پنچایت انتخابات2018،گول میں سیاسی گرما گرمی تیز

تیسرے مرحلہ کے انتخابات24نومبر کو52سرپنچ اور165میدان میں،17279ووٹران کریں گے فیصلہ

9 نومبر 2018 (52 : 02 AM)   
(      )

زاہد بشیر
گول//ریاست بھر کے ساتھ ساتھ ضلع رام بن میں بھی پنچایتی انتخابات کا سیاسی بازار گر م ہے جہاں ایک طرف سے دلبدلی کا موسم بہار ہے وہیں دوسری جانب آج پنچایتی انتخابات میں فارم واپس لینے کا آخری دن تھا اس کے ساتھ ہی گول بلاک اور داڑم بلاک میں تیسرے مرحلے کے لئے 52سرپنچوں اور165پنچوں کا مقابلہ کا امتحانی دن 24نومبر کو17279ووٹران ان کی قسمت کا فیصلہ کریں گے ۔ اس سیاسی گرما گرمی کے دوران کافی دل بدلی بھی ہوئی اور کافی پرانے سرپنچوں اور نامور شخصیات نے چپ سادھ لی اور اس جنگ سے کنارہ کشی کی وہیں دوسری جانب ایسے بھی نئے چہرے سامنے آئے جن کو آزمانے کے لئے لوگ بھی ماحول کو پرکھ رہے ہیں ۔ گول بلاک میں اس وقت جن پنچایت حلقہ میں سرپنچ اور پنچ میدان میں رہے اُن کی تفصیل ہوں ہے ۔ بلاک گول کی پنچایے ڈھیڈہ میں پانچ سرپنچ اور17پنچ میدان میں رہے جبکہ جنوری میں بناء مقابلہ ۔ایک کا فارم رد ہوااور اس پنچایت کے 1703کل ووٹران ان کی قسمت کا فیصلہ کریں گے وہیں پنچایت گول سی میں3سرپنچ،11پنچ میدان میں ہیں جبکہ 2بناء مقابلہ کامیاب ہوئے جبکہ اس پنچایت میں1434کل ووٹران ہیں ۔پنچایت گول اے4سرپنچ9پنچ میدان میں ہیں جبکہ3 بناء مقابلہ ،شیریلی ،جمن،فرقان آبادشامل ہیں اور یہاں پراس پنچایت میں1075کل ووٹران موجود ہیں ۔گول جمن پنچایت 3سرپنچ اور14پنچ میدان میں ہیں اور ایک بناء مقابلہ جابہ لورسے کامیاب ہوا جبکہ یہاں اس پنچایت میں 1261ووٹر ہیں ۔گول بی پنچایت4سرپنچ ،12پنچ میدان میں میں ہیں۔ایک بناء مقابلہ زوہد محلہ سے کامیاب ہوئی جہاں خاتون میدان میں تھی جبکہ اس پنچایت میں 1494کل ووٹران موجود ہیں ۔گول پرتمولہ2سرپنچ ،10پنچ میدان میںہیں اور3بناء مقابلہ پرتمولہ A-1 ، پرتمولہ B-11پرتمولہ B1، سے کامیاب ہوئے جبکہ اس پنچایت میں 1248ووٹران ہیں ۔ اندھ پنچایت سے 3سرپنچ ،8پنچ میدان میں ہیں اور یہاں پر 3بناء قابلہ ۔ تاوانال،سوسل، اور ماسواشامل ہیں ۔ اس پنچایت میں 1050ووٹران ہیں جو تین سرپنچوں اور آٹھ پنچوں کی قسمت کا فیصلہ کریں گے۔کلی مستیٰ پنچایت8سرپنچ جبکہ 9وارڈ وں میں17ممبر ان میدان ہیں ایک بناء مقابلہ گنڈی حلقہ سے کامیاب ہوئی ۔ اس پنچایت میں1778ووٹران ہیں ۔مہاکنڈپنچایت میں 3سرپنچ میدان میں ہیں جبکہ 9وارڈ وں میں اس پنچایت میں 19پنچ میدان میںہیں  جبکہ ایک بلا مقابلہ بٹ پورہ سے کامیاب ہوا۔ اس پنچایت میں ووٹروں کی کل تعداد 1594ہے جو ان نمائندوں کی قسمت کا فیصلہ کریں گے ۔پنچایت گنڈی گگر سولہ میں3سرپنچوں کے بیچ مقابلہ ہو گا جبکہ یہاں پر7وارڈوں میں چھ بناء مقابلہ جبکہ سہمت محلہ میں دو پنچوں کے درمیان مقابلہ ہو گا ۔ یہاں پر اس پنچایت میں 1010ووٹران ہیں ۔پنچایت داڑم Aجہاں پر اس وقت 6سرپنچ میدان ہیں جبکہ7وارڈوں میں جہاں ایک وارڈ ڈگس میں بناء مقابلہ کامیاب ہوا جبکہ 12پنچوں میں کڑے کا مقابلہ ہو گا ۔ جہاں اس پنچایت میں1408ووٹران ہیں ۔ داڑ م بی میں 5سرپنچ قسمت آزمائی کے لئے میدان میں ہیں 7وارڈوں میںدو پر بنا مقابلہ ڈمکی اور دہار کوہلی میں بناء مقابلے کامیاب قرار دئے گئے جبکہ 5وارڈوں میں12پنچوں کے بیچ مقابلہ ہو گا ۔ اس پنچایت میں 663ووٹر ہیں ۔ اور گوئی بھیمداسہ پنچایت میں 3سرپنچوں کے بیچ مقابلہ ہو گا جبکہ گوئی وارڈ میں ایک بناء مقابلہ قرار دیا گیا جبکہ6وارڈوں میں15پنچ قسمت آزمائی کر رہے ہیں اور ان کی قسمت کا فیصلہ1562ووٹران24نومبر2018کو فیصلہ کریں گے ۔ اس طرح سے بلاک گول میں 9پنچایتوں میں اس وقت35سرپنچ اور 114میدان میں ہیں جن کی قسمت کا فیصلہ24نومبر کو 12636ووٹران کریں گے اس طرح سے بلاک داڑم گنڈی میں چار پنچایتوں میں17سرپنچ اور51ممبران میدان میں ہیں اور4643ووٹران ان کی قسمت کا فیصلہ 24نومبر2018کو کریں گے ۔ آج تین بجے تک فار م لینے کی آخری وقت تھا اور اس سے پہلے دن رات سیاسی گرما گرمی جاری رہی اور جہاں بہت سارے لوگوں نے رضا مندی کے بعد فار م واپس لئے جبکہ ایک ہی فارم دونوں بلاکوں میں رد ہوا۔ اب آگے کے حالات کیا رہیں گے وہ کل سے ہی شروع ہوں گے ۔
 

تازہ ترین