تازہ ترین

چھتہ بل میں جراثیم کش ادویات کا چھڑکائو

سرینگر// سرینگر کے چھتہ بل علاقے میں گزشتہ روز2افراد کے کرونا وائرس میں مبتلا ہونے کی تصدیق کے بعد محکمہ صحت اور سرینگر مونسپل کارپوریشن کی ٹیموں نے علاقے کو سیل کرکے وہاں جراثیم کش ادویات کا چھڑکائو کیا۔حکام نے جمعہ کو بتایا کہ چھتہ بل سے تعلق رہنے والے2نوجوان جو بیرون ریاست مذہبی اجتماع میں شامل ہوئے تھے،کو کرونا وائرس میں مبتلا پایا گیا۔ سنیچر کی صبح اس علاقے کو سیل کیا گیا اور جراثیم کش ادویات کا چھڑکائو کیا گیا۔محکمہ صحت اور سرینگر مونسپل کارپوریشن کی خصوصی ٹیمیں، خاص پوشاک اور دیگر حفاظتی ساز و سامان سے لیس ہوکر علاقے میں پہنچ گئیں اور علاقے کے گلی کوچوں کے علاوہ گھر گھر جاکر ادویات کا چھڑکائو کیا۔ معلوم ہوا ہے کہ اس موقعہ پر ادویات کا چھڑکائو کرنے کی نگرانی ڈرون پر لگے کیمروں سے کی گئی۔2مقامی نوجوانوں کے کرونا وائرس میں مبتلا ہونے کے بعد علاقے میں سخت تشویش اور فکرمندی کا اظہار

صورہ ہسپتال میں آزمائشی مشق کا انعقاد | صورتحال سے نمٹنے کیلئے تیار رہنے کی ہدایت

 سرینگر //شیر کشمیر انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنسز صورہ میں اتوار کو چھٹی کے باوجود بھی کام کاج معمول کے مطابق جاری رہا جبکہ کورونا وائرس سے نپٹے کیلئے آزمائشی مشق کا بھی انعقاد کیا گیا جس دوران طبی اور نیم طبی عملہ کوکسی بھی صورتحال سے نمٹنے کیلئے تیار رہنے کی ہدایت دی گئی۔اتوار کو صبح دس بجے سے لیکر 1بجے تک آزمائشی مشق کا بھی انعقاد کیا گیا جس دوران ڈائریکٹر سکمز ڈاکٹر اے جی آہنگر، میڈیکل سپرانٹنڈنٹ ڈاکٹر فاروق احمد جان، کورنا وائرس کے نوڈل آفیسر ڈاکٹر غلام حسن یتو کے علاوہ دیگر افسران ، طبی اور نیم طبی عملہ بڑی تعداد میں موجود تھا۔ سکمز میں منعقد کی گئی آزمائشی مشق کے بارے میں تفصیلات فراہم کرتے ہوئے ڈاکٹر فاروق احمد جان نے بتایا ’’ اتوار کو ہم نے عارضی طور پر مختلف شعبہ جات تیار کرکے طبی اور نیم طبی عملہ کو اوپی ڈی، قرنطینہ وارڈ، جنرل وارڈ، آئی سی یو، ایمرجنسی

صوبائی کمشنرنے CD اور JLNM ہسپتالوں کا دورہ کیا

سرینگر//کورونا وائیرس ( کووڈ 19 ) کے خطرات کے مدِ نظر صوبائی کمشنر کشمیر پی کے پولے نے درگجن ڈل گیٹ میں قائم چسٹ ڈزیز ہسپتال اور جواہر لال نہرو میموریل ہسپتال ( جے ایل ایم این ) کا دورہ کیا اور وہاں محکمہ صحت کی طرف سے کئے جا رہے انتظامات کا جائیزہ لیا ۔ اس موقعہ پر انہیں متعلقہ افسران نے متعلقہ مریضوں کیلئے کورنٹین سہولیات کے انتظامات کے بارے میں جانکاری دی ۔ دورے کے دوران صوبائی کمشنر نے متعلقہ افسروں سے کہا کہ وہ طبی رہنما خطوط پر سختی سے عمل کرتے ہوئے مشتبہ مریضوں کو ہر ممکن طبی سہولیات فراہم کریں ۔ صوبائی کمشنر نے ہسپتال حکام کو ہدایت دی کہ وہ ہر صورت میں معقول صحت و صفائی کا اہتمام کریں ۔ ڈائریکٹر ہیلتھ سروسز کشمیر ، پرنسپل جی ایم سی سرینگر و دیگر اعلیٰ حکام صوبائی کمشنر کے ہمراہ تھے ۔   

