تازہ ترین

نقصانات سے بچنے کیلئے کسانوں کو جام، جیلی اور پیوری بنانے کا مشورہ

نئی دہلی// ہندوستانی زرعی ریسرچ کونسل (آئی سی اے آر) نے لاک ڈاؤن پر زرعی مصنوعات کو تباہ ہونے سے کسانوں کو پہنچنے والے نقصانات سے بچنے کے لئے وائن ، ٹماٹر پیوری اور ویلیو ایڈیڈ مصنوعات بنانے کی صلاح دی ہے ۔لاک ڈاؤن کے دوران عائد مختلف پابندیوں کے پیش نظر آئی سی اے آر نے زرعی سیکٹرکے لئے ریاستوں کے حساب ہدایات جاری کئے ہیں جن میں کسانوں کو جلد خراب ہونے والی زرعی مصنوعات کو بچانے کے لئے متعدد مشورے دیئے گئے ہیں۔ اس میں کسانوں سے شراب، جام، جیلی، اسکویش، اچار، ٹماٹر پیوری اور مشروم کے ویلیو ایڈڈ مصنوعات بنانے کی تجویز پیش کی ہے ۔میگھالیہ کے کسانوں کے لئے جاری ہدایات میں کہا گیا ہے کہ اسٹرابیری کی کاشت کرنے والے کسان اس کی فروختگی میں پریشان ہونے پر اس سے ویلیو ایڈڈ مصنوعات بنائے ۔ اسٹرابیری کے کسان شراب، جام، جیلی اوراسکویش بھی بنا سکتے ہیں۔تری پورہ کے کسانوں کو ٹماٹر کی فروخت میں

کسان موجودہ بحران سے پریشان

نئی دہلی//کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی نے کہا ہے کہ لاک ڈاؤن کی وجہ سے کسان کا کھڑی فصل کی کٹائی کرنا مشکل ہے جس سے فصلوں کے تباہ ہونے کا خطرہ بڑھ گیا ہے لہذا لاک ڈاؤن کے درمیان کسانوں کو فصلوں کی کٹائی کا محفوظ طریقہ سے موقع دیا جانا چاہئے ۔مسٹر گاندھی نے بدھ کے روز ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ لاک ڈاؤن کورونا وائرس سے نجات حاصل کرنے کا واحد طریقہ ہے لیکن لاک ڈاؤن کسانوں کے لئے دوہری مار نہ بنے لہذا فصلوں کی کٹائی کے لئے کسانوں کو محفوظ طریقہ سے ڈھیل دیے جانے کی ضرورت ہے ۔انہوں نے مزید کہا، "ربیع کی فصل کھیتوں میں تیار کھڑی ہے لیکن کووڈ -19 لاک ڈاؤن میں کٹائی کا کام مشکل ہے ۔ سینکڑوں کسانوں کی روزی روٹی خطرے میں ھے ۔ ملک کے کسان کوآج اس بحران میں سخت پریشانی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے ۔ کٹائی کے لئے محفوظ طریقے سے لاک ڈاؤن میں نرمی دینا واحد راستہ ہے ۔"یواین آئی  

اشیا ئے ضروریہ کی فراہمی یقینی بنانے کیلئے وزارت داخلہ کی ضروری اشیا قانون نافذ کرنے کی ہدایت

  نئی دہلی//وزارت داخلہ نے کورونا سے نمٹنے کےلئے ملک بھر میں جاری مکمل لاک ڈاون کے دوران ضروری اشیا کی فراہمی کو یقینی بنانے کےلئے ضروری اشیا قانون نافذ کرنے کو کہا ہے۔ مرکزی داخلہ سکریٹری اجے کمار بھلہ نے سبھی ریاستوں اور مرکزکے زیر انتظام ریاستوں کو لکھے خط میں کہا ہے کہ ضروری اشیا کی فراہمی کو یقینی بنانے کےلئے ہر ممکن طریقے استعمال کئے جانے چاہیں۔ان اقدامات کے تحت اسٹاک حد طے کرنے ،قیمتوں کا تعین ، پیداوار میں اضافہ اور ڈیلروں اور دیگر کھاتوں کی جانچ وغیرہ شامل ہے۔ انہوں نے کہا کہ مزدوروں کی کمی کی وجہ سے مختلف اشیا کی پیداوار میں کمی کی رپورٹیں آرہی ہیں۔ایسی حالت میں جمع خوری،کالابازاری ،منافع خوری وغیرہ کا خدشہ ہے جس سے اشیا کی قیمتوں میں اضافہ ہوگا۔ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں سے کہا گیا ہے کہ وہ مناسب شرح کی دکانوں پر اشیا کی فراہمی کو یقینی بنانے کےلئ

