تازہ ترین

بڈگام میں خواتین کیلئے اپنی نوعیت کا پہلا مراتھان

ذمہ داری کا احساس بلندیوں تک پہنچا سکتا ہے : چیف جسٹس گیتا متل

4 اگست 2019 (00 : 12 AM)   
(      )

نیو ڈسک
بڈگام//ریاستی ہائی کورٹ کی چیف جسٹس ، جسٹس گیتا متل نے کہا ہے کہ صحت مند دماغ کیلئے کھیل سرگرمیاں انتہائی ضروری ہیں جس کی مدد سے ایک انساں اپنی زندگی کو کامیاب بنانے کے ساتھ ساتھ اپنے اہداف حاصل کر سکتا ہے ۔ چیف جسٹس نے ان باتوں کا اظہار سپورٹس سٹیڈیم بڈگام میں طالبات کے ایک اجتماع سے خطاب کے دوران کیا جو وہاں اپنی نوعیت کے پہلے مراتھان میں شرکت کرنے کیلئے آئی تھیں ۔ مراتھان کو ڈپٹی کمشنر بڈگام طارق حسین گنائی نے صبح ساڑھے سات بجے جدید بس اڈے سے جھنڈی دکھا کر روانہ کیا ۔ 2.5 کلو میٹر کی دوڑ کے بعد مراتھان سپورٹس سٹیڈیم بڈگام میں اختتام پذیر ہوا ۔ مراتھان میں ضلع کے مختلف سکولوں سے تعلق رکھنے والی 600 طالبات نے شرکت کی ۔ اپنے خطاب میں چیف جسٹس نے کہا کہ انہوں نے 23 برس تک ایک وکیل کی حیثیت سے جدو جہد کرنے کے بعد اپنا ہدف حاصل کیا ۔ انہوں نے کہا کہ انہیں والدین کی جانب سے ہر طرح کی آزادی ملی تا ہم ذمہ داری کے احساس کی وجہ سے انہوں نے اپنی منزل پا لی ۔ چیف جسٹس نے کہا کہ ناکامی کی صورت میں کسی کو ہدفِ تنقید نہیں بنایا جانا چاہئیے بلکہ دوبارہ کوشش کیلئے اُس کی حوصلہ افزائی کی جانی چاہیے ۔ اس موقعہ پر ناظمِ اطلاعات و رابطہ عامہ ڈاکٹر سید سحرش اصغر ، چیف جسٹس کے پرنسپل سیکرٹری جواد احمد ، پرنسپل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشنز جج راجہ شجاعت علی خان ، چیف جوڈیشل مجسٹریٹ تبسم قادر پرے ، ڈائریکٹر اے اے آئی سرینگر آکاش دیپ ماتھر ، ایس ایس پی بڈگام امود آشوک ناگپوری اور ضلع انتظامیہ کے اعلیٰ افسران موجود تھے ۔ تقریب کے آخر میں مراتھان کے پہلے دس فاتحین میں چیف جسٹس نے انعامات تقسیم کئے ۔ پہلی تین پوزیشن حاصل کرنے والی لڑکیوں کو بائی سائیکلیں جبکہ 7 پوزیشینیں حاصل کرنے والی لڑکیوں کو کلائی کی گھڑیاں دی گئیں ۔ اس کے علاوہ ڈائریکٹر اے اے آئی سرینگر نے سی ایس آر مہم کے تحت جسمانی طور خاص دو افراد میں خاص سکوٹیاں تقسیم کیں ۔ اس موقعہ پر آٹھوین جماعت کی طالبہ باریکہ بہزاد کو کتاب کی تصنیف کیلئے انعام سے نوازہ گیا ۔ چیف جسٹس نے نیٹ میں کامیابی حاصل کرنے والی 6 طالب علموں اور کھیل کے میدان سے تعلق رکھنے والے 6 کھلاڑیوں کو بھی انعام سے نوازہ گیا۔ بعد میں چیف جسٹس نے گورنمنٹ ڈگری کالج بڈگام میں خواتین کیلئے مخصوص تین بسوں کو جھنڈی دکھا کر روانہ کیا ۔