کورونا وائرس تیسری عالمی جنگ

 سرینگر// سرینگر کے ضلع مجسٹریٹ ڈاکٹر شاہد اقبال چودھری نے کورونا وائرس کو تیسری عالمی جنگ قرار دیتے ہوئے دعویٰ کیا ہے کہ اگر میں روزانہ کے واقعات کا خلاصہ پیش کروں گا تو کشمیر میں کسی کو بھی نیند نہیں آئے گی۔ انہوں نے لوگوں کو انا چھوڑ کر مل جل کر کام کرنے اور ایک دوسرے کی مدد کرنے کی صلاح دی ہے۔ مائیکرو بلاگنگ کی ویب سائٹ ٹویٹر پر کافی سرگرم رہنے والے ڈاکٹر شاہد چودھری نے اتوار کو اپنے ایک ٹویٹ میں کہا: 'یقین کریں اگر میں روزانہ کے واقعات کا خلاصہ پیش کروں گا تو کشمیر میں کسی کو بھی نیند نہیں آئے گی۔ آئیں اپنی انا کو ایک طرف رکھیں اور مل جل کر کام کریں۔ خوف وہراس کو بڑھانے کے بجائے ایک دوسرے کی مدد کریں۔ یہ تیسری عالمی جنگ ہے۔ اس سے کم نہیں۔ اگر اس سے نجات ملی تو ہمارے پاس بقیہ زندگی دوسری چیزوں کے لئے ہے'۔ ضلع مجسٹریٹ سری نگر کی اس ٹویٹ کو سوشل میڈیا بالخصوص ٹویٹر او

بیرون ممالک سے آنے والوں کیلئے65ہوٹل اور عمارتیں مخصوص

سرینگر //انتظامیہ نے شہر کے 65ہوٹلوں اور سرکاری عمارات کو قرنطینہ کیلئے مخصوص رکھا ہے جن میں بیرون ممالک سے یہاں آنے والے 1200 طلاب اور شہریوں کو22 سرکاری عمارتوں اورہوٹلوں میں رکھا گیا ہے۔ پچھلے کچھ دنوں سے ضلع انتظامیہ سرینگر کرونا وائرس کے پھیلائو کو روکنے کی خاطر بڑے پیمانے پر اقدامات کر رہی ہے اور انتظامیہ نے بیرون ممالک جن میں بنگلہ دیش اور دیگر ممالک شامل ہیں ،سے آنے والے طلاب کو ٹھہرانے کیلئے شہر میں 65ہوٹلوں اور سرکاری عمارتوں کو کورنٹائن کیلئے مخصوص رکھا گیا ہے ۔ ڈی سی سرینگر کے مطابق ابھی تک 22کورنٹائن عمارتوں میں 1200کے قریب افراد کو رکھا گیا ہے، جہاں اُن کی اچھی طرح سے دیکھ بھال کی جارہی ہے۔ ہیں ۔اس دوران میڈیا سے بات کرتے ہوئے شاہد اقبال چودھری نے کہا ہے کہ 12سو کے قریب لوگ بیرون ممالک اور ریاستوں سے یہاں آئے ہیں جنہیں 22کے قریب لوکیشن پر رکھا گیا ہے ۔ شاہد اقبال چودھر

سرکاری حکمنامہ کی خلاف ورزی ، چھتہ بل میں ہوٹل سربمہر

سرینگر//سرکاری احکامات کی خلاف ورزی کرنے کی پاداش میں چھتہ بل سرینگر میں ایک ہوٹل کو سربمہر کیاگیا ہے۔ کورونا وائرس کے پھیلائو کے خدشہ کے پیش نظرجہاں حکومت نے تمام دکانوںاور تجاری مراکزاور تعلیمی اداروں کو بند کیا ہے وہیں چھتہ بل سرینگر میں ایک ہوٹل سرکاری احکامات کی خلاف ورزی کررہا تھا۔ نائب تحصیلدار جنوب لطیف احمد، چوکی انچارج چھتہ بل کی نگرانی میں ہوٹل کو سربمہر کیاگیا۔ اس موقعہ پر ہوٹل میں موجود ملازمین اور صارفین کو باہر نکالاگیا۔   