جموں میں تمام کنبوں کی دہلیزپر راشن پہنچانے کاکام جاری

جموں//ڈائریکٹر خوراک سول سپلائز و امور صارفین،جموں جتندر سنگھ نے کہاکہ محکمہ کے اَفسران ، فیئر پرائس شاپ  ڈیلر ، مزدورو دیگر ورکر لاک ڈاون کی مدت کے دوران جموں کے تمام گھرانوں میں راشن کی تقسیم کاری کو صد فیصد یقینی بنانے کا کام کر رہے ہیں۔اُنہوں نے کہا کہ ڈائریکٹوریٹ سطح پر ڈیزاسٹر منیجمنٹ سیل / ایمرجنسی ریسپانس سیل بھی تشکیل دی گئی ہے ۔انہوں نے کہا کہ جموں کے تمام ضلعو ں میں متعلقہ اسسٹنٹ ڈائریکٹر اپنے موبائیل نمبروں پر لوگوں کو غذائی اجناس کی دستیابی سے متعلق اطلاعات فراہم کرتے ہیں۔اب تک ڈائریکٹور یٹ اور ضلع سطح کے مراکز پر ہیلپ لائین نمبرات پر 1120کالز درج کی گئی ہیں۔ڈائریکٹر نے کہا کہ اپریل اور مئی مہینوں کے لئے پیشگی راشن کو تقسیم کرنے کا عمل جنگی بنیادوں پر جاری ہے تاکہ ہر صارف کو مقررہ وقت کے اندر راشن دستیاب ہو۔اِس کے علاوہ ریڈ کراس سوسائٹی جموں کے پاس 1500کوئنٹل چاول اور

کسانوں کی آمدن دوگنا کرنے کے اقدام کئے جائیں: نوین چودھری کی افسروں کو تاکید

جموں// پشو و بھیڑ پالن اور ماہی پروری کے پرنسپل سیکرٹری نوین کمار چودھری نے مختلف محکموں کے اعلیٰ افسران کی ایک میٹنگ کی صدارت کی اور اِن محکموں کی کارکردگی کا جائزہ لیا۔میٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے پرنسپل سیکرٹری نے کہا کہ زراعت ملک کی معیشت کی ریڈھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتی ہے اور کسانوں کے مسائل حل کرنا حکومت کی ترجیحا ت میں شامل ہیں۔نوین چودھری نے  متعلقہ حکام کو ہدایت دی کہ وہ آپسی اشتراک کے ساتھ کام کرتے ہوئے کسانوں کی آمدنی دوگنا کرنے کے لئے ضروری اقدامات کریں۔پرنسپل سیکرٹری نے مستحق کسانوں کی فہرست اَپ لوڈ کرنے کی ہدایت دی جنہیں مختلف محکموں کی مرکزی معاونت سکیموں سے استفادہ کیا گیا۔میٹنگ کے دوران کسانوں کو درکار کھاد ، جراثیم کش ادویات اور بیجوں کی تقسیم کاری پر بھی سیر حاصل بحث ہوئی۔میٹنگ میں مزید بتایا گیاکہ کسانوں کو درکار جراثیم کش ادویات دونوں صوبوں میں وافر مقدار میں موجود

