تازہ ترین

یونیورسٹی سربراہان اور چیئرمین پی سی سی کی گورنر سے ملاقات

3 جولائی 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

نیو ڈسک
سر ی نگر//ریاستی گورنر ستیہ پال ملک کے ساتھ کشمیر یونیورسٹی اور اسلامک یونیورسٹی کے وائس چیئرمین اور پی سی بی چیئرمین نے ملاقات کے دوران کی اہم امور پر تبادلہ خیال کیا۔تفصیلات کے مطابقرئیس الجامعہ کشمیر یونیورسٹی طلعت احمد نے یہاں راج بھون میں گورنر ستیہ پال ملک کے ساتھ ملاقات کی اور اُنہیں یونیورسٹی کے تدریسی اور اِنتظامیہ امور کے بارے میںجانکاری دی۔گورنر نے این اے اے سی کی طرف سے یونیورسٹی کواے پلس کا درجہ دینے کے لئے وائس چانسلر کو مبارک باد دی۔اُنہوں نے پروفیسر طلعت پر زور دیا کہ وہ ترجیحی بنیادوں پر امتحانات کے عمل میں اصلاحات لائیں ، تدریسی شیڈول کو بحال کریں اور فعال تدریسی و تحقیقی سرگرمیوں کی عمل آوری کو یقینی بنائیں۔ وائس چانسلر نے گورنر کو جانکاری دی کہ یونیورسٹی میں اکیڈیمک کیلنڈر میںمعقولیت لانے کے لئے خاطر خواہ اقدامات کئے گئے ہیں۔اُنہوں نے کہا کہ امتحانی شیڈول کو مزید فعال بنانے کے لئے اختراعی اقدامات کئے جارہے ہیں۔وی سی نے گورنر کو بین الاقوامی شراکت داری کے کئی تحقیقی پروجیکٹوں کے بارے میںجانکاری دی ۔ یہ پروجیکٹ امریکہ ، کینڈا، فِنلینڈ اور جرمنی کے اشتراک سے حیاتیاتی تنوع، آب و ہوا کی تبدیلی اور جیولوجی کے شعبے میں عملائے جارہے ہیں۔اس دوران اسلامک یونیورسٹی آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کے رئیس الجامعہ پروفیسر مشتاق احمد صدیقی نے آج یہاں راج بھون میں گورنر کے ستیہ پال ملک کے ساتھ ملاقات کی۔اس دوران اُنہوں نے گورنر کو یونیورسٹی کے تدریسی اور اِنتظامی امور کے بارے میں جانکاری دی۔اُنہوں نے گورنر کو یونیورسٹی میں عملائی جارہی تحقیقی سرگرمیوں سے بھی آگاہ کیا۔گورنر نے اس موقعہ پر کہا کہ طلباء کے تدریسی مفادات کو فروغ دیا جانا چاہیئے اور اس کام کے لئے اختراعی اوراصلاحاتی اقدامات کئے جانے چاہئیں ۔گورنر نے عالمی اہمیت کے ایک پروجیکٹ کے لئے آئی یو ایس ٹی کو آئی یو سی این سوئیر لینڈ میں شامل کئے جانے کے لئے مبارک باد دی۔دریں اثناء چیئرمین جموں اینڈ کشمیر پبلک سروس کمیشن عبداللطیف الزماں دیوا نے راج بھون میں گورنر ستیہ پال ملک سے ملاقات کی۔دیوا نے گورنر کو جے اینڈ کے پی ایس سی کی کارکردگی اور مختلف امتحانات کے وقت پر انعقاد کے سلسلے میںکمیشن کی طرف سے کئے جارہے اقدامات کے بارے میں جانکاری دی۔ان امتحانات میں جے اینڈ کے کمبائینڈسروسز کمپیٹیٹو ایگزامنیشن( کے اے ایس) ،کے سی ایس ( جوڈیشل)، اسسٹنٹ کنزرویٹر فارسٹ ( اے سی ایف) شامل ہیں ۔اس کے علاوہ میڈیکل افسروں کو منتخب کرنے کے لئے کئے جارہے اقدامات کے بارے میں بھی گورنر کو جانکاری دی۔کمیشن پشو و بھیڑ پالن محکمہ میں دستیاب اسامیوں کو پُر کرنے کے علاوہ محکمہ اعلیٰ تعلیم میں اسسٹنٹ پروفیسر اسامیوں پر تقرری کے عمل میں سرعت لانے بارے میں بھی تبادلہ خیال کیا گیا۔گورنر نے کمیشن کی اہمیت پر چیئرمین پر زور دیتے ہوئے کہا کہ امتحانات و اِنٹرویو کے وقت پر انعقاد اور اُمید واروں کا انتخاب کرنے میں شفافیت یقینی بنانا ہوگا۔