تازہ ترین

ضلع رام بن کے بیشتر دیہات بجلی اور سڑک رابطوں سے منقطع

 بانہال // ضلع رام بن کے بانہال ، کھڑی ، نیل ، پوگل پرستان اور گول سنگلدان  کے درجنوں دیہات بھاری برفباری کی وجہ سے بجلی اور سڑک رابطوں سے منقطع ہوکر رہ گئے ہیں اور معمولات کی زندگی درہم برہم ہوکر رہ گئی ہے۔ رام بن کے بیشتر علاقوں میں بجلی کی سپلائی پیر کی شام سے مسلسل بند ہے اور چوبیس گھنٹوں بعد بھی بجلی کی بحالی کے آچار معدوم دکھائی دے رہی ہیں جبکہ کئی علاقوں میں برفباری کی وجہ سے تاروں اور بجلی کے کھمبوں کو نقصان پہنچنے کی بھی اطلاعات ہیں۔ قصبہ بانہال میں شاہراہ سے برف کو فوری طور صاف نہ کئے جانے کی وجہ سے دو شدید بیماروں کو رام بن اور وادی کشمیر کی طرف منتقل کرنے میں کئی گھنٹوں کی تاخیر کا سامنا کرنا پڑا کیونکہ بیماروں کو لیکر جانے والی ایمبولینس پہلے پنتھیال کی پسی کے پاس پھنسی رہی اور بعد میں ریل کے ذریعے کشمیر بھیجنے کی کوشش میں یہ ایمبولینس ریلوے سٹیشن بانہال کے نزدی

مسلسل برفباری اور بارشوںسے بھدرواہ میں سینکڑوں مسافر اور سیاح درماندہ

 بھدرواہ //بھاری برف باری کی وجہ سے بین ریاستی بھدرواہ۔چمبہ اور بھدرواہ ۔بنی قومی شاہراہ پر منگل کے روز ٹریفک معطل رہا ۔گذشتہ48گھنٹوں سے مسلسل برفباری اور بارشوں کی وجہ سے بھدرواہ خصوصاً پدری اور چھتر گلہ درے پر ٹریفک معطل رہی،جسکی وجہ سے سینکڑوں مسافر اور سیاح درماندہ ہوگئے ہیں۔یہ شاہراہیں جو کہ وادی چناب کی شہہ رگ ہیںکو سرتنگل سے کھنڈی مرال اور نالٹھی سے سرتھل علاقوں تک موسم کی خرابی سے بند کیا گیا ہے اور مسافروں کو متبادل راستہ اختیار کرنے کے لئے کہا گیا ہے۔اطلاعا ت کے مطابق 5 بجے بعد دوپہر تک بین ریاستی شاہراہ بھدرواہ ۔چمبہ سڑک پر تھنالہ سے پدری تک2سے6فٹ برف جمع ہوئی ہے جبکہ بھدرواہ۔ بسوہلی شاہراہ پر بستی سے چھتر گلی درے 2سے7فٹ برف جمع ہوئی ہے۔گُذشتہ شام سے بھاری برف باری سے ان سڑکوں کو ٹریفک کیلئے معطل کردیا گیا ۔اطلاعات کے مطابق بھاری برفباری سے سڑکوں پر پھسلن ہونے کی وجہ سے