۔56133میٹرک ٹن چاول اور 2700میٹرک ٹن گندم صارفین میں تقسیم

سری نگر//ناظم خوراک ، سول سپلائز اور امور صارفین کشمیر بشیر احمد خان نے کہا کہ کووِڈ۔19کی وَبا کے پھیلائو کے بعد لاک ڈاون کے دوران محکمہ نے صوبہ کشمیر کے 14لاکھ مستحقین میں 56133 میٹرک ٹن چاول اور 2700 میٹرک ٹن گندم کی ہوم ڈیلیوری مکمل کی ہے۔اُنہوں نے کہا کہ تمام ڈپٹی کمشنروں اور محکمہ کے مختلف اَفسران کے ساتھ وضع کردہ ایک مناسب روڈ میپ کے تحت کشمیر ڈویژن کے تمام اضلاع میں اپریل او رمئی مہینوں کے لئے گندم اور چاول تقسیم کاری کا عمل شروع ہوچکا ہے۔ اُنہوںنے کہا کہ مختلف گھرانوں میں 70769میٹرک ٹن چاول تقسیم کئے گئے ہیں اور یہ پوری کارروائی چند دِنوں کے اندر مکمل کی جائے گی۔گندم کے بارے میں انہوں نے کہا کہ فراہم کئے گئے 2700میٹرک ٹن سٹاک میں سے ہوم ڈیلیوری کے لئے صد فیصد نشانہ حاصل کیا گیا ہے۔اُنہوں نے مزید بتایا کہ پردھان منتری غریب کلیان یوجنا (پی ایم جی کے وائی) کے تحت محکمہ تمام آئی ا

اوڑی کے کئی علاقوں میں غذائی اجناس کی قلت

اوڑی//سرحدی قصبہ اوڑی کے کئی دیہات میں لاک ڈائون کے نتیجے میں غذائی اجناس کی قلت پائی جارہی ہے۔کنٹرول لائن پر واقع چھپر شاہدرہ میں تقریباً 90 کنبے رہائش پذیر ہیںجو بے روزگار ہوچکے ہیں لیکن ابھی تک حکام کی طرف سے انہیںکوئی امداد نہیں ملی ہے۔ایک مقامی شہری سید مرتضیٰ نقوی نے بتایا کہ اوڑی انتظامیہ نے اس معاملہ سے آگاہ ہونے کے باوجود بھی ان کی کوئی مدد نہیں کی۔موٹھل، صورہ اور ہتھ لنگا میںبھی غذائی اجناس کی قلت پائی جارہی ہے۔اسی طرح ماچھی کرنڈ اوڑی کے سات کنبوںکے سربراہ ہماچل پردیش میں مزدوری کی غرض سے گئے ہیںجو ابھی تک واپس نہیں آسکے ہیں اور یہاں اہل خانہ ضروریات زندگی سے محروم ہیں۔یس ڈی ایم اوڑی ریاض احمد ملک نے اس ضمن میںکشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ کئی علاقوں میں ضرورتمند کنبوں تک غذائی اشیاء پہنچائی گئی ہیں اور اس سلسلے میں ایک ٹیم بھی تشکیل دی گئی ہے اور سرپنچوں، چوکیداروں اورنمبرداروں

مہنگائی کا جن مسلسل بے قابو ،منافع خور مافیا بے لگام

سرینگر / / انتظامیہ اگرچہ یہ دعویٰ کر رہی ہے کہ وادی میں اشیاء ضروریہ کی کوئی قلت نہیں ہے بلکہ جموں سرینگر شاہراہ کے ذریعے مال وادی پہنچ رہا ہے تاہم اس سب کے بیچ وادی میںاشیاء ضروریہ کی قیمتوں میں کمی نہیں لائی گئی ہے اور ناجائز منافع خور محکمہ خوراک ورسدات کی طرف سے مشتہر کئے گئے نرخ ناموں کو بھی بالائے طاق رکھ کر من مرضی قیمتیں وصول کر کے صافین کو دو دو ہاتھوں لوٹ رہے ہیں ۔مقامی صارفین کے مطابق جہاں پہلے سے ہی اشیائے  ضروریہ کی وادی میں شدید قلت ہے، وہیںناجائز منافع خوروں نے نہ صرف سبزیاں ،پھل ،مرغ اور دالوں کے دام بلکہ لفافہ بند اشیاء کی قیمتیں بھی آسمان کو پہنچائی ہیں۔مقامی لوگوں کے مطابق سبزی فروشوں نے کسی ریٹ لسٹ کے بغیرکشمیری آلو 40 یا 50 روپے فی کلو، فراش بین 70 تا 80 روپے فی کلو، گوبھی 60 تا 70روپے فی کلو، گاجر 40 تا 50 روپے فی کلو، پالک 70 تا 80 روپے فی کلو اور شلجم 40

