تازہ ترین

نیشنل کانفرنس کامادرمہربان کو18 برسی پرشاندارخراج پیش

خواتین اوردبے کچلے طبقوں کی بہبودکیلئے رول کوناقابل فراموش :سلاتھیہ

12 جولائی 2018 (00 : 01 AM)   
(      )

جموں//نیشنل کانفرنس نے مادرمہربان بیگم شیخ محمدعبداللہ کوان کی 18ویں برسی کے موقعہ پر ان کی خدمات کویادکرتے ہوئے شاندارخراج عقیدت پیش کیا۔نیشنل کانفرنس نے کہاکہ مادرمہربان نے شیخ محمدعبداللہ کی طرف سے شروع کی گئی سیاسی جدوجہد کوآگے بڑھانے ،خواتین کی بااختیاری اورسماج کے پسماندہ طبقوں کی بہبودکیلئے مثالی کارنامے انجام دیئے۔نیشنل کانفرنس کے سینئرلیڈروں، پارٹی عہدیداروں اورورکروں نے شیرکشمیربھون میں منعقدہ خراج عقیدت تقریب میں مرحومہ کی تصویرپرپھول مالائیںچڑھاکر خراج عقیدت پیش کیا۔اس موقعہ پر بولتے ہوئے سابق وزیر اورریاستی سیکریٹری نیشنل کانفرنس سرجیت سنگھ سلاتھیہ نے کہاکہ مادرمہربان نے خطوں،برادریوں اورمختلف قوموں کے درمیان آپسی بھائی چارے کوفروغ دینے ،خواتین کوتعلیم کی طرف راغب کرنے ،ان کوحقوق کے بارے میں جانکاری دینے اورپسماندہ طبقوں کی بہبودکیلئے ناقابل فراموش خدمات انجام دیں۔سلاتھیہ نے کہاکہ مادرمہربان نے اُس وقت سیاست میں مثالی رول اداکیاجب شیرکشمیرجیل میں تھے ۔انہوں نے لوگوں کونیشنل کانفرنس تحریک کے ساتھ جوڑنے میں انتھک کوششیں کیں۔ انہوں نے کہاکہ مادرمہربان نے لوگوں کودرپیش مسائل کے حل کیلئے سنجیدہ کوششیں کیں ۔مادرمہربان کوخراج عقیدت پیش کرتے ہوئے مشتاق بخاری نے کہاکہ مرحومہ نے سماج کیلئے جوقربانیاں دی ہیں انہیں فراموش نہیں کیاجاسکتاہے۔شیخ بشیراحمدنے کہاکہ نیشنل کانفرنس ہی واحدایک ایسی جماعت ہے جوریاست کے تمام خطوں کی یکساں تعمیروترقی اورلوگوں کی امنگوں کوپوراکرسکتی ہے۔انہوں نے کہاکہ مادرمہربان اورشیخ محمدعبداللہ کادوراندیش پوتاعمرعبداللہ اس کام کوانجام دینے کی بھرپورصلاحیت رکھتاہے۔ستونت کورڈوگرہ صوبائی صدر وومن ونگ جموں صوبہ کی جانب سے تقریب کااہتمام کیاگیاتھا۔انہوں نے اپنے خطاب میں مادرمہربان کے اُس وقت کے سیاسی رول کواُجاگرکیاجس وقت شیخ عبداللہ جیل میں تھے۔ انہوں نے کہاکہ مادرمہربان نے خواتین میں خواندگی ،سیاسی بیداری لانے اورسماج کے دبے کچلے طبقوں کی ترقی کیلئے نمایاں خدمات دی ہیں ۔بابورام پال نے کہاکہ خواتین، گوجربکروال ،ایس سی /ایس ٹی برادریوں کوترقی کی راہ پرگامزن کرنے میں مادرمہربان نے کلیدی رول اداکیاہے جوہمیشہ یادرکھنے کے قابل ہے۔اعجازجان صوبائی صدروائی این سی نے بیگم شیخ عبداللہ کی زندگی کے مختلف پہلوئوں پرروشنی ڈالی ۔ٹھاکورکشمیراسنگھ ،سابق ایم ایل سی ،سینئرلیڈرکے علاوہ لکشمی دتہ، وینااوبرائے، دلجیت شرما، لتاشرما، پنکی بٹ، کلدیپ کور،امرت ورشااورسوما دیوی نے بھی مادرمہربان کے رول پرخیالات کااظہارکیا۔اس موقعہ پر قاضی جلال الدین سابق ایم ایل اے، برج موہن شرما،سابق ایم ایل سی، ماسٹرنورحسین سابق ایم ایل سی، دھرم ویرسنگھ جموال، انل دھر، ایس ایس بنٹی، عبدالغنی تیلی ،وجے لوچن، ایوب ملک، جی ایچ ملک، موہندرسنگھ، دلشادملک، ریتا گپتا،محمدسلیم ریٹائرڈڈی سی، روہت بالی، انجوگروور ، راج کور، نینا، محمدفاروق مغل، سنجے گپتا، روی ڈوگرہ، راکیش سنگھ کاکا، ریاض ملک، سوم راج تروہ، روہت کیرنی، ایس تجیندرسنگھ ،نتیش گوسوامی، وارث گل، ایم ایل منشی، ریاض احمدودیگران بھی موجودتھے۔