میں اس بات کی شکایت درج کروائی کہ فلم شروع ہونے سے قبل جب ہال میں قومی ترانہ بجایا گیا تو تینوں کشمیری طلبہ مبینہ طور اس کے احترام میں کھڑے نہیں ہوئے ۔ڈپٹی کمشنر آف پولی

بھارتی وزراء کشمیر کارڈ کھیل رہے ہیں

سرینگر // لبریشن فرنٹ چیئرمین محمد یاسین ملک نے کہا ہے کہ بھارتی وزراء کشمیر کارڈ کھیل کر بھارتی رائے عامہ کو بے وقوف بنارہے ہیں۔ سکہ زر بندی ہو کہ این آئی اے کے ذریعے کشمیری مزاحمت کو بدنام کرنے کا عمل،ہر اقدام جس سے بھارتی عوام کانقصان ہوتا ہو کو کشمیر کا نام لے کر جائز ٹھہرایا جارہا ہے۔بھارتی وزیر داخلہ اور وزیر خزانہ کے کشمیر سے متعلق بیانات پر لبریشن فرنٹ چیئرمین نے کہا کہ ایک وزیر تو این آئی اے ہڑبھونگ کا استعمال کرکے کشمیری مزاحمت کو کمزور کرنے کاکریڈٹ لے رہے ہیںاور دوسرے وزیر اس کا سہرا اپنی سکہ زر بندی کی پالیسی کے سر باندھ رہے ہیں جس کو بھارتی رائے عامہ کی اکثریت بھی بدترین قدم سے تعبیر کررہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اصل میں وزراء  بھارتی رائے عامہ کو بے وقوف بنانے کیلئے کشمیر کارڈ کھیل کراپنی ناکامیوں پر پردہ ڈالتے رہتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ کشمیریوں کی تحریک مزاحمت کو بدنام

۔247مسافر آرپار

 اوڑی //کاروان امن بس سروس میں سوموار کو 247مسافروں نے سفر کیا۔ضلع پونچھ میں 2  ماہ سے درماندہ 116 پاکستانی مسافروں کو اوڑی کمان پل سے اپنے گھروں کو روانہ کیا گیا ۔ اوڑی سے مظفر آباد کے درمیان چلنے والی کاروان بس سروس میں کل 199  مسافروں نے سفر کیا جس میں  ضلع پونچھ سیکٹر میں ہند پاک افوج کے درمیان گولہ باری کے بعد چکاں دا باغ سے راولا کوٹ بس سروس اور آر پار تجارت کو معطل کر دیا گیا تھا جس کے نتیجے میں 116 مسافر ضلع پونچھ میں گزشتہ دو ماہ سے درماندہ تھے۔ان مسافروں کوکاروان بس سروس سے اپنے گھروں کو روانہ کیا گیا۔یاد رہے کہ پاکستانی زیر انتظام کشمیر اور اس کشمیر کی انتظامیہ کے درمیان کمان پل اوڑی پر ایک تقریب منعقد کی گئی تھی جس میں اس بات کا فیصلہ لیا گیا تھا کہ پونچھ میں درماندہ پاکستانی زیر انتظام کشمیر کے مسافروں کو کاروان بس سروس کے ذریعے اپنے اپنے گھروں کوروان