جعلسازوں کی بینک اکائونٹ سے رقم نکالنے کی کوشش

سرینگر// سرینگر میں سائبر پولیس نے بنک منتظمین اور آن لائن تجارت مراکز کے مالکان کے طور پر خود کو پیش کرکے کئی لوگوں کو نشانہ بنانے والے ہیکروں(وہ شخص جو ڈیٹا تک غیر مجاز رسائی حاصل کرنے کے لئے کمپیوٹر کا استعمال کرتا ہے) سے ایک لاکھ سے زائد روپے کی رقم وصول کی ہے۔ ایک85برس کے بزرگ کو ایک لاکھ10ہزار روپے ’’ائو ٹی پی(ون ٹائم پاس ورڈ)  جعلسازی کے بہانے اینٹھ لی گئی۔ شکایت گزار کو ایک جعلی کال موصول ہوئی،جس میں اس کو ایک شخص نے جموں کشمیر بنک کے ایک ملازم کے طور پر خود کو پیش کیا،اور انہیں مطلع کیا گیا کہ انکا اے ٹی ایم کارڈ بند ہوا ہے،اور نرمی کے ساتھ انہیں اپنے کارڈ کی تفصیلات کا اشتراک اور6 ہندسوں پر مشتمل ون ٹائم پاس وارڈ(یک مرتبہ پاس وارڈ) نمبر کے بارے میں معلومات حاصل کی تاکہ انکا کارڈ غیر مسدود(کھول) دیا جائے،جس کے کئی منٹوں بعد ہی اس کے کھاتے سے ایک لاکھ10ہزار رو

تیزرفتارانٹرنیٹ پر پابندی کے8ماہ مکمل

سرینگر// وادی میں تیز رفتار انٹرنیٹ پر پابندی کے8ماہ مکمل ہوگئے،تاہم حکام کی جانب سے اب بھی اس پر پابندی عائد جاری ہے۔ مرکزی حکومت کی طرف سے5اگست کو  جموں کشمیر کے آئین کی تقسیم و تخصیص کے اعلان سے قبل ہی جموں کشمیر میں انٹرنیٹ سمیت مواصلاتی بندشیں عائد کی گئی۔ حکام نے 17اگست کو مرحلہ وار بنیادوں پر لینڈ لائن کو بحال کیا اور بعد میں74دنوں کے بعد پوسٹ پیڈ موبائل کی سروس کو بحال کیا۔قریب چھ ماہ بعد پری پیڈ سروس کو بحال کیا گیا جبکہ انٹرنیٹ سروس پربھی مرحلہ وار طریقے سے پابندی ہٹائی گئی جس میں پہلے پوسٹ پیڈ موبائلوں کیلئے 2جی انٹرنیٹ بحال کیا گیا پھر براڈ بینڈ اور دیگر کمپنیوں کو اجازت دی گئی کہ وہ مختلف اداروں کو انٹرنیٹ سروس بحال کریں تاہم موبائل انٹرنیٹ کو سست رفتار پر چلانے کو پہلے مرحلے میں منظوری دی گئی تاہم لوگوں کے اصرار کے باوجود بھی انٹرنیٹ کی تیز رفتار سہولیت کو بحال نہیں

دواپاشی کے دوران احتیاط کریں | باغ مالکان کو ناظم زراعت کا مشورہ

 سرینگر// کوروناوائرس کی مہلک عالمگیر وباء کے پیش نظر جہاں معمولات زندگی تھم گئے ہیں وہیں دوسری جانب کشمیر وادی میںہزاروں کنال اراضی پر پھیلے میوہ باغات میں مزدوروں اور ادویات کی نایابی کے باعث مالکان باغات دوا پاشی نہیں کر سکے ۔اس دوران ناظم زراعت نے مالکان باغات سے اس سلسلے احتیاتی تدا بیر کو اپنانے کا مشورہ دیتے ہوئے دوا پاشی کرنیکی تاکید کی ہے ۔ ملک کے علاوہ کشمیر وادی میں جہاں سخت لاک ڈائون کے نتیجے میں تمام کار وبا ری ادارے اورسرکاری دفاتربندہیں ،وہیں دوسری جانب مزدورںاور ادویات کی عدم دستیابی کے باعث مالکان باغات میوہ باغوںمیں دوا پاشی نہیں کر سکے ہیں جس کے نتیجے میں مستقبل میں انہیں نقصان سے دوچار ہونے کا خدشہ ہے ۔ادھر محکمہ کے ناظم اعجاز احمد اندرابی نے بتایا کہ سپرے کے نظام الاوقات میں تاخیر سے فصل کی پیداوار تباہ ہوسکتی ہے اور یہ ایک معاشی تباہی ہوگی کیونکہ مجموعی آباد

