نگروٹہ میں سڑک حادثہ،میڈیکل افسر زخمی

سرینگر//جموں کے نگروٹہ علاقے میں ایک کار حادثے کا شکار ہوئی جس کے نتیجے میں گاڑی میں سوار گاندھی نگر ہسپتال جموں کا میڈیکل افسر شدید زخمی ہوا ۔اس دورا ن زخمی ڈاکٹر کو شدید زخمی حالت میںہسپتال منتقل کیا گیا جہا ں وہ زیر علاج ہے ۔ کے این ایس  کے مطابق میڈیکل افسر گاندھی نگر جموں اتور صبح اپنی کار زیر نمبرJK14E/7775 میںاُدھم پور سے جموں جا رہا تھا اس دوران جب گاڑی ٹی سی پی نگروٹہ کے قریب پہنچ گئی، تو گاڑی سڑک سے لڑھک کر10سے15فٹ گہری کھائی میںجا گری ،جس کے نتیجے میں گاڑی میںسوار میڈیکل افسر ڈاکٹر چندر شیکھر شدید طور زخمی ہوا ۔پولیس نے حادثے کی اطلاع ملتے ہی جائے حادثے پر پہنچ کرزخمی ڈاکٹر کو گورنمنٹ میڈیکل کالج جموںمنتقل کیا  جہاں وہ زیرعلاج ہیں ۔میڈیکل سپر انٹنڈنٹ جی ایم سی جموں نے بتایاکہ زخمی ڈاکٹر کی حالت خطرے سے باہرہے تاہم اُنہیں آپریشن کی ضرورت ہے۔پولیس نے واقعہ سے متعلق

جموں میں جنتاکرفیو کا ہر جگہ سختی سے نفاذ ،کٹھوعہ سے لیکر پونچھ تک ویرانی

جموں //وزیرا عظم نریندر مودی کی کال پر پورے صوبہ جموں میں ’جنتا کرفیو ‘کا سختی سے نفاذ رہا اور کٹھوعہ سے لیکر پونچھ اور کشتواڑ تک ویرانی چھائی رہی ۔اتوار کو جہاں سڑکیں سنسان نظر آئیں ،وہیں پبلک ٹرانسپورٹ کے علاوہ نجی گاڑیاں بھی سرے سے غائب رہی اور پولیس نے کئی جگہوں پر خار دارتاریں بچھاکر کرفیو کے نفاذ کو یقینی بنایا ۔صوبہ بھر میں عوام کی طرف سے بھی کورونا وائرس کے پیش نظر اعلان کئے گئے کرفیوسے بھرپور تعاون کیاگیا ۔اس دوران ادویات ، دودھ، کریانہ ، سبزی اور پھلوں کی دکانیں بھی بند رہیں جنہیں گزشتہ دنوں کھلا رکھاگیاتھا۔جموں شہر و دیگر قصبہ جات میں صورتحال یہ تھی کہ بازاروں اور سڑکوںپر صرف پولیس اور نیم فوجی  اہلکار ہی نظر آرہے تھے اور نہ ہی کوئی گاڑی دوڑتی نظرآئی اور نہ ہی لوگوں کی آمدورفت تھی ۔لوگ صبح سے لیکر شام تک پورا دن گھروں ہی کے اندر رہے اور کسی نے بھی باہر ج

تازہ ترین