تازہ ترین

خطہ پیر پنچال کیلئے صوبائی درجے کا مطالبہ زور پکڑنے لگا،احتجاجی سلسلہ شروع

راجوری //خطہ پیر پنچال کیلئے صوبائی درجے کی مانگ دن بدن زور پکڑتی جارہی ہے ۔پیر کو پی ڈی پی کی طرف سے راجوری میں احتجاجی ریلی نکالی گئی ۔پی ڈی پی کی طرف سے سابق وزیر چوہدری ذوالفقار علی اور سابق ممبراسمبلی راجوری چوہدری قمر حسین کی قیادت میں ڈاک بنگلہ راجوری سے احتجاجی ریلی نکالی گئی جو گوجر منڈی چوک میں پہنچ کر اختتام پذیر ہوئی ۔ریلی سے خطاب کرتے ہوئے ذوالفقار اور قمر نے کہاکہ خطہ پیر پنچال کیلئے علیحدہ صوبے اور پہاڑی ترقیاتی کونسل کی مانگ دیرینہ ہے اور گورنر انتظامیہ و مرکزی حکومت اس سلسلے میں ٹھوس اقدامات کرتے ہوئے فیصلہ لیناچاہئے ۔انہوں نے کہاکہ پی ڈی پی نے الیکشن سے قبل کے اپنے وعدے پر عمل کرنے کیلئے ہر ممکن کوشش کی لیکن اتحادی جماعت بی جے پی نے اس سلسلے میں رکاوٹیں پید اکیں اور خطہ پیر پنچال کو الگ درجہ نہیں مل سکا۔  

ترقیاتی پروجیکٹ جموں تک محدود :پیرپنچال یوتھ فورم

 راجوری//پیرپنچال یوتھ فورم نے خطہ پیر پنچال اور خطہ چناب کو صوبوں کادرجہ دینے کی مانگ کرتے ہوئے کہاکہ حکومت نے ان پہاڑی علاقوں کے ساتھ امتیاز برتاہے۔ پریس کلب راجوری میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے گفتار احمد چوہدری، آصف بٹ ، عاقب وانی ، حسن مرزا، آصف منہاس، رئیس ملک ، مشتاق چوہدری ، شباب ملک، محبت چوہدری، ساجد ملک، انجینئر رشید، محمد شہزاد، انتخاب احمد ودیگران نے کہاکہ خطہ پیرپنچال اور خطہ چناب دونوں ہی جموں سے طویل مسافت پر ہیں اور انہیں زبردستی انتظامی طورپر جموں کے ساتھ رکھاگیاہے۔انہوں نے کہاکہ جموں صوبے کے نام پر جو کچھ بھی منظور ہوتاہے وہ جموں یا سانبہ تک محدود ہوکر رہتاہے اور دیگر علاقوں کو نظرانداز کیاگیاہے۔ان کاکہناتھاکہ تمام بڑے پروجیکٹ جیسے ایمز، آئی آئی ٹی ، سکاسٹ ، علاقائی یونیورسٹی ، سنٹرل یونیورسٹی، ریلویز وغیرہ جموں تک محدود ہیں اور بڑی آبادی والے خطہ

پیر پنچال اور چناب کو صوبہ کا درجہ دیا جائے:پونچھ بار

منڈی// خطہ پیر پنچال اور خطہ چناب کو صوبے کادرجہ دینے کی مانگ کرتے ہوئے بار ایسوسی ایشن پونچھ کے صدر محمد زمان نے کہاکہ اس سلسلے میں وزیر اعظم اور ریاستی گورنر اپنا رول ادا کریں ۔پونچھ میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے محمد زمان نے کہاکہ صرف لداخ کو صوبے کادرجہ دینے کافیصلہ غیر منصفانہ ہے اور لداخ کے ساتھ خطہ پیر پنچال اور خطہ چناب کو بھی یہی درجہ ملناچاہئے ۔بار صدر نے کہا کہ ان دونوں خطوں کی عوام نے ہمیشہ ملک کی خاطر قربانیاں پیش کی اورپولیس و فوج کو تعاون دیالیکن اس کے باوجود انہیں نظرانداز کیاجارہاہے۔ انہوںنے کہاکہ آئندہ پارلیمانی انتخابات سے قبل اگر یہ درجہ نہ ملاتو دونوں خطوںکے عوام سڑکوں پرنکل کر احتجاج کریں گے ۔  