خوراک و ادویات بنانے والے صنعتی یونٹ احتیاطی تدابیر عملائیں:شرما

جموں//لیفٹیننٹ گورنر کے مشیر کے کے شرما نے محکمہ صنعت کو ہدایت دی ہے کہ وہ اس بات کو یقینی بنائیں کہ خوراک اور ادویات جیسی اہم چیزیں تیار کرنے والے صنعتی یونٹ تمام احتیاطی پروٹوکال پر عمل آوری کریں تاکہ کووِڈ۔19کے پھیلائو کو روکا جاسکے۔کے کے شرما نے ایک میٹنگ کے دوران صنعتی یونٹوں کی طرف سے عملائے جارہے احتیاطی تدابیر کا جائزہ لیا۔ واضح رہے کہ محکمہ صنعت اشیائے ضروریہ تیار کرنے والے یونٹوں کو ہرممکن تعاون فراہم کررہا ہے اور اِن پر نظر گزر بھی رکھ رہا ہے ۔ا ن صنعتی یونٹوں نے مرکزی حکومت کی طرف سے جاری کئے گئے سرکیولر جاری کرنے کے بعد پچھلے پندرہ دِنوں کے دوران اَپنی سرگرمیاں شروع کیں۔مشیرموصوف نے اَفسروں کو ہدایت دی کہ وہ یونٹوں کے مالکان سے کہے کہ وہ اپنے کامگاروں کو ماسک لازمی طور پر فراہم کریں۔اُنہوں نے کہا کہ کپڑوں سے تیار کئے گئے ماسک اور جے کے ہینڈ لوم کارپوریشن و جے کے کے وی آئ

کوروناوائرس کی مار کااثر ،میوہ باغات تباہی کے دہانے پر

گاندربل//گاندربل ضلع کے میوہ باغات کے مالکان نے باغبانی شعبے کو تباہ ہونے سے بچانے کیلئے ہنگامی اقدامات کرنے کامطالبہ کرتے ہوئے انتظامیہ سے اپیل کی ہے کہ باغ مالکان کو کیڑے مارادویات دستیاب کرائی جائیں اور قانون کی عمل آوری ٹیموں کومتحرک کرکے ادویات کی قیمتوں میں کسی اضافے پرروک لگائی جائے۔ اس وقت جہاں عالمی سطح پر کروناوائرس نے زندگی کے ہر شعبے میں کو بری طرح متاثر کردیا ہے ملک کے ساتھ ساتھ جموں کشمیر میں بھی زندگی مفلوج ہوکر رہ گئی ہے۔ایسے میں کشمیر کی میوہ صنعت بھی کروناوائرس کی مار جھیل رہی ہے اور اس جان لیوا بیماری کی وجہ سے باغ مالکان اپنے میوہ باغات میں دوا پاشی کرنے سے کترا رہے ہیں۔ضلع گاندربل کے کئی علاقوں کے باغ مالکان مارچ کے اختتام اور اپریل کے مہینوں میں درختوں پر دوا پاشی شروع کرتے تھے۔اس وقت سیب اور دیگر اقسام کے میوہ  درختوں کی پنکھڑیاں پھوٹ چکی ہیں جن پر Pink bud