گول :برف باری اور بارشوں سے نظامِ زندگی درہم برہم

 گول//دو روز سے لگا تار بارشوں اور برف باری کی وجہ سے گول میں نظامِ زندگی مفلوج ہو کر رہ گئی ہے ۔ وہیں گزشتہ شب اندھ کے نارلا علاقہ میں پسی گر آنے سے ایک نوجوان کی موت واقع ہوئی ۔ تفصیلات کے مطابق دو روز سے لگا تار بارشوں اور برف باری کی وجہ سے گول میں نظام زندگی درہم برہم ہو کر رہ گئی ہے اور لوگ گھروں میں ہی مقید بن کر رہ گئے ۔ گول کی رابطہ سڑکیں منقطع ہیں مہو رگول سڑک کل دوپہر سے ہی ٹریفک کے لئے بند ہو گئی تھی جبکہ دوران شب برف باری کی وجہ سے دیگر سڑکوں پر بھی ٹریفک کو بریک لگی ۔گول بازار میں بھی گریف نے برف نہیں ہٹائی جس وجہ سے کافی پھسلن ہوئی اور گاڑیوں کو چلنے میں کافی دشواریوں کا سامنا کرنا پڑا اور یہاں کی طرف کسی نے کوئی توجہ نہیں دی۔ وہیں گول رام بن شاہراہ اُس وقت بند ہو گئی جب چھپرن نالہ میں طغیانی کی وجہ سے پسی گر آئی اور یہاں پر انسان بھی پیدل نہ چل سکے اور بعد میں گر

گندو کے علاقوں میںبارش و برف کا سلسلہ لگاتار جاری

گندو// ریاست بھر کے ساتھ ساتھ ضلع ڈوڈہ کے ٹھاٹھری گندو کاہرہ بانجواہ میں بارش و برف کا سلسلہ لگاتار جارہی ہے جس کی وجہ سے عوام کی زندگی مفلوج ہو کر رہ گئی ہے ۔ضلع ڈوڈہ کے میدانوں علاقوں میں رک رک کے بارش کا سلسلہ جارہی ہے جب کہ بالائی علاقوں میں برف باری کا سلسلہ جارہی ہے۔ لوگوںنے دوسرے دن بھی بارش و برف پر اپنی خوشی کا اظہار کیا ہے اور کہا کہ بارش و برف کی سخت ضرورت تھی۔ مقامی لوگوں کا کہنا ہے کہ پچھلے کئی ماہ سے بارش نہ ہونے سے ندی نالے و پینے کے پانی کی سخت مشکلات پیدا ہو رہی تھی اب کچھ حد تک راحت ملے گی۔جہاں ایک طرف لوگوں نے خوشی کا اظہار کیا وہیں دوسری طرف درجنوں گائوں میں عوام مشکلاتسے دو چار ہیں۔ مقامی لوگوں نے بتایا کہ منوہ،ہڈل،کال جگسیر،چنسر کوٹا،پتناذی،ترنکل میں بنیادی سہولیات کی عدم دستیابی ہے جن میں راشن، رسوئی گیس،لکڑی بالن،اور ادویات شامل ہیں کی کمی سے لوگوں میں سرکار سے

سجاد کچلو کا دورۂ پاڈر

بھلیسہ// سابقہ وزیر داخلہ و ایم ایل سی کشتواڑ سجاد احمدکچلو نے ضلع کشتواڑ کے سب ضلع پاڈر کے درجنوں گائوں کا دورہ کیا ۔ اس دوران انہوں نے پاڈر کے صدر مقام گلاب گڑھ میں پارٹی میٹنگ بھی کی ۔ میٹنگ میں مقامی پارٹی کارکنان و لیڈارن نے شرکت کی۔مقامی لوگوںنے کئی مسائل ایم ایل سی کو نوٹس میں لائے اور کہا کہ پاڈر سب ضلع کو ریاستی سرکار و ضلع انتظامیہ نے باکل نظر اندازکیا ہے یہاں کی عوام کو تمام  بنیادی سہولیات کی عدم دستیابی کی وجہ سے سخت مشکلات کا سامنا ہے لیکن یہاں پر انتظامیہ نام کی کوئی بھی چیز نہیں ہے۔مقامی عوام نے کہا کہ سرکار کو فوری طور پر یہاں اے ڈی سی کی پوسٹ کو منظوار ی دینی چاہے۔پاڈر کے 90 فیصدی آبادی کو بی پی ایل کا درجہ دیا جائے،ایم جی نریگامیں تمام بقایہ جات واگزار کی جائے، گل دار سے پاڈر سڑک کی خستہ حالی، سول سے اشتیاری سڑک کی جلد از جلد تکمیل اور برف باری میں مزید راشن جم

