شاہراہ قدغن۔۔۔ نازک معاملات سامنے آنے لگے!

حکومت کی جانب سے ہفتے میں دو دن کےلئے شاہراہ بند کرنے کے منفی اور نقصان دہ نتائج تواتر کےساتھ سامنے آرہے ہیں، جس سے یہ بات عیاں ہو رہی ہے کہ اس سرکاری فیصلے سے انتظامی اور سماجی ڈھانچے پر نمایاں طور پر منفی اثرات ثبت ہو رہے ہیں۔ چند روز قبل شاہراہ پر کینسر کے ایک مریض کو کئی گھنٹوں تک روکے رکھنے، جسکی بعد میں موت واقع ہوگئی، پر سماجی حلقوں سے لیکر سیاسی جماعتوں تک نے شدید ردعمل ظاہر کیا ہے۔ ابھی اس برہمی کا سلسلہ جاری تھا کہ دو روز قبل ڈورو شاہ آباد کے سب ڈویژنل مجسٹریٹ کو ڈیوٹی کی انجام دہی کے دوران روکنے اور اس کی جانب سے مزاحمت پر اسکی مارپیٹ کرنے کے واقعہ نے سبھی انتظامی حلقوں کو ہلا کر رکھ دیا ہے۔یہ ایک خوش آئندہ اقدام ہے کہ سیاسی اور سماجی حلقوں کی جانب سے اس معاملے کی تحقیقات کے مطالبے کے ردعمل میں انتظامیہ نے کیس درج کرکے تحقیقات کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔لیکن ضرورت اس امر کی ہے

تازہ ترین