شہر خاص میں سڑکوں کی حالت ناقابل رحم

سرینگر//شہر خاص کی سڑکیں انتہائی خستہ ہو چکی ہے جس کی وجہ سے عوام کو گوناگوں مشکلات کا سامناکرنا پڑرہا ہے۔ شہر خاص کے اکثر علاقوں میں سڑکیں اور گلی کوچے خستہ حال ہونے اور جگہ جگہ کھڈبن جانے سے راہگیروں کو دقتوں کا سامنا کرناپڑرہا ہے ۔شہر خاص کے صفاکدل، راجوری کدل، چھتہ بل، مہاراج گنج، نوہٹہ ، خواجہ بازار، خانیار ، کلاش پورہ، زینہ کدل، عالی کدل میں سڑکوںکی حالت ناگفتہ بہہ ہے جس کی وجہ سے لاکھوں نفوس پر مشتمل آبادی کو سخت دشواریوں کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔ لوگوںکاکہنا ہے کہ بارشوں کے دوران سڑکوں میں موجود کھڈوں میں پانی جمع ہونے سے حادثات کا احتمال ہوتا ہے جبکہ گرمیوں میں اٹھنی والی گردوغبار سے راہگیروں کی صحت خراب ہوتی ہے۔ لوگوںکاالزام ہے کہ گزشتہ برس جب میکڈم بچھانے کیلئے موسم سازگار تھا لیکن سڑکوں پر تارکول نہیں بچھایاگیا ۔   

ہردے ناتھ مٹو اور محمد شفیع صوفی فوت

سرینگر//نیشنل کانفرنس صدر فاروق عبداللہ نے پریذیڈنٹ بہوری سبھا اور بیوپار منڈل بہوری کدل کے سابق صدر ہردیا ناتھ مٹو کے فوت ہونے پر رنج وغم کا اظہار کیا ہے۔ انہوں نے اس سانحہ ارتحال پر آنجہانی کے جملہ سوگواران کیساتھ دلی تعزیت کا اظہار کیا اور اُن کی آتما کی شانتی کیلئے دعا کی۔ ہردیاناتھ کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے فاروق عبداللہ نے کہا کہ آنجہانی ایک شریف النفس انسان تھے، جنہوں نے ہمیشہ مذہبی ہم آہنگی اور آپسی رواداری کی آبیاری کی اور ہند ومسلم اتحاد کیلئے ہمیشہ پیش پیش رہے۔ آنجہانی کا کاروبار اور تجارت بھی سچائی اور ایمانداری کی ایک مثال تھی۔ادھر فاروق عبداللہ نے آبی گذر کی معروف شخصیت محمد شفیع صوفی کے انتقال پر رنج وغم کا اظہار کیا ہے اور مرحوم کے سوگوران کیساتھ دلی تعزیت کا اظہار کیا ہے۔ یاد رہے کہ موصوف شیخ محمد عبداللہ کے قریبی ساتھی محمد امین صوفی کے برادر تھے۔پارٹی کے رک

سماجی انجمنیں بھی پیش پیش

سرینگر// کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے سلسلے میں شہر میں جہاں سرینگر میونسپل کارپوریشن کی طرف سے ادویات کا چھڑکائو کیا جارہا ہے وہیں کئی سماجی انجمنوں نے بھی شہر میں ادویات کا چھڑکائو شروع کیا ہے ۔’اتھ روٹ ‘ نامی سماجی انجمن کی جانب سے کل شہر سرینگر کے کئی علاقوں میں چھڑکائو مہم شروع کی گئی ۔انجمن سے وابستہ رضا کار وں نے سپرے مشینوں کے ذریعے کل شہرمیں کئی مقامات پر ادویات کا چھڑکائو کیا ۔ادھر گذشتہ کئی دنوں سے ساز و سامان سے لیس مونسپل کارپوریشن کے عملہ نے شہرکے کئی علاقوں میں ادویات کا چھڑکائو کیااور صفائی کی جبکہ لوگوں کو وائرس سے بچائو کے لئے احتیاطی تدابیر کے بارے میں جانکاری دی گئی اورلوگوں کو وائرس مخالف مہم کی کامیابی کے لئے بھرپور تعائون دینے کی اپیل کی گئی۔  