اکل ابھیان بھاگ چندربھاگا کا اجلاس منعقد

   ڈوڈہ//اکل ابھیان بھاگ چندر بھاگا کے رضاکاروں اور سمتی ممبران کا ایک اجلاس بھاگ کاریالیہ ڈوڈہ میںمنعقد ہوا۔اجلاس زیر قیادت قومی صدر پروفیسر منجو شری واستو ، جو کہ مہلا نگر سنگٹھن کے آل انڈیا پربھاری بھی ہیں،منعقد ہوا ۔اجلاس کا انعقاد آرگنائزیشن کی زمینی سطح پر کارکردگی کا جائزہ لینے اور اکل ابھیان میں سرگرمی سے حصہ لینے کیلئے خواتین کی حوصلہ افزائی کرنے کے لئے منعقد ہوا۔انہوں نے مہلا نگر سمتی اور آرگنائزیشن کے دیگر خواتین ممبران کے ساتھ بھی تبادلہ خیال کیا۔مہلا سمتی کے علاوہ سوامی دیا نند سروسوتی جے اینڈ کے سمبھاگ سنرکھشک،اکل ابھیان کے سمبھاگ پرموکھ نیرج ٹھاکور ،سمبھاگ کاریہ کرتاوبھاگ پرموکھ وپن شرما ،سمبھاگ وکاس پرموکھ راج سنگھ،بھاگ ابھیان سمتی ادھیکش چندرر بھاگا بھاگ انگریز سنگھ ،ابھیان پرموکھ بھاگ چندر بھاگا جسبیر سنگھ اور صدر آنچل ڈوڈہ نہرو لعل و دیگرکارکنان و ک

ایم جی نریگا ورکروں کی قلم چھوڑ ہڑتال جاری

ڈوڈہ//ایم جی نریگا ایمپلائز ایسو سی ایشن ڈ وڈہ کی جانب سے اپنے دیرینہ مطالبات تسلیم کرنے یعنی کہ انکی خدمات کو باقاعدہ بنانے کے حق میں کام چھوڑ ہڑتال کرکے احتجاج کیا گیا۔مظاہرین کا مطالبہ تھا کہ سرکار ایم جی نریگا ورکروں کے لئے ایک مناسب جاب پالیسی تشکیل دے۔مظاہرین میں سے ایک ورکر نے کہا کہ ہم گذشتہ نوسال سے اپنے فرائض تن دہی اور لگن سے انجام دے رہے ہیںلیکن ابھی تک ان کا مستقبل مخدوش ہے ۔مظاہرین کا کہنا ہے کہ ہم تمام تعلیم یافتہ اور اپنے پیشہ میں کافی م،ہارت رکھتے ہیں۔ان کا کہنا ہے کہ ن ملازمین کو ایم جی نریگا کے تحت معمور کیا گیا ہے لیکن وہ محکمہ کی تمام سکیمیں چلا رہے ہیں اور باوجود اس حقیقت کے انکی اجرت بر وقت ادا نہیں کی جاتی ہے جسکی وجہ سے ان کو مشکلات کا امنا کرنا پڑ رہا ہے۔۔انہوں نے مشاہرے میں اضافہ کا بھی مطالبہ کیا۔ مظاہرین نے کہا کہ تعلیم یافتہ ہونے کی وجہ سے ہم اپنی جد جہد پ