گورنر آر ایس ایس کے ایجنڈ اپر عمل پیرا

مینڈھر//نیشنل کانفرنس کے سینئر لیڈر وسابق ممبراسمبلی مینڈھر جاوید احمد رانا نے ریاستی گورنر پر آر ایس ایس کا ایجنڈا چلانے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ خطہ پیر پنچال کو صوبے کادرجہ نہ دیاجانا ناانصافی ہے ۔مینڈھر میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے رانا نے کہاکہ ریاستی گورنر آر ایس ایس کے اشاروں پر کام کرتے ہیں اور یہاں آر ایس ایس کا ایجنڈچلارہے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ اس سے قبل بھی کئی مرتبہ خطہ پیر پنچال کو الگ درجہ دینے، میڈیکل کالج ،ریلوے لائن، ہائی کورٹ وغیرہ دینے کی مانگ کی گئی جو اس خطے کے عوام کا حق بھی بنتاہے لیکن ریاستی گورنر نے ایس انہیں کیا جو لوگوں کے ساتھ ناانصافی ہے۔انہوں نے کہاکہ اگر نیشنل کانفرنس اقتدار میں آئی توخطہ پیر پنچال اور چناب کو علیحدہ صوبوں کادرجہ ملے گاجس کا سابق وزیر اعلیٰ عمرعبداللہ نے وعدہ کیاہے ۔جاوید رانا نے کہاکہ خطہ پیر پنچال کی اپنی پہچان ہے اور

کانگریس ہی مستحکم اور سیکولر حکومت فراہم کرسکتی ہے:میر

مینڈھر+پونچھ//کانگریس کے ریاستی صدر غلام احمد میر نے مرکزی حکومت پرعوام کو گمراہ کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ کانگریس پارٹی ہی ریاست کو ایک مستحکم اور سیکولر حکومت فراہم کرسکتی ہے ۔پونچھ اور مینڈھر میں کارکنان کے اجتماعات سے خطاب کرتے ہوئے میر نے کہاکہ کارکن آنیو الے چنائو کیلئے تیار ہو جائیں اور پارٹی کو مزید مضبوط بنائیں۔ڈاک بنگلہ مینڈھر میں بولتے ہوئے انہوں نے کہاکہ وہ یقین دلاتے ہیں کہ اگر پارٹی کو مینڈھر سے کامیابی ملی تو پوری کابینہ کو مینڈھر لاکر عوامی دربار لگایاجائے گا اور سبھی مسائل موقعہ پر حل کئے جائیں گے ۔ان کاکہناتھاکہ اگر ریاست اور مرکز میں کانگریس کی حکومت قائم ہوئی تولوگوں کو کم قیمت پر راشن فراہم کیاجائے گا۔میر نے سابق مخلوط سرکار کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ لوگوں کو بھکمری کاشکار بنایاگیا اور لیڈران نے اپنی تجوریاں بھریں ۔ انہوں نے کہاکہ مرکزی لیڈران بھ

