تازہ ترین

سطح سمندر سے بلندی پر علامتوں کو سنجیدگی سے لیا جائے : ڈاکٹر سوشیل

22 جولائی 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

جموں//امر ناتھ یاتریوں کو یاترا سے متعلق جانکاری دینے کے مقصد سے ڈاکٹر سوشیل اور انکی ٹیم نیشری رام مندر پُرانی منڈی میںایک روزہ بیداری و طبی چیک اپ کیمپ منعقد کیا۔کیمپ کا افتتاح ایم پی شمشیر سنگھ منہاس  اور مہنت شری1008رامیشور داس جی نے کیا ۔ اس موقعہ پر ڈاکٹر سوشیل نے کہا کہ یاتریوں کو اونچی بلندیوں پر جانا ہے۔انہوں نے کہا کہ اس یاترا میں تقریباً ڈھلوان اور چڑھائی ہے،جس سے یاتریوں کو پہاڑی چڑھنے کی سخت بیماری ہو سکتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس دوران عام علامتیں جیسے کہ سردرد ، سستی ،قے ،تھکان اور توانائی کی کمی ، سانس لینے میں مشکل، سونے میں مسائل اور بھوک کے مسائل پیدا ہو جاتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ بلندیوں پر ان علامتوں کو سنجیدگی سے لیا جا نا چاہیے۔انہوں نے کہا کہ بلندیوں پر ایک بیماری HAPEلگ جاتی ہے ، جو بغیر کسی علامت کے ہوجاتی ہے۔ انہوں نے کہا کہHAPEسے پھیپھڑوں میں پانی داخل ہو جاتا ہے،جس سے چھاتی میں درد، سان لینے میں دقت، کھانسی اور سفید یا گلابی رنگ کی تھوک آتی ہے۔انہوں نے کہا کہ بالائی والے علاقوں میں دوسری بیماری  HACEہے ،جس سے دماغ میں فاضل پانی داخل ہوتا ہے اور مناسب طریقہ سے کام کرنا بند کرتا ہے،جس سے وہ کوما (Coma)میں ہو جاتا ہے۔انہوں نے خلاصہ کرتے ہوئے کہا کہ شری امر ناتھ جی گُپھا سطح سمندر سے 13000فٹ بلندی پر واقع ہیاور کہا کہ اتنی بلندی پر کسی بھی علامت کو سنجیدگی سے لینا چاہیے کیونکہ یہ علامتیں مہلک ہوتی ہیں۔انہوں نے ذیابطیس و ہائی بلڈ پریشر والوں کو ان علامتوں کو زیادہ سنجیدگی سے لینے پر زور دیا ۔کیمپ میں ڈاکٹر دنیشور کپور، ڈاکٹراکشے کمار،ڈاکٹر کیول شرما موجود تھے۔نیم طبعی عملے اور رضاکاروں میں کمل شرما ، راگھو راجپوت، گورو ہیرا، منندر سنگھ ، امن گپتا، گورو شرما ،نتن ورما ،مانو کھبہ، اکشے کمار، راج کمار، راجیو ووہرہ، روہت چلوترہ اور سریش بیگڑ ہ بھی شامل تھے