سرینگر کے سول سکریٹریٹ میں سنسنی

سرینگر// سرینگر کے سول سکریٹریٹ میں اس وقت سننی پھیل گئی جب یہاںتعینات ایک علیل سی آر پی ایف کے ہیڈ کانسٹیبل نے دوران ڈیوٹی خود پر گولی مار کر خودکشی کرلی ہے۔ سول سکریٹریٹ میں تعینات سی آر پی ایف23 بٹالین سے وابستہ ہیڈ کانسٹیبل دلباغ سنگھ نے جمعہ اور ہفتہ کی درمیانی رات کو قریب ساڑھے بارہ بجے دوران ڈیوٹی خود پر گولی چلائی۔ گولی چلنے کی آواز سنتے ہی سول سکریٹریٹ میں تعینات دوسرے سی آر پی ایف اہلکار دلباغ سنگھ کے پاس پہنچے اور انہیں خون میں لت پت پایا۔ذرائع نے بتایا کہ زخمی سی آر پی ایف ہیڈ کانسٹیبل کو فوری طور پر نزدیکی طبی مرکز منتقل کیا گیا جہاں ڈاکٹروں نے اسے مردہ قرار دے دیا۔بتایا جاتا ہے کہ پنجاب سے تعلق رکھنے والا مہلوک سی آر پی ایف اہلکار گذشتہ چند ہفتوں سے علیل تھا اور اس کا علاج چل رہا تھا۔ سی آر پی ایف اہلکار کے قبضے سے ایسا کوئی دستاویز برآمد نہیں ہوا ہے جس سے یہ معلو

راجباغ میں ریستوران سربمہر

سرینگر//سرکاری حکمنامہ کی خلاف ورزی کرنے کی پاداش میں راجباغ میں ایک رستوران کو مقفل کیا گیا ۔کوروناوائرس کے پھیلائو کو روکنے کیلئے جہاں انتظامیہ نے شہر سرینگر میں تمام ریستورانوں اور ہوٹلوں کو بند رکھنے کا حکم جاری کیا ہے وہیں سنیچر کو راجباغ میں ایک ریستوران کو خلاف ورزی کی پاداش میں مقفل کردیا گیا ہے ۔ بتادیں کہ شہر سرینگر کے حدودمیں آنے والے تمام ریستورانوں اور ہوٹلوں کو گذشتہ روز بند کرنے کا حکم دیا گیا تھا ۔ کووڈ19کو پھیلنے سے روکنے اور احتیاطی طور پر کئی طرح کے اقدامات سرکاری طور پر اُٹھائے گئے ہیں جن میں سے پبلک پارکوں کو بند کرنے ، ریستورانوں اور شاپنگ مالوں کو بند کرنے کا بھی حکم جاری کیا گیا ہے ۔ سرینگر میونسپل کارپوریشن کیمیئر نے کہا ہے کہ جو کوئی بھی احکامات کی خلاف ورزی کرنے کا مرتکب قرار پائے گا اُس کے خلاف قانون کے مطابق کارروائی ہوگی ۔ انہوںنے کہاکہ کورنا وائرس کے پھی

رام باغ میں رابطہ سڑکیں کھنڈرات میں تبدیل،لوگوں کو مشکلات درپیش

سرینگر// رام باغ میں رابطہ سڑکوں کی حالت انتہائی خستہ ہوچکی ہے اور یہ سڑکیں کھنڈرات میں تبدیل ہوچکی ہیں۔مقامی لوگوں نے بتایا کہ رام باغ میں زم زم بنڈ رابطہ سڑک اس قدر خستہ ہوچکی ہے کہ اس پر گاڑیوں کے ساتھ ساتھ راہ گیروں کا عبور و مرور مشکل بن چکا ہے ۔انہوں نے کہا کہ گذشتہ 9ماہ سے یہاں کوئی سرکاری اہلکار نہیں آیا ۔عتیق بشیر نامی شہری نے بتایا کہ گذشتہ برس سرینگر میونسپل کارپوریشن نے یہاں ایک ڈرین تعمیر کی تاہم سڑک کی مرمت نہیں کی گئی ۔انہوں نے کہا کہ ڈرین کی تعمیر تو مکمل ہوئی تاہم سڑک کی تعمیر و تجدید نہیں کی گئی اور نہ ہی اس پر میکڈم بچھایا گیا جس کی وجہ سے سڑک دن بہ دن خستہ ہوگئی اور موسم سرما میں برف باری کے بعد سڑک کھنڈرات میں تبدیل ہوئی ۔انہوں نے کہا کہ سڑک پر گہرے کھڈ بن چکے ہیں اور اس پر نہ صرف گاڑیوں بلکہ راہ گیروں کو چلنا پھرنا محال بن چکا ہے۔انہوں نے کہا کہ ایمرجنسی کی صورت