سنیل شرما کا ادھمپور ۔چنہنی سڑک کی فوری مرمت کی ہدایت

 جموں / ٹرانسپور ٹ کے وزیر مملکت سنیل شرما نے متعلقہ ایجنسیوں سے کہا کہ وہ ادھمپور ۔ چنہنی سڑک کی مرمت کا کام فوری ہاتھ میں لیں۔وزیر نے یہ ہدایات آج متعلقہ افسروں اور انجینئروں کی ایک ایمرجنسی میٹنگ کے دوران جاری کی۔سنیل شرما نے اس سڑک کی خستہ حالی کا سنجیدہ نوٹس لیتے ہوئے گیمن انڈیا لمٹیڈ کو ہدایت دی کہ وہ یہ کام جلد ازجلد ہاتھ میںلیں تاکہ مسافروں کو مشکلات کا سامنا نہ کر نا پڑے۔انہوںنے کہا کہ اس سڑک کو کافی اہمیت حاصل ہے اور سرما میں اس کی حالت  ابترہوجاتی ہے ۔انہوں نے متعلقین سے کہا کہ وہ کاموں کو جلد از جلد مکمل کریں تاکہ حادثات کو روکا جاسکے اور لوگوں کی راحت رسانی بھی ہوسکے ۔میٹنگ میں وزیر نے اولڈ کد سڑک کو مرمت کرنے کے معاملے پر بھی تبادلہ خیال کیا۔ وزیر کو جانکاری دی گئی کہ اس پروجیکٹ کے لئے 14کروڑ روپے مختص کئے گئے ہیں اور اس پر کام عنقریب شروع کیا جائے گا۔

خبریں

ضلع ریاسی کے بالائی علاقوں میں موسم کی پہلی برفباری   زاہد ملک  ریاسی//ریاسی کے بالائی علاقوں میں موسم کی پہلے برفباری اور میدانی علاقوں میں بارشوں کی وجہ سے ضلع میں خشک سالی کا خطرہ ٹل گیا ہے۔منگل شام کو موسم اگرچہ صاف رہا تاہم مہور سب ۔ڈسٹرکٹ کے بعض علاقوں میں بھاری برف باری کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔نتیجہ کے طور پر بین دیہی اور بین ضلعی سڑکوں کو بند کر دیا گیا ہے۔ان سڑکوں پر پسیاں گر آنے کے خطرہ کے پیش نظر ان سڑکوں کو آمد و رفت کے لئے بند کر دیا گیا ہے۔مہور سے گول تک کی سڑک کو ڈگن ٹاپ پر برفبرای کی وجہ سے بند کردیا گیا ہے اور مہور سے سنگری تک کی سڑک کو بھی دھامنی کے مقام پر بند کر دیا گیا ہے۔دریں اثنا آخری اطلاعات کے مطابق مہور سے گلاب گڑھ اور مہور سے جموں تک کی سڑک کو گاڑیوں کی آمد و رفت کے لئے کھول دیا گیا ہے۔   رام بن کے پہاڑوں پر برفباری ا

ڈوڈہ میںوزیراعلیٰ کی عوامی رابطہ مہم ،رات کے 2بجے تک عوامی شکایات سن لیں

ڈوڈہ//وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی نے پچھلی کئی دہائیوں میں ہونے والے اب تک کے سب سے بڑے عوامی استفسار کے دوران کل رات کے ڈیڑھ بجے تک ڈوڈہ میں عوامی دربار کے دوران وفود کے مطالبات اور شکایات کے بارے میں جانکاری حاصل کی۔یہ کیمپ اتوار کو صبح ساڑھے دس بجے شروع ہوا اور رات گئے تک جاری رہا اور ڈوڈہ کے پلماس علاقے سے تعلق رکھنے والے وفد نے رات کے ایک بجکر 40منٹ پر اپنے مشکلات سے وزیرا علیٰ کو آگاہ کیا۔ وفد نے علاقے میں فٹ پاتھ تعمیر کرنے اور علاقے کو قصبے کے سرکیولر روڑ کے ساتھ جوڑنے کا مطالبہ وزیر اعلیٰ کے سامنے رکھا۔وزیر اعلیٰ نے لوگوں کے مشکلات کو مد نظر رکھتے ہوئے وہاں فٹ پاتھ تعمیر کرنے کے لئے 15لاکھ روپے واگزار کرنے کا اعلان کیا۔انہوںنے وہاں بجلی اور پینے کے پانی کی سہولیات بہم کرانے کی بھی ہدایت دی۔عوامی رابطہ پروگرام کے دوران لگ بھگ 100وفود ملاقی ہوئے اور لوگوں کی بھاری تعداد کے مد نظر یہ