ماہانہ اقساط کی ادائیگی میں مہلت؟

نئی دہلی//کوروناوائرس کی عالمی وباء کی وجہ سے لاک ڈائون کے نتیجے میں بینکوں کی طرف سے قرض داروں کوآسان ماہانہ اقساط کی ادائیگی میں3 ماہ کی مہلت دینے سے قرض داروں کوکوئی زیادہ راحت نہیں ملے گی کیونکہ اُنہیں بینکوں کوزیادہ سوددینا ہوگااورواپس ادائیگیوں کی مدت بھی طویل ہوگی۔ماہرین کے مطابق کروناوائرس کے اثرات کا مقابلہ کرنے کیلئے قرضوں کی واپس ادائیگی میں تین ماہ کی مہلت دینے سے قرض داروں کے بجائے بینکوں کوفائدہ ہوگاکیونکہ قرض داروں کو جمع سود کو آسان ماہانہ اقساط کی اضافی ادائیگی کی صورت میںکرناہوگا۔ کروناوائرس کی عالمی وباء سے پیداشدہ مشکلات سے راحت دلانے کیلئے ریزروبینک آف انڈیاکی طرف سے اعلان کئے گئے اقدامات کے تحت قرض داروں کو ادائیگیوں میںتین ماہ کی مہلت مہنگی ثابت ہوگی۔گزشتہ جمعہ کو ریزروبینک آف انڈیا نے تمام مدتی قرضوں جن میں کسان قرضے اور تجارت میں سرمایہ لگانے کیلئے قرضے بھی

کافون بلیں آن لائن اداکرنے پرزورBSNL

 سرینگر// سرکاری مواصلاتی کمپنی ’بی ایس این ایل‘ نے سخت ترین بندشوں اور کرئونا دہشت کے بیچ لینڈ لائن صارفین کو آن لائن طریقے سے بلیں ارسال کرتے ہوئے متنبہ کیا ہے کہ بلوں کی عدم ادائیگی کے نتیجے میںکنکشن منقطع کئے جائیںگے۔ حکام کی جانب سے وادی  میں15روزہ سے مکمل لاک ڈائون کے نتیجے میں جہاں ہر سو مکمل ہو کا عالم ہے اور بیشتر لوگوں گھروں سے باہر قدم رکھنے میں خوف محسوس کر رہے ہیں، وہیں اس صورتحال میں سرکاری مواصلاتی کمپنی ’بی ایس این ایل‘ نے صارفین کو  ایس ایم ایس اور ای میل کے ذریعے فونوں کی بلیں ارسال کرنے کا سلسلہ شروع کیا ہے۔ بی ایس این ایل نے صارفین کو ایس ایم ایس پیغام میں انتباہ کیا گیا کہ اگر31مارچ تک بلوں کی ادائیگی نہیں ہوئی تو ان کے لینڈ لائن فون منقطع کئے جائیں گے۔ ایس ایم ایس میں واضح کیا گیا’’مہر بانی کر کے بل ادا کریںاو رم

رسوئی گیس سستی

نئی دہلی// بین الاقوامی مارکیٹ میں پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں جاری کمی کے درمیان ملک میں رسوئی گیس مسلسل دوسرے مہینے سستی ہوئی ہے ۔ملک کی سب سے بڑی تیل مارکیٹنگ کمپنی انڈین آئل کارپوریشن کے مطابق قومی دارالحکومت دہلی میں 14.2 کلو گرام کے بغیر سبسڈی والے رسوئی گیس سلنڈر کی قیمت یکم اپریل سے 61.50 روپے کم کرکے 744 روپے کر دی گئی ہے ۔ مارچ میں اس کی قیمت 805.50 روپے تھی۔  

جے کے بنک پریذیڈنٹ محمد مقبول لون نوکری سے سبکدوش

 سرینگر//جموں و کشمیر بینک نے 31مارچ کو  بینک کی اعلیٰ انتظامیہ میںشامل اورپریذیڈنٹ عہدے پر تعینات محمد مقبول لون کونوکری سے سبکدوشی پر گرمجوشی کے ساتھ رخصت کیا۔ اُن کابینکنگ کیرئیرتین دہائیوں سے زیادہ عرصے پر محیط رہاجس دوران انہوں نے کئی اعلیٰ انتظامی عہدوں پر کام کیا ۔ محمد مقبول لون کورخصت کرتے ہوئے چیئرمین و منیجنگ ڈائریکٹر راجیش کمار چھبر نے کہا کہ اس ادارے کے تئیں اُنکا رول قابل سراہنا ہے اور جس اصول پسندی و ایمانداری کے ساتھ انہوں نے بینک میں اپنی خدمات انجام دی ہیں وہ ناقابل فراموش ہیں۔موصوف نے کئی اہم عہدوں پر اپنے فرائض خوش اسلوبی کے ساتھ انجام دئے ہیں اور نوکری سے سبکدوشی کے وقت وہ بینک کے افرادی قوت اورانسانی وسائل محکمہ کے انچارج تھے۔  

