تازہ ترین

مہنگائی مار گئی!

   چار سال سے زائد عرصہ قبل نریندر مودی کی سربراہی میں بھاجپا نے مرکزمیں اقتدار سنبھالا تو لوگوں کی اُمیدیں بندھی تھیںکہ کچھ نہیں تو کم از کم انہیں مہنگائی سے چھٹکارا ملے گا، روزگار ملے گا، زندگی کی بنیادی سہولیات فراہم ہوںگی۔ آج یہ سب چیزیں خواب وخیال لگتے ہیں ۔ عام جنتا کے لئے اچھے دنوں کا مدعا ومقصد اس کے سوا اور کیا ہوسکتا ہے کہ وہ مہنگائی اور بے روزگاری سے نجات پاکر سُکھ چین کی زندگی گزاریں ۔ بلاشبہ بھاجپا کی کامیابی کے پیچھے اصل راز بھی یہی تھا کہ لوگوں کی اکثریت ملکی معیشت میں ایک دیرپا اور نتیجہ خیز تبدیلی کے خواہاں تھے تاکہ انہیں روز مرہ مسائل ومشکلات کے  بھنورسے گلو خلاصی ملے۔ تبدیلی کے اسی خواب کو مودی نے بروقت بھانپ کر عام لوگوں کی اس قلبی آرزو کو ایک سیاسی حقیقت میں بد لنے کی ٹھان لی تھی اور اپنی کارگر و موثر تشہیری اسٹرٹیجی وضع کرکے خودکو کانگریس کے متباد