بلوارڈ پر دلدوز ٹریفک حادثہ

سرینگر//جھیل ڈل کے کنارے پر واقع بیلوارڈ پر زبرون پارک کے نزدیک ایک تیز رفتار آلٹو گاڑی نے راہ گیرکو کچل ڈالاجس کے نتیجے میں اس کی موت واقع ہوئی ۔پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے ڈرائیور کو گرفتار کرتے ہوئے آلٹو گاڑی ضبط کی۔عینی شاہدین کے مطابق بیلوارڈ پر زبرون پارک کے نزدیک تیز رفتار آلٹو کار زیر نمبر JKOIX_9355 کی شدید ٹکر کی زد میں محمد شفیع گنا ولد مرحوم محمد صدیق ساکنہ آبی کارپورہ ڈل آیا۔ اگرچہ پولیس اور یہاں موجود لوگوں نے اسے شدید زخمی حالت میں فوری طور پر ہسپتال منتقل کیا تاہم ڈاکٹروں کے مطابق اس کی موت واقع ہوچکی تھی۔پولیس نے قانونی لوازمات مکمل کرکے لاش کو ورثا کے حوالے کیا ۔پولیس نے اس سلسلے میں ایف آئی آر زیر نمبر 28/2020کے تحت کیس درج کرکے آلٹو کار ضبط جبکہ ڈرائیور محمد صالح ساکنہ بابہ ڈیمب سرینگر کو گرفتار کیاگیا۔مہلوک کی لاش جب گھر پہنچائی گئی تو وہاں صف ماتم بچھ گئی۔

ادبی مرکز کمراز کا وفد راولپورہ گیا

سرینگر//ادبی مرکز کمراز کا اعلی سطحی وفدکل بزم شعبان بانڈی پورہ کے سینئر ممبر ارشاد احمد شاہ کے دولت خانے راول پورہ سرینگر تعزیت پرسی کے لئے گیا۔واضح رہے کہ ارشاد احمد شاہ کی اہلیہ گزشتہ دنوں طویل علالت کے بعد انتقال کرگئی تھی۔اس موقعے پر ممبران نے مرحومہ کے اہل خانہ خصوصا ارشاد احمد شاہ کے ساتھ ہمدردی کا اظہار کیا اور ارشاد احمد شاہ کی ڈھارس بندھائی اور مرحومہ کے ایصال ثواب کے لئے دعا کی اور فلسفہ موت و حیات پر روشنی ڈالی۔وفد میں مرکز کے صدر فاروق رفیع آبادی، نائب صدر اول عبدالاحد حاجنی،جنرل سیکریٹری عبد الخالق شمس، سیکریٹری شنم تلگامی کے علاوہ ڈاکٹر عزیز حاجنی، محمد امین بٹ، جمیل انصاری اور دیگر ممبران شامل تھے۔

عوام جائز منا فع خوروں کے رحم و کرم پر | اشیاء ضروریہ اور سبزیوں کی قیمتوں میں ہوشرُبا اضافہ

