تازہ ترین

غزلیات

21 اپریل 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

غمِ فْرقت میں سوزِ زندگانی کم نہ ہو جائے
غموں کا اسقدر بڑھنا علاجِ غم نہ ہو جائے
 
بڑی مْشکل سے میں نے آب دی ہے تیغِ قاتل کو
سنبھل کر دیکھنا یہ آنکھ پھر سے نم نہ ہو جائے
 
زمانے کی تھکن لے کر یہاں تک آ تو پہنچا ہے
ترے در پر یہ دیوانہ کہیں بے دم نہ ہو جائے
 
ذہن میں گونجتی ہیں اب بھی چیخیں حْسن بانو کی
کہیں پھر سے کوئی بہرام زیرِ چھم نہ ہو جائے
 
اگر سجدہ ہی لازم ہے تو کعبہ اور کلیسا کیوں
جبیں چوکھٹ پہ تیری پھر بھلا کیوں خم نہ ہو جائے
 
جدائی کا یہ موسم اور میری  تشنگی  جاویدؔ
مری آنکھوں کا یہ دریا مْجھی میں ضم نہ ہو جائے
 
سردارجاویدخان 
پتہ؛ مہنڈر، پونچھ،رابطہ؛ 9419175198
 
 
غزل
سانسوں پہ اپنی جیسے مسلط ہے دوڑ دھوپ
چھاؤں اُتارتا ہوں تو کہتا ہے اوڑھ دھوپ
 
ٹکڑے جو کرکے لے گیا پت جھڑ غبار میں
لا فصلِ نو بہار ہر آنگن میں جوڑ دھوپ
 
موسم ہے سرد خواب ٹھٹھرتے ہیں رات بھر
برفاب دل کی وادیوں کی سمت موڑ دھوپ
 
یوں کوچ کرکے جا  نہ مرے برف زار سے
یخ بستہ آئینے میں پڑی ہے جو توڑ دھوپ
 
لڑنا ہے پڑتا دھول اندھیروں سے رات بھر
خورشیدِ دشت خواب منڈیروں پہ چھوڑ دھوپ
 
صحرائے ریگِ قیس کا شیداؔ ہوں را ہ رو
قدموں کے ساتھ میرے قدم تم بھی جوڑ دھوپ
 
علی شیداؔ
نجدہ ون، نپورہ  اسلام آباد کشمیر
موبائل نمبر؛9419045087
 
ہم پہ کرتاہے جب نظرکوئی 
دِل کی پھرلیتاہے خبرکوئی 
زندگی بھرتھا دربہ در کوئی 
کرگیااِسی طرح بسرکوئی 
جومیرے دِل کے غم میں شامل ہو
مُجھ کو آتا نہیں نظرکوئی 
ایسے میں مِل سکے گی چھائوں کہاں
راہ میں جب نہیں شجرکوئی 
وہ ہے اپنی انامیں ڈُوباہوا
اُس پہ ہوگا کہاں اثرکوئی 
کیاکہوں میراحال تھا کیسا
ہنس دیامُجھ کودیکھ کرکوئی 
اُس کے بارے میں کیا کہوں ہتاشؔ
بات کرتاہے وہ مختصرکوئی 
 
پیارے ہتاشؔ
دور درشن لین ، جموں
موبائل نمبر؛8493853607
 
 
اچھی لگی اُس کی ادا،اُس نے ہمیں جھوٹا کہا
آنے لگا سچ کا مزہ، اُس نے ہمیں جھوٹا کہا 
بس دیکھتے ہی رہ گئے اور سوچتے ہی رہ گئے
کیسی ہوئی ہم سے خطا، اُس نے ہمیں جھوٹا کہا
ہم تو صنم جھو ٹے نہیں،کب کہہ سکے یہ چاہ کر 
چُپ چاپ ہی سب سُن لیا،اُس نے ہمیں جھوٹا کہا
دیکھا نہیں ،پرکھا نہیں، سوچا نہیں، سمجھا نہیں
 ہم کو دیا  الزام کیِا،اُس نے ہمیں جھوٹا کہا 
اُس نے فقط کی دل لگی ، اس بات کا ہی غم رہا
کُچھ وجہ بھی دیتا  بتا، اُس نے ہمیں جھو ٹا کہا
ہم نے کیا محسوس کیاِ، اُس نے بھی یہ سوچا کہاں 
لیکن ہمیں اچھا لگا، اُس نے ہمیں جھوٹا کہا 
 انجم ؔ ہمارے عشق کا ، یہ تو ہُوا آغاز ہے
دل میں بھی ہے کچھ کچھ ہُوا،اُس نے ہمیں جھوٹا کہا
 
پیاسا انجمؔ
ریشم گھر کالونی ۔بخشی نگر جموں
موبائل نمبر؛9419101315
 
 
تیرا آنا توبہ توبہ
مر مٹ جانا توبہ توبہ
 
اپنے آپ میں بے خود ہو کر
دل بہلانا توبہ توبہ
 
دلبر جانی جلوہ تیرا
دل کو بھانا توبہ توبہ
 
تیری بانہیں منزل میری
ان میں سمانا توبہ توبہ
 
جانا ان کا ایک قیامت 
ان کا آنا توبہ توبہ 
 
جسپال کور
نئی دلی،موبائل نمبر؛9891861497