تازہ ترین

حکومت قبائلی آبادی کی سماجی و اقتصادی ترقی کی وعدہ بند: ذوالفقار

19 مارچ 2017 (00 : 02 AM)   
(      )

نیوز ڈیسک
جموں//خوراک، شہری رسدات اور امور صارفین کے وزیر چودھری ذوالفقار علی نے کہا کہ حکومت ریاست کی قبائلی آبادی کی سماجی و اقتصادی ترقی کے لئے تمام کوششیں بروئے کار لارہی ہے۔یونائٹیڈ فارم بلوام کے آڈیٹوریم میںمنعقد گجر بکروال کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وزیر نے کہاکہ ماضی ووٹ حاصل کرنے کے لئے قبائلی آبادی کو نقط انتخابات کے دوران یاد رکھا جاتا ہے اور بعد میں اس طبقے کو یکسر فراموش کیا جاتا ہے۔وزیر نے کہا کہ سابق وزیر اعلیٰ مرحوم مفتی محمد سعید کی کوششوں کے نتیجے میں ہی قبائلی امور کی وزارت کا قیام عمل میںلایا گیا۔ انہوں نے کہا کہ اس سے قبل گجر بکروال طبقے کی بہبود کی جانب کسی نے کوئی توجہ نہیںدی اور اس طبقے کو ریاست میں شیڈول ٹرائب درجہ حاصل کرنے کے لئے 40 سال کا وقت لگا۔قبائلی طبقے کو قوم پرست قرار دیتے ہوئے ذوالفقار نے کہا کہ تاریخ اس طبقے کی قربانیوں کی شاہد ہے۔وزیر اعظم نریندر مودی کے ’’ سب کا ساتھ ۔ سب کاوِکاس‘‘نعرے کا ذکر کرتے ہوئے وزیر نے کہا کہ ترقی کو اُسی صورت میں یقینی بنایا جاسکتا ہے جب ہر فرد کی جانب مطلوب توجہ دی جائے اور خطہ ، ذات ، رنگ یا جنس کو کوئی اہمیت دئیے بغیر ترقیاتی منصوبے ترتیب دئیے جائیں۔ذوالفقار نے کہا کہ پورا ملک ایک انسانی جسم کے مانند ہے اور اگر جسم کا ایک حصہ تکلیف میں ہو تو پورا جسم تکلیف محسوس کرتا ہے ۔ وزیر نے کہا کہ پسماندہ طبقوں کی ترقی کے بغیر کی حقیقی ترقی ناممکن ہے۔وزیر نے کہا کہ ریاست کی وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی تمام خطوں اور طبقوں کی یکساں ترقی اور بہبود کی خواہان ہیں۔ذوالفقار نے کہاکہ موجودہ حکومت ایجنڈا آف الائنس کے تحت کام کرتی ہے جس میں ہر کسی کی جذبات کا خیال رکھا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ ایجنڈا ریاست کے ہر باشندے کے مفادات کو تحفظ فراہم کرتا ہے ۔ وزیر نے کہا کہ ریاست میں اقلیتوں کے مفادات کو تحفظ فراہم کرنے کے لئے ہرممکن کوششیں کی جارہی ہیں۔وزیر نے کہا کہ حکومت نے قبائیلی آبادی کی باز آباد کاری کے لئے اقدامات کرنے کے ساتھ ساتھ پہلے ہی ’’ خانہ بدوشن راشن منصوبہ‘‘ عملایا ہے۔وزیر نے مزید کہا کہ حکومت’’ ڈیری فارمنگ پالیسی‘‘ ترتیب دے رہی ہے ۔ انہوںنے کہا کہ قبائیلی طبقے کو اُن کا کام کا بھرپور معاوضہ دینے کے لئے مختلف ڈیری پروڈکٹس کے نرخوں پر نظر ثانی کرے گی۔ وزیر نے کہا کہ حکومت دودھ کے کاروبار میںمعقولیت لانے اور اس کاروبار کے ساتھ جڑے افراد کی زندگیوں میں بدلائو لانے کے اقدامات کر رہی ہے۔وزیر نے کانفرنس میںموجود کمیونٹی ممبران سے تلقین کی کہ وہ امن میں رخنہ ڈالنے والے عناصر کی چالوں سے ہوشیار رہیں ۔ انہوں نے کہا کہ ایسے عناصر کا ڈٹ کا مقابلہ کیا جائے گا۔چودھری ذوالفقار نے تعلیم کے حصول پر زور دیتے ہوئے کہا کہ حصولِ علم کے بغیر ترقی کا حصول ناممکن ہے۔ انہوں نے کہا کہ اَن پڑھ رہنے کی صورت میں ریزرویشن سے اس طبقے کو کوئی فائدہ نہیں ہوگا۔وزیر نے کہاکہ تعلیم کے حصول سے ہر طبقے کی حالت مستحکم ہوجاتی ہے اور علم حاصل کرنے سے ہی گجر بکروال طبقہ اپنے اہداف حاصل کرسکتا ہے۔وزیر نے گجر بکروال طبقے کو متحد رہنے کی تلقین کرتے ہوئے کہا کہ اس طرح کانفرنس اُنہیں اپنے خیالات بانٹنے کے لئے ایک پلیٹ فارم مہیا کرتی ہے۔اس سے قبل گجر بکروال کانفرنس کے صدر حاجی یوسف نے اپنی تقریر میں چودھری ذوالفقار علی کی اُن کوششوں کی سراہنا کی ، جو وہ اِس طبقے کی بہبود کے لئے کرتے ہیں ۔کانفرنس میں خوراک ، شہری رسدات اور امور صارفین محکمہ کے ناظم جموں جی ایس چب اور کمیونٹی کے لیڈران چودھری حسین علی وفا اور چودھری یاسین پوسوال بھی موجود تھے۔