سرینگر // روایت کو برقرار رکھتے ہوئے ناجائز منافع خوروں نے اشیاء ضروریہ خاص کر پھلوں اور سبزیوں کے دام بڑھا کر پھر سے شہری آبادی کو دو دو ہاتھوں سے لوٹنا شروع کر دیا ہے اور انتظامیہ اس جانب دھیان دینے کے بجائے خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے ۔ کرونا وائرس کے خوف میں مبتلا شہری آبادی کو اب ناجائز منافع خوروں نے لوٹنے کا سلسلہ شروع کر دیا ہے اور محکمہ امور صارفین و عوامی تقسیم کاریکی جانب سے مشتہر کئے گے نرخ نامے ردی کی ٹوکری کی نظر کئے گئے ہیں ۔کئی ایک صافین نے بتایا کہ سبزیوںسمیت پھلوں کی قیمتوں میںکئی گناہ اضافہ کیا گیا ہے اور ایسا حالات کا فائدہ اٹھا کر کیا جا رہا ہے ۔ صارفین نے بتایا کہ جب بھی کبھی وادی کی عوام کسی مصیبت میں مبتلا ہوتی ہے تو ان کی مشکلات میں ناجائز فائدہ اٹھا کر کچھ خودغرض عناصر اشیاء ضروریہ کی قیمتوں میں اضافہ کر کے عوام کی پریشانی میں اضافہ کرتے ہیں ۔شہر کے اکثر علاقو

بندشوں سےہُو کا عالم | پبلک ٹرانسپورٹ معطل،سڑکیں سنسان نظر آئیں

سرینگر//کورنا وائرس کو پھیلنے سے روکنے کی خاطر جمعہ کوشہر سرینگر میں سخت ترین بندشیں عائد رہیں جس دوران شہر میں جابجا سڑکوں کو سیل کردیا گیا تھا اور پولیس اور سی آر پی ایف کے اضافی دستوں کو تعینات کیا گیا تھا جس دوران پبلک ٹرانسپورٹ کو چلنے کی اجازت نہیں دی گئی ۔شہر میں داخل ہونے والے راستوں کو صبح سے ہی سیل کردیا گیا تھا اور شہر کی طرف آنے والی گاڑیوں کو روک دیا گیا۔شہر میںلوگوں کے چلنے پھرنے پر کوئی پابندی عائد نہیں تھی ۔کئی علاقوں میںصبح سے ہی پولیس گاڑیوں کے ذریعے اعلانات کئے گئے کہ لو گ گھروں میں رہیں۔شہر کے سول لائنز ،پائین شہر اور دیگر علاقوں میں پولیس اور فورسز نے سڑکوں اور چوراہوں پر خار دار تار نصب کی تھی اور گاڑیوں کو روکا جارہا تھا ۔شہر میں دن بھر بازار بندرہے اور سڑکیں بھی سنسان نظر آرہی تھیں۔ پائین شہر کے نوہٹہ چوک میں صبح سے ہی پولیس اور فورسز کی بھاری تعیناتی عمل میں

ایس ایم سی کی چھڑکاؤ مہم جاری | شہر میں 11مقامات پر ادویات کا چھڑکائو اور صفائی

سرینگر//عالمگیر سطح کے وبا کرونا وائرس سے بچائو کیلئے شہر کے 11مختلف علاقوں میں سرینگر میونسپل کارپوریشن کی طرف سے جمعہ کو بھی ادویات کا چھڑکائو کیا گیا ۔ایس ایم سی کی طرف سے گذشتہ کئی دنوں سے جہاں شہر میں سڑکوں ،پارکوں اور بھیڑ بھاڑ والے علاقوں میں ادویات کا چھڑکائو کیا گیا تاہم کرونا وائرس کا پہلا کیس سامنے آنے کے بعدجمعہ کو سرینگرمیونسپل کارپوریشن نے ان 11علاقوں میں چھڑکائو کیا جہاں کے کچھ افراد اس خاتون کے ساتھ واپس سعودی عرب سے آئے تھے جو وائرس کی شکار ہوئی ہے اور احتیاطی تدابیر کے تحت ایس ایم سی کی طرف سے کل ایسے11مقامات پر چھڑکائو کیا گیا جہاں یہ لوگ رہتے ہیں ۔متاثرہ خاتون کے ہمسفروںکے علاقوں میں ادویات کے چھڑکائو کے ساتھ ساتھ صفائی بھی کی گئی ۔ساز و سامان سے لیس مونسپل کارپوریشن کے عملہ نے شہران مقامات پر دن میں کئی مرتبہ ادویات کا چھڑکائو کیااور ان علاقوں میں صفائی بھی کی گئ

حیدر پورہ اور گلوان پور کی رابطہ سڑکیں خستہ وخراب | لوگوں کاعبور و مرور مشکل،فوری مرمت کی مانگ

