تازہ ترین

منریگاایکٹ کے تحت 15 دنوں کے اندرمزدوروں کو اجرت کی ادائیگی کے دعوے بے بنیاد

۔2 سال گذرگئے مگراُجرت نہیں ملی ،مزدورفاقہ کشی پرمجبور،انتظامیہ خاموش تماشائی

14 مئی 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

عاصف بٹ

 ڈیٹھ پیٹھ میں اندروال حلقہ کی 15 پنچایتوں کے لوگوں کامحکمہ دیہی ترقی کیخلاف احتجاج

 کشتواڑ//اسمبلی حلقہ اندروال کی 15 پنچایتوں کے پنچایت نمائندوں اور لوگوں نے ڈیٹھ پٹھ میںمحکمہ دیہی ترقی کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا۔اس دوران مظاہرین نے متعلقہ محکمے پر عوامی مسائل کو نظر انداز  کرنے کا الزام عائد کیا۔ سرپنچوں وپنچوںنے کہا کہ گزشتہ 2 سالوں سے ایم جی نریگا کے تحت جن مزدوروں نے کام کیا ہے انہیں ابھی تک ان کی اجرتیں واگزار نہیں کی گئیں جبکہ اس مسئلہ کو کئی بار متعلقہ حکام کی  نوٹس میں لایا گیا لیکن ان کی طرف سے کوئی خاطر خواہ انتظام نہیں کیا گیا۔انھوں نے کہا کہ اگر چہ ایم جی نریگاایکٹ کے تحت  15 دنوں کے اندر مزدوروں کی اجرت کی ادائیگی ادا کرنا لازمی ہوتا ہے لیکن محکمہ کی طرف سے ایم جی نریگا قواعد کی سرے عام خلاف ورزی کی جارہی ہے جس کی وجہ سے لوگ پریشانی میں مبتلاہیں۔اس موقعہ پر خطاب کرتے ہوئے بلاک صدر پنچایت ایسوسی ایشن مغل میدان شبیر احمد لون نے کہا کہ محکمہ دیہی ترقی نے کچھ سال قبل ایم جی نریگا کے تحت لوگوں نے کام کئے تھے لیکن ابھی تک ان مزدوروں کی اجرتیں واگزار نہیں کی گئیں جس کی وجہ سے یہ غریب لوگ فاقہ کشی پر مجبور ہیں۔انھوں نے کہا کہ سوچھ بھارت ابھیان کے تحت لوگوں سے بیت الخلا تعمیر کروائے گئے لیکن انھیں ابھی تک اجرتیں ادا نہیں کی گئی ہیں جبکہ علاقہ کی اندرونی سڑک رابطے بھی کافی خستہ حالی کا شکار ہیںاور جگہ جگہ سڑکوں پر گڈھے  بن گئے ہیں جس کی وجہ سے علاقہ کی عوام خاص طور پر مریضوں کو کافی مشکلات کا سامنا کرنا پڑ تا ہے۔ علاقہ کے لوگوں کو اس مقدس مہینے میں بھی پینے کے لیے صاف پانی تک دستیاب نہیں ہے اورغریب عوام آلودہ پانی پینے پرمجبورہے۔اس کے علاوہ لوگوں نے اسکولوں کی خستہ حالی پربھی تشویش کااظہارکیا۔انہوں نے کہاکہ اس وقت بھی اندروال حلقہ میں 32 کے قریب اسکول بند پڑے ہیں جس پر انتظامیہ خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے۔انھوں نے ضلع ترقیاتی کمیشنر کشتواڑ سے اپیل کرتے ہوے کہا کہ وہ خود اس معاملے پرمداخلت کریں اور ملوث افرد کے خلاف کاروائی کریںتاکہ علاقہ کی غریب عوام کو انصاف مل سکے۔  اس سلسلے میں جب بی ڈی او مغل میدان سے رابطہ کیا گیا تو انھوں نے بتایا کہ دیہی ترقی محکمہ نے بلاک مغلمیدان میں ایم جی نریگا کے تحت  2 کروڑ 25 لاکھ روپے خرچ کیے ہیں۔