پہاڑوں پر برف باری، میدانی علاقوں میں مسلسل بارش سے وادی چناب میں سردی کی لہر

  گول//گزشتہ شب سے پورے خطہ چناب کے ساتھ ساتھ گول میں بھی برف باری اور بارشوں کا سلسلہ جاری ہے ۔چار ماہ کی لگا تار خشک سالی کے بعد آج پہلی مرتبہ بارشیں اور برف باری ہوئی جس وجہ سے لوگوں نے راحت کی سانس لی ۔ وہیں خشک سالی کی وجہ سے مختلف بیماریاں پھوٹ پڑی تھیں اور چشمے سوکھ گئے تھے جس کی وجہ سے ہر جگہ پر پانی کی ہا ہاکار تھی اور لوگ بوند بوند کے لئے ترس رہے ہیں ۔ گول کے مختلف علاقوں بدھن ، کلی مستیٰ ، گاگرہ ، بھیمداسہ ، وغیرہ علاقو ں میں ہلکی برف باری ہوئی جبکہ دگن ٹاپ میں شام تک تقریباً چھ انچ برف جمع ہوئی تھی جس وجہ سے گول مہور شاہراہ پر ٹریفک کو بریک لگی ۔ گول کے نچلے علاقوں سنگلدان ، داڑم ، دھر م کنڈ، اندھ ، ٹھٹھارکہ ، داچھن وغیرہ علاقوں میں لگا تار موسلادھار بارشیں ہو رہی ہیں ۔ بارشوں اور برف باری کی وجہ سے سردی کی لہر میں اضافہ ہو گیا ہے ۔ وہیں کئی لوگوں نے شکایات کی کہ ا

ضلع انتظامیہ کشتواڑ کا اجلاس

کشتواڑ//ضلع ترقیاتی کمشنر کشتواڑ انگریز سنگھ رانا ،جو کہ ڈسٹرکٹ پرائیویٹ نیگوسیشن کمیٹی کے چیئر مین بھی ہیں، کی قیادت میں زمین حصولیابی کیسوںکےلئے ریٹ مقرر کرنے کے لئے ایک اجلاس کا انعقاد ہوا۔ اجلاس میں زمین حصولیابی کے کلکٹروں (ایڈیشنل ڈپٹی کمشنروں ) ،اسسٹنٹ کمشنر ریوینیو اور سب۔ ڈویژنل مجسٹریٹ چھاترو،آفیسر کمانڈنگ گریف اور متعلقہ محکموں کے سربراہوں کے علاوہ زمین مالکان نے بھی شرکت کی۔اجلاس میں موقعہ پر ہی زمین معاوضہ کے10معاملے حل کئے گئے۔اجلاس کے وران زمین مالکان کو مختلف ترقیاتی پروجیکٹوں کے لئے زمین کی حصولیابی کے لئے انتظامیہ سے تعاوں کرنے کے لئے راغب کیا گیا ۔دریں اثنا ،اجلاس میں کشتواڑ۔پاڈر روڈ کے مدعے پر تفصیلی غور و خوض کیا گیا ،جس کی وجہ سے پروجیکٹ کی تکمیل میں 2011سے رکاوٹ بنی ہوئی ہے۔ اس معاملہ کو افہام و تفہیم سے حل کیا گیا ۔  