سرینگر//حیدر پورہ، گلوان پورہ سمیت دیگر علاقوں کی اہم ترین رابطہ سڑکیں اور گلی کوچے خستہ حالی کا شکارہیں جس کی وجہ سے مقامی آبادی کو عبور و مرور میں گوناگوں مشکلات کا سامناکرنا پڑ رہا ہے ۔سرینگر ائرپورٹ روڈ سے منسلک اندرونی رابطہ سڑکیں جو کہ کئی علاقوں کی واحد اور اہم ترین رابطہ سڑکیں ہیں، پچھلے 2برسوں سے کھنڈرات میں تبدیل ہوچکی ہیں جس وجہ سے مقامی آبادی کو عبور و مرور میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے.حیدر پورہ،گلوان پورہ کی اندرونی رابطہ سڑکوں اور گلی کوچوںکو سال 2018 میں ڈرینیج سسٹم بنانے کے لئے کھود ا گیا تھا اگرچہ سال 2019 میں ڈرینیج سسٹم کامکمل کردیا گیا تھا لیکن ان سڑکوں کی تعمیر و مرمت نہیں کی گئی اور اب یہ سڑکیں دن بہ دن خستہ ہوچکی ہیںجس کا خمیازہ مقامی آبادی کو اٹھانا پڑ رہا ہے ۔بارشوںمیں یہ رابط سڑکیں اور گلی کوچے ندی نالوں کا منظر پیش کرتی ہیں جبکہ دھوپ میںگرد و غبار چا

شراب کی دکان کے باہر بھاری بھیڑ

سرینگر//کرونا وائرس کی وجہ سے جہاں وادی میں احتیاطی تدابیر پر زور دیا جارہا ہے اور گذشتہ کئی دنوں سے بھیڑ بھاڑ والی جگہوں کو بند کیا جارہا ہے اور لوگ اشیاء ضروریہ کی چیزیں خرید رہے ہیں ،ایسے میں شہر میں کل شام شراب کی دکان پر لوگوں کی کافی بھیڑ دیکھی گئی جس کی وجہ سے سونہ وار اور بٹہ وارمیں ٹریفک جام کی وجہ سے مسافروں کو زبردست ذہنی کوفت کا سامنا کرنا پڑا ۔پانپور سے ڈلگیٹ آرہے ایک شہری نے بتایا کہ شراب کی دکان پر اس قدر رش تھا کہ یہاں لاٹھیوں سے لوگوں کو ہانکھا جارہا تھا ۔انہوں نے بتایا کہ ایک طرف لگ کرونا وائرس کی دہشت کا شکار ہورہے ہیں اور دوسری طرف شراب کی دکان پر اس قدر بھیڑ کی وجہ مسافروں کو ٹریفک جام کی وجہ سے گاڑیوں میں محصور ہونا پڑا ۔  

بچاؤ تدابیر: تاجر برادری کی طرف سے ادویات کا چھڑکائو

سرینگر//کشمیر اکنامک  الائنس  نے بدھ کو سرینگرکے اسپتالوں، مساجد،خانقاہوں،گرجا گھروں اور مندروں میں کرونا وائرس سے تحفظ کیلئے جراثیم کش ادویات کا چھڑکائو کیا۔ الائنس کے شریک چیئرمین فاروق احمد ڈار کی سربراہی میںایک ٹیم نے بچوں کے سب سے بڑے اسپتال جی بی پنتھ اسپتال سے مہم کا آغاز کیا،جس کے بعد سونہ وار میں  حضرت سید یعقوب صاحبؒ، کتھو یلک چرچ،گردوارہ امیراکدل اور ہنومان مندر میں ادویات کا چھڑکائو کیا گیا۔ٹیم میں الائنس کے نائب چیئرمین اعجاز شہدار اور حاجی نثار سمیت دیگر تاجر لیڈر بھی موجود تھے۔ نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے فاروق احمد ڈار نے کہا کہ ایک ایسے واقت میں جب کرونا وائرس کے خدشات نے اہل کشمیر کو تشویش میں مبتلا کیا ہے،رضاکارانہ طور پر انہو ں نے جراثیم کش ادویات کا چھڑکائو عبادتگاہوں اور اسپتالوں میں شروع کیا۔ان کا کہنا تھا کہ کشمیر اکنامک الائنس عوامی معامالت میں