تازہ ترین

گول میں پلوں کی تعمیر کاکام التواکاشکار

لوگوں کو عبور ومرور میں مشکلات کاسامنا

22 جولائی 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

زاہد بشیر
 گول//ضلع رام بن کے سب ڈویژن گول میں تعمیروترقی کی سرگرمیاں ماند پڑی ہوئی ہیں اور صورتحال دیکھ کر یہ ادراک ہوتاہے کہ ایسی سڑکیں بھی زیر تعمیر ہیں جنہیں کئی دہائیوں قبل شرو ع کیاگیاتھا۔ گول میں جنگلات روڈ جو کافی پرانا روڈ ہے ، محکمہ تعمیرات عامہ کی عدم توجہی کا منہ بولتاثبوت ہے۔یہاں پر محکمہ جنگلات کا پرانا دفتر بھی ہے اور جب سے حالات ناسازگار ہوئے تو 58آ ر آر کا کیمپ بھی قائم کیاگیااور یہ جنگلات جو گول کوچاروں طرف سے ملاتا ہے لیکن افسوس کا مقام ہے کہ اس روڈ پر ایک ایسا پل جو لکڑی کے ستونوں سے بنا ہوا ہے ،کو ابھی تک جدید تقاضوں کے مطابق نہیں بنایاگیابلکہ یہ بھی تبھی بنایاگیاجب سڑک بنی ہوگی ۔ اگر دوسری سڑکوں پر پلوں کی بات کی جائے یہی تصویر سامنے آتی ہے ۔مقامی لوگوں کے مطابق خزانہ عامرہ سے لاکھوں نکال تو لئے لیکن ندی نالوں پر پل نہیں بنے ، جاپہ ، شیر لی ، چنا ، ، گگر سولہ وغیرہ کے علاوہ بہت ساری ایسی جگہیں ہیں جہاں پر محکمہ دیہی ترقی نے ندی نالوں پر پل تعمیر کرنے کے لئے خزانہ عامرہ سے پیسے  نکالے لیکن زمینی سطح پر کوئی پل تعمیر نہیں ہو ا۔ان کاکہناتھاکہ پلوں پر تھوڑا سا تعمیری کام شروع کر کے ٹھپ کر دیاگیا ۔ ندی نالوں کے دونوں جانب دیواریں دی گئیں لیکن باقی کام التواکاشکارہے ۔ مقامی عوام کاکہناہے کہ ان تعمیری کاموں کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کے لئے محکمہ نے کوئی دھیان نہیں دیااور اس طرح سے بہت سارے ایسے کام ہیں جو ادھورے پڑے ہیں اور ان پر کوئی پیش رفت نہیں ہو رہی ۔اسطرح سے گول سب ڈویژن میں محکمہ تعمیرات عامہ ، پی ایم جی ایس وائی ، محکمہ دیہی ترقی کی جانب سے بہت سے ایسے کام ہیں جن کی طرف کوئی دھیان نہیں دیا جا رہا ہے اور ہزاروں لوگ آج بھی سڑکوں کی خستہ حالت ، سڑکوں کی عدم دستیابی و دوسرے مسائل سے پریشان ہیں لیکن اس کے با وجود سرکار اور نمائندے ڈیجیٹل انڈیا کے دعوے کر رہے ہیں ۔مقامی لوگوں کاکہناہے کہ ان پروجیکٹوں کو پایہ تکمیل تک پہنچایاجائے تاکہ ان سے عوام کو فائدہ مل سکے ۔