سرپنچوں کا 10روزہ قومی دورہ اختتام پذیر

کشتواڑ//فوج کی جانب سے ضلع کشتواڑ کے سرپنچ، جو کہ دہلی اور آگرہ کے دس روزہ دورے پرتھے، کشتواڑ واپس پہنچ گئے ہیں۔جی او سی ڈیلٹا فورس نے اس گروپ کا بٹوت میں منعقدہ ایک پُر وقار تقریب میں خیر مقدم کیا ۔گروپ کو یکم دسمبر2017کو فوج و سول اہلکاروں نے کشتواڑ سے ہری جھنڈی دکھا کر روانہ کیا تھا ۔دورے کے دوران گروپ نے انڈین اگریکلچر ل اینڈ ریسرچ انسٹیچوٹ (پوسا) دہلی کا دورہ کیا ،جہاں پر انہیں ڈاکٹر نفیس احمد نے زراعت و پالی فارمنگ تکنیک اور بائیو گیس لاگو کرنے کے سسٹم کی جانکاری دی ۔انہیں انڈیا گیٹ ،راشٹر پتی بھون ،پالیمنٹ ہاﺅس، جامع مسجد ۔لعل قلعہ اور دہلی کنٹونمینٹ میں ٹینک میوزیم دکھا کر ملک کے ثقافت سے واقف کیا گیا ۔آگرہ میں ان سرپنچوں نے ضلع مجسٹریٹ آگرہ گورو دیال کے ساتھ بھی ملاقات کی ،جنھوں نے انہیں پنچایتی راج سے متعلق بیداری پید کی۔انہوں نے تاج محل اور فتح پور سیکری کا بھی دروہ کیا۔واپس

اقبال میموریل سکول کے یوم تاسیس پر تقریب

 ڈوڈہ //اقبال میموریل سکول بھابور ،ڈوڈہ نے جوش وخروش سے اپنا یوم تاسیس منایا ۔ پریس کے لئے جاری ریلیز کے مطابق اس موقعہ پر سکول کے پرنسپل عمر اقبال نے خطبہ استقبالیہ پیش کرکے سکول کی سالانہ کارکردگی اور حصولیابیوں کو اُجا گر کیا ۔تقریب پر جی ڈی سی ڈوڈہ کے سینئر اسسٹنٹ پروفیسر زالوجی ڈاکٹر وحید خوار بلوان مہمان خصوصی تھے،جنھوں نے اپنے خطاب میں سکول انتظامیہ کی کارکردگی کی کافی سراہنا کیاور سکول کے اُبھرتے ہوئے ذہین طلاب کو ہرشعبہ میں بہتر کارکردگی کا مظاہرہ کرنے کی حوصلہ افزائی کی اور اساتذہ سے معیاری تعلیم فراہم کرنے کی صلاح دی۔ تقریب میں ڈاکٹر بلوان کو آن لائن ووٹ سسٹم سے ”موسٹ انسپائرنگ ٹیچر ایوارڈ“ سے نوازا۔سکول کے طلاب نے رنگا رنگ پروگرام پیش کیا ۔یہ امر قابل ذکر ہے کہ سکول ہذا کے طلاب غیر نصابی کاروائیوں میں بھی شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کر رہے ہیں۔سکول کی جانب سے

ایم جی نریگا ورکروں کی کام چھوڑ ہڑتال

رام بن//ایم جی نریگا ایمپلائز ایسو سی ایشن رام بن کی جانب سے اپنے دیرینہ مطالبات تسلیم کرنے کے حق میں کام چھوڑ ہڑتال کرکے احتجاج کیا گیا۔مظاہرین کا مطالبہ تھا کہ سرکار ایم جی نریگا ورکروں کے لئے ایک مناسب جاب پالیسی تشکیل دے۔یہ مظاہرین گذشتہ 12 سال سے محکمہ دیہی ترقیات میں مختلف کام کر رہے ہیںاور اب وہ باضابطہ طور سے آر ای ٹی اور رہبر زراعت کے طرز پر ایڈجسٹ کرکے باقاعدہ بنانے کا مطالبہ کر رہے تھے۔. انہوں نے مشاہرے میں اضافہ کا بھی مطالبہ کیا۔ ہڑتالی ملازمین نے الزام لگایا کہ سرکار کے پاس کوئی واضح جاب پالیسی نہیں ہے،جسکی وجہ سے سینکڑوں کوالیفائڈ نوجوانوں کا مستقبل مخدوش ہو گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ سرکار کی غلط پالیسی سے ان کے بہت سے ساتھی 40سال کی عمر حد کر چکے ہیں جو کہ ملازمت حاصل کرنے کی عمر کی حد مقرر کی گئی ہے۔