۔4جی انٹرنیٹ معطلی عوام کیلئے نقصان دہ: ہیومن رائٹس واچ

سرینگر//انسانی حقوق کی عالمی تنظیم ہیومن رائٹس واچ (ایچ آر ڈبلیو) نے بھارتی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ کشمیر میں 4جی انٹرنیٹ پرجاری پابندی کو ختم کرے۔تنظیم کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس جیسی مہلک وبا ء کے دوران تیز رفتارانٹرنیٹ تک رسائی نہ دنیا انتہا ئی تباہ کن ثابت ہو سکتا ہے ۔ ہیومن رائٹس واچ کی طرف سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ کورونا جیسے صحت کے سنگین بحران کے دوران بروقت اور درست معلومات تک رسائی انتہائی ضروری ہے کیونکہ لوگ اپنے اور دوسروں کے تحفظ اور صحت سے متعلق معلومات ، نقل و حرکت کی پابندیوں اور دیگرمتعلقہ خبروں کے حصول کیلئے انٹرنیٹ کااستعمال کرتے ہیں ۔ ایچ آر ڈبلیو کی سینئر عہدیدارڈیبرا براون نے بیان میں کہا کہ 4جی انٹرنیٹ شٹ ڈاؤن کی وجہ سے کشمیر میں لوگوں کو ضروری اور اہم معلومات نہیں ملتی ہیں لہذا اس سے لوگوں کی صحت اور زندگی کو براہ راست نقصان پہنچنے کا خدشہ ہے ۔

راشن گھر گھر پہنچانا ہے | امور صارفین ملازمین میں حفاظتی پوشاک تقسیم

سرینگر//سرینگر میں محکمہ امور صارفین و عوامی تقسیم کاری کے ملازمین میں حفاظتی پوشاک اور ماسکوں کوتقسیم کیا گیا تاکہ عوام تک راشن پہنچانے کے دوران وہ خود بھی اس وباء سے محفوظ رہ سکیں۔اس سلسلے میں فوڈ اینڈ سپلائز ایمپلائز یونین کے صدر ریاض احمد صوفی نے بتایا کہ انکی انجمن نہ صرف ملازمین کی انجمن ہے جنہوں نے ہمیشہ ملازمین کے مسائل اور مشکلات کا ازالہ کرنے میں اہم رول دا کیا ہے بلکہ سماجی خدمات کیلئے بھی یہ انجمن ہمیشہ صف اول پر موجود رہی ہے۔انہوں نے کہا کہ لاک ڈائون کے دوران محکمہ کے ملازمین گھر گھر راشن پہنچا رہے ہیں اور اپنی سلامتی کو خطرے میں ڈال کر لوگوں کی خدمات انجام دے رہے ہیںاوراُن کی سلامتی کو یقینی بنانے کیلئے یہ کوشش کی گئی۔  

بانڈی پورہ میں سبزیوں اور اشیاء ضروریہ کی ہوم ڈیلوری

سرینگر//اننت ناگ سے 45کلو میٹر دورعلاقہ کاچھون علاقہ میںپینے کے صاف پانی کی عدم دستیابی کے نتیجے میں لوگ گوناگوں مشکلات سے دوچار ہیں۔ مقامی لوگوںکا کہناہے کہ 1998میں علاقے کیلئے واٹر سپلائی سکیم منظور ہوئی اور سکیم کے تحت 30پوائنٹ نل نصب کئے گئے لیکن24گھنٹوں کے دوران محض ایک گھنٹہ ہی پانی فراہم کیا جاتا ہے اوراس کیلئے بھی کوئی وقت مقرر نہیں ہے ۔ مقامی لوگوںنے اس صورتحال کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ ایک طرف وباء نے انہیں پریشان کیا ہے اور دوسری جانب پینے کے صاف پانی کی عدم دستیابی ان کیلئے ایک بڑا مسئلہ بنا ہوا ہے۔سی این آئی