ریکارڈ راشٹر پتی بھون میں ہوگا

سرینگر //ریاستی محکمہ قانون کا کہنا ہے کہ اگریہ فائل کہیں بھی موجودنہیں ہوگی پھربھی اسکی کاپی اورمتعلقہ کاغذات کاریکارڈراشٹرپتی آفس میں موجودہوگا ۔یہ امر قابل ذکر ہے کہ ریاست کے وزیرقانون ایڈوکیٹ عبدالحق خان  ریاست کے دیگرتین سینئروزراء کے ہمراہ اسی حساس معاملے پرقانونی مشاورت کیلئے نئی دہلی میں سرگرم ہیں ۔ریاستی لاء ڈیپارٹمنٹ کا کہنا ہے کہ یہ ایک ایسی اہم فائل ہے جسکاریکارڈصرف کسی ایک یادوخاص محکموں کے پاس نہیں رکھاگیاہوگابلکہ اسے متعلق دستاویزات کئی مرکزی محکموں کے پاس موجودہونگی ۔ جب 1954میں اسوقت کے وزیراعظم ہندپنڈت نہرئوکی سفارش پراسوقت کے صدرہندڈاکٹرراجندرپرشادنے  آرٹیکل35-Aکولاگوکئے جانے سے متعلق صدارتی حکمنامہ جاری کردیاہوگاتواسی وقت اسکاریکارڈمرکزی وزارت داخلہ کے مختلف شعبوں،مرکزی وزارت ِ قانون اورراشٹرپتی آفس میں بھی محفوظ کرلیاگیاہوگا،اورآج بھی یہ فائل اوراسوقت

۔21اگست کو گورنر ہاوس تک مارچ ہوگا:الائنس

سرینگر// دفعہ35A معاملے پرکشمیر اکنامک الائنس نے21اگست کو ریاستی گورنر کی رہائش گاہ تک مارچ کرنے کا اعلان کیا ہے۔تاجروں، ٹرانسپوٹروں، صنعت کاروں اورٹھیکیداروں کے مشترکہ پلیٹ فارم کشمیر اکنامک الائنس نے احتجاجی ریلی برآمد کرنے کا اعلان کیا ہے۔الائنس کے چیئرمین فاروق احمد ڈار نے کہا کہ عدالت میں اس کیس پر شنوائی سے قبل ایک اہم فائل کے غائب ہونے سے ان خدشات میں اضافہ ہوا ہے کہ ایک سازش کے تحت  جموں کشمیر کے شہریوں کیلئے دفاعی لکیر رکھنے والے قانون35A کو منسوخ کرنے کی تیاریاں کی جا رہی ہے۔انہوں نے کہا کہ کشمیر اکنامک الائنس ذمہ دار سماجی و تجارتی پلیٹ فارم ہونے کے ناطے اس پرخاموشی اختیار نہیں کریں گیا۔انہوں نے  بتایا کہ الائنس نے اس بات کا فیصلہ لیا ہے کہ مشترکہ پلیٹ فارم میں شامل تمام تجارتی جماعتوں کے نمائندے21اگست پیر کو گورنر ہاوس تک مارچ کرینگے۔جہاں ریاستی گورنر کو اس بات ک

۔ نے گھیرا تنگ کیا تو سنگباری دم توڑ گئی:راجناتھ سنگھ۔NIA

لکھنو+ممبئی/ /  قومی تحقیقاتی ایجنسی( NIA)کی مہم کوانسدادملی ٹنسی وسنگباری کیلئے فیصلہ کن قراردیتے ہوئے مرکزی وزیرداخلہ راجناتھ سنگھ نے کہاہے کہ تفتیشی ایجنسی کی سرگرمی کے بعدکشمیرمیں خشت باری کے واقعات میں کافی کمی آئی ہے۔اُدھرمرکزی وزیردفاع ارون جیٹلی نے دعویٰ کیاہے کہ این آئی اے مہم کے بعدکشمیری علیحدگی پسندرقومات کے معاملے میں قحط کے شکارہیں ۔ راج ناتھ سنگھ نے کہا کہ این آئی اے کی مہم کے بعد کشمیر میں سنگباری کے واقعات میں کافی کمی آئی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ مرکزی سرکار نے دہشت گردی ، انتہا پسندی اور نکسلزم کا خاتمہ کرنے کا عہد کیا ہے اور ہم صحیح سمت میں آگے بڑھ رہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ 2016 کی صورتحال اس بات کی گواہ ہے کہ کشمیر میں سنگباری کے کتنے واقعات پیش آیا کرتے تھے لیکن آج کی بات ہے کہ وہاں ایسے واقعات کبھی کبھار ہی دیکھنے اور سننے کو ملتے ہیں ۔ راج ناتھ سنگھ کا ک