۔55کلو میٹر سفر کیلئے800روپے ادا کرنے پر مجبور

   سرینگر //دور دراز اور پچھڑے علاقوں کے لوگوں کو ریاستی سرکار کی جانب سے ہر ممکن مدد فراہم کرنے کی یقین دہانیوں کے بیچ وڑون کشتواڑ کے لوگ 55کلو میٹر کا سفر طے کرنے کےلئے 8سو روپے کرایہ ادا کرنے پر مجبور ہیں اور انتظامیہ ایسے لوگوں کی مشکلات کا ازلہ کرنے میں مکمل طور پر ناکام ہے ۔مقامی لوگوں کے ایک وفد نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ کچھ ہی دنوں میں گاﺅرن اننت ناگ سے انشن ٹاپ سڑک سردیوں کے چھ ماہ کےلئے بھاری برف باری کے نتیجے میں بند ہو جائے گئی لیکن اُس سے قبل اس شاہراہ پر چلنے والی سومو گاڑیوں کے ڈرائیووں نے انہیں لوٹنا شروع کر دیا ہے اور اُن سے منہ مانگا کرایا حاصل کیا جاتا ہے ۔وڑون کے جاوید احمد نامی ایک شہری نے بتایا کہ گاﺅرن اننت ناگ سے انشن ٹاپ سڑک کا فاصلہ صرف 55کلو میٹر کا ہے اور سرکاری طور پر انتظامیہ نے اس سڑک پر یکطرفہ چلنے والے مسافروں کےلئے اگرچہ 110 روپے کرایہ م

خبریں

وفد کی وزیر اعلیٰ سے فریاد  RCEA ترقیوں میں ریزرویشن کو بحال کرنے کا مطالبہ  ڈوڈہ //جموں و کشمیر ریزروڈ کٹیگریز ایمپاﺅر نٹ ایلائنس چناب ویلی نے وزیر اعلیٰ کے عوامی دربار ڈوڈہ میں شرکت کی ۔وفد نے وزیر اعلیٰ پر ایس سی، ایس ٹی، آر بی اے و دیگر مسماندہ طبقہ جات کے آئینی حقوق کا تحفُظ کرنے پر زور دیا ۔ایلائنس کے صدر رائے نے وزیر اعلیٰ سے ترقیوں میں ریزرویشن کو بحال کرنے میں ذاتی مداخلت کا مطالبہ کیا ۔وفد نے وزیر اعلیٰ سے کہا کہ سرکار عدالت عالیہ میں ریزرویشن ایکٹ کا دفاع کرنے میں ناکام رہی ہے ،جسکی وجہ سے ترقیوں میںریزرویشن پر پابندی لگی ہے۔ایلائنس نے مبینہ الزام لگایا کہ ریزرویشن کو ریزرویشن مخالف لابی نے ایک سوچے سمجھے منصوبے کے تحت ختم کیا ہے۔وادی چناب کے صدر نے کہا کہ مخلوط سرکار عوامی اہمیت کے مسائل سے نمٹنے میں ناکام رہی ہے،انہوں نے وزیر اعلیٰ سے عدالت ا