آتشزدگی کے واقعات میں2ٹا ٹا میجک خاکستر

تھنہ منڈی+نوشہرہ//راجوری کے تھنہ منڈی اورنوشہرہ میں دو الگ الگ واقعات میں دو ٹاٹا میجک گاڑیاں خاکستر ہوگئیں ۔تھنہ منڈی کے دداسن بالا علاقے میں سواریوں سے بھرے ہوئے ٹاٹا میجک آٹو کو اچانک سے آگ لگ گئی جس کی وجہ سے وہ پوری طرح سے خاکستر ہوگیا۔ذرائع نے بتایاکہ ترپائی پل سے دداسن بالا روٹ پر چلنے والا ٹاٹا میجک زیر نمبرJK02BD-7259دداسن بالا سے واپسی پرجب لوہر دداسن بالا پہنچا تو اس کے انجن سے اچانک آگ نمودار ہوئی جس نے دیکھتے ہی دیکھتے گاڑی کو راکھ کے ڈھیر میں تبدیل کردیاتاہم اس دوران ڈرائیور اور دیگر سواریوں نے چھلانگ لگاکر اپنی جان بچائی ۔اطلاع ملنے پر محکمہ فائر سروس کی گاڑی بھی موقعہ پہنچی تاہم تب تک ٹاٹا میجک آٹو مکمل طور پر خاکستر ہوچکاتھا۔یہ ٹاٹا میجک محمد اقبال ولد محمد دائود سکنہ دداسن بالا کاہے جس نے بتایاکہ آگ انجن گرم ہونے کی وجہ سے لگی ۔اس سلسلے میں پولیس نے کیس درج کرکے

پرانے انتظامی یونٹوں کوفعال بنانے کامطالبہ

پرانے انتظامی یونٹوں کوفعال بنانے کامطالبہ جاوید اقبال   مینڈھر//پیر پنجال عوامی پارٹی کے ریاستی سیکریٹری مشتاق احمد فانی نے کہاہے کہ نئے انتظامی یونٹ بنانے سے قبل پہلے سے قائم کردہ یونٹوں میں افرادی قوت کی تعیناتی عمل میں لائی جائے تاکہ نوجوانوں کو روزگار اور لوگوں کو سہولت مل سکے ۔اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہاکہ سابقہ حکمرانوں نے عوام کی آنکھوں میں دھول جھونکنے کے مترادف کئی یونٹ کھول دیئے مگر ان میں افرادی قوت کی تعیناتی نہیں کی گئی جس کے نتیجہ میں ان دفاتر سے لوگوں کو کوئی بھی فائدہ نہیں پہنچ رہا۔انہوں نے کہاکہ نئے یونٹ بھی ضرورت ہیں لیکن اس سے پہلے پرانے یونٹوں کو فعال بناناچاہئے اورلیڈران کی خود پیدا کردہ رشوت ، بے روزگاری ، کنبہ پروری، نا انصافی ،امیر نوازی اور وزیر نوازی کا خاتمہ کیاجائے۔       قاضی موہڑہ میںپانی اور بجلی کابحرا

پونچھ میں فائرنگ اور گولہ باری کا تبادلہ

راجوری //ہندوپاک افواج کے درمیان پیر کے رو زبھی فائرنگ اور گولہ باری کا تبادلہ ہواتاہم اس دوران کسی طرح کا کوئی جانی نقصان نہیںہوا۔ دفاعی ذرائع کے مطابق پونچھ کے کیرنی سیکٹر میں پاکستانی فوج کی طرف سے بھارتی فوج کی اگلی چوکیوں کو نشانہ بناگیا۔ فائرنگ اور گولہ باری کا یہ سلسلہ صبح 10بج کر30منٹ پر شروع ہوا جو دو گھنٹے تک جاری رہا۔پولیس کے ایک افسر نے بتایاکہ لگ بھگ دو گھنٹے فائرنگ اور گولہ باری ہوئی تاہم اس دوران کسی طرح کے جانی نقصان کی اطلاع نہیں ۔ادھراوڑی کے راجن وانی علاقے میں سوموار کو سرچ آپریشن اور فائرنگ کا سلسلہ دیر تک جاری رہا۔پولیس ذرائع کے مطابق اتوار اور سوموار کی درمیانی رات کو اوڑی کے راجن وانی علاقے میں فوج کی ایٹلری یونٹ پر تعینات سپاہی کو نزدیکی نالے سے کچھ مشکوک نقل حرکت محسوس ہوئی جس کے بعد علاقے کو فوج اور پولیس نے محاصرے میں لیا۔زرائع کے مطابق دن پر اِس علاقے کو مح

تازہ ترین