وزیر اعلیٰ کی رابطہ مہم جاری: ڈوڈہ میں عوامی شکایات کے ازالہ کیمپ کا انعقاد

ڈوڈہ//چناب خطے کے دورے کے دوران وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی آج کشتواڑ سے ڈوڈہ پہنچی اور وہاں عوامی شکایات کے ازالے کے کیمپ کا انعقاد کیا۔اسی طرح کا کیمپ وزیر اعلیٰ نے کل کشتواڑ میں منعقد کیا تھا۔ضلع کے ارکان قانون سازیہ اس موقعہ پر موجودتھے۔جو مطالبات کیمپ کے دوران سامنے آئے ان میں ڈوڈہ ۔ کپرن سڑک کی تعمیر ، قصبوں میں سٹریٹ لائیٹس نصب کرنے اور ڈوڈہ اور بھدرواہ کو سیاحتی نقشے پر لانے کے مطالبات شامل ہیں۔لوگوں نے خطے میں قائم ہونے والے پاور پروجیکٹوں کے لئے تربیت یافتہ افرادی قوت تیار کرنے کے لئے ایک سکل ڈیولپمنٹ ادارہ کے قیام کا مطالبہ کیا۔ اس کے علاوہ لوگوں نے قصبے میں ایک زنانہ کالج قائم کرنے اور گنپت پل کی تکمیل میں سرعت لانے کا مطالبہ کیا۔ ڈوڈہ اور بھدرواہ سے آئے ہوئے کئی وفود نے ان علاقوں میں سیاحتی مقامات کو ترقی دینے کا مطالبہ کیا جن کی بدولت مقامی اقتصادیات میں استحکام مدد ملے گی

ضرت شاہ فرید الدین ؒ کی درگاہ پر حاضری

 کشتواڑ / /وزیرا علیٰ محبوبہ مفتی نے حضرت شاہ فریدالدین ؒ کی زیارت گاہ پر حاضری دی۔وزیر اعلیٰ نے اس موقعہ پر ریاست اور ریاست کے لوگوں کے لئے امن ، خوشحالی اور بہبودی کی دعا کی۔ انہوںنے حضرت شاہ انور الدین ؒ اور حضرت شاہ اخیار الدین ؒ کی مقبروں پر حاضری دی۔بعد میں ڈوڈہ ضلع کے دورے پر جانے سے پہلے وزیر اعلیٰ نے حضرت شاہ اسرار الدین ؒ کی زیارت پر حاضری دی اور ریاست کے امن ، خوشحالی اور بہبودی کے لئے دعا کی۔اس موقعہ پر وزیر اعلیٰ نے ضلع انتظامیہ کو ہدایت دی کہ زیارتوں کے ارد گرد صحت و صفائی کو یقینی بنائیں اور ان درگاہوں پر بجلی اورپانی کی دستیابی کو بھی یقینی بنائیں۔وزیر اعلیٰ کے پرنسپل سیکرٹری روہت کنسل ،صوبائی و ضلع انتظامیہ کے افسران وزیر اعلیٰ کے ہمراہ تھے۔  

55کلو میٹر سفر کیلئے800روپے ادا کرنے پر مجبور

 کشتواڑ //دور دراز اور پچھڑے علاقوں کے لوگوں کو ریاستی سرکار کی جانب سے ہر ممکن مدد فراہم کرنے کی یقین دہانیوں کے بیچ وڑون کشتواڑ کے لوگ 55کلو میٹر کا سفر طے کرنے کیلئے 8سو روپے کرایہ ادا کرنے پر مجبور ہیں اور انتظامیہ ایسے لوگوں کی مشکلات کا ازلہ کرنے میں مکمل طور پر ناکام ہے ۔مقامی لوگوں کے ایک وفد نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ کچھ ہی دنوں میں گائورن اننت ناگ سے انشن ٹاپ سڑک سردیوں کے چھ ماہ کیلئے بھاری برف باری کے نتیجے میں بند ہو جائے گئی لیکن اُس سے قبل اس شاہراہ پر چلنے والی سومو گاڑیوں کے ڈرائیووں نے انہیں لوٹنا شروع کر دیا ہے اور اُن سے منہ مانگا کرایا حاصل کیا جاتا ہے ۔وڑون کے جاوید احمد نامی ایک شہری نے بتایا کہ گائورن اننت ناگ سے انشن ٹاپ سڑک کا فاصلہ صرف 55کلو میٹر کا ہے اور سرکاری طور پر انتظامیہ نے اس سڑک پر یکطرفہ چلنے والے مسافروں کیلئے اگرچہ 110 روپے کرایہ